hellozaib کی تحاریر

مشتری کے پراسرار گڑھے۔محمد شاہزیب صدیقی

رابرٹ ہک نے مئی 1664ء کی ایک اندھیری رات کو آسمان کی جانب اپنی ٹیلی سکوپ بلند کی، یہ اس وقت نظام شمسی کے مختلف سیاروں پر غور و فکر کی دنیا میں محو سفر تھا کہ اسے اچانک ایک←  مزید پڑھیے

انوکھا سیارہ۔۔۔شاہزیب صدیقی

ٹیلی سکوپ کے ذریعے خلاء کی پرسراریت سے پردہ ہٹاتے  واروِک یونیورسٹی، چلّی کے خلائی محققین  نے10 اگست سے 7 دسمبر2016ء تک ایک غیر معمولی ستارے کو اپنے نشانے پر رکھا۔ 4 ماہ کی انتھک محنت کے بعد ان عالمی←  مزید پڑھیے

کائنات کے پراسرار بادل۔۔۔شاہزیب صدیقی

سولہویں صدی سے پہلے پہل کائنات کے متعلق یہی تصور موجود تھا کہ یہ ایک نہ سمجھ میں آنے والی پہیلی ہے مگر پھر ٹیلی سکوپ کی ایجاد نے اس نظریے کو یکسر بدل دیا، ابھی ان کے استعمال سے←  مزید پڑھیے

نظریہ ارتقاء حقیقت یا افسانہ؟۔شاہزیب صدیقی/آخری قسط

ارتقاء پسند بہت خوبصورتی سے ایک پرانے افریقی النسل انسان ہوموارکٹس کو گوریلوں کی نسل کے ساتھ جوڑ کر اپنے ارتقائی دعوے کو سہارا دینے کی ناکام کوشش کرتے ہیں، جبکہ حقیقت یہ ہے کہ ہوموارکٹس کا گوریلوں کی نسل←  مزید پڑھیے

نظریہ ارتقاء حقیقت یا افسانہ؟شاہزیب صدیقی/قسط 3

ارتقاء پسندوں کے پاس تخیلاتی مواد کی بھرمار ہے ،وہ ہمیشہ تصوراتی تصاویر کا سہارا لے کر ارتقاء کو ثابت کرتے دکھائی دیتے ہیں مگر جب ان سے فوسلز کے ذریعے ثبوت مانگے جاتے ہیں تو وہ جو چند ایک←  مزید پڑھیے

نظریہ ارتقاء افسانہ یا حقیقت (قسط 2)۔۔۔شاہ زیب

دنیا میں اکثر لوگ سائنسدانوں کی ہر بات حرفِ آخر تسلیم کرلیتے ہیں ،بنا یہ سوچتے ہوئے کہ یہ تمام نظریات بھی انسانوں کے ترتیب شدہ ہیں، ان میں وسیع غلطی کا امکان موجود ہوتا ہے، انہیں حرف آخر مان←  مزید پڑھیے

نظریہ ارتقاء افسانہ یا حقیقت( قسط 1) ۔۔۔شاہ زیب

انسان روزِ اول سے ہی زمین و آسمان کے اسرار و رموز کو کھنگالنے اور ان کی گُتھیاں سُلجھانے میں مصروفِ عمل ہے ، لیکن بسااوقات یہ گتھیاں اس قدر پیچیدہ ہوتیں ہیں کہ انسان ان کو سُلجھاتے سُلجھاتے اپنا←  مزید پڑھیے

پراسرارستارہ ۔ محمد شاہ زیب صدیقی

 7 مارچ 2009 کو ناسا نے کیپلر ٹیلی سکوپ خلاء میں بھیجی اس ٹیلی سکوپ کا مقصد نظام شمسی سے باہر سیاروں کی کھوج لگانا تھا، ستمبر 2015 میں کیپلر ٹیلی سکوپ نے ایک عجیب انکشاف کیا، اس نے زمین←  مزید پڑھیے

بلیک ہول۔شاہزیب صدیقی/زیب نامہ

100 سال پہلے تک کائنات میں ستارے ان فلکی اشیاء کو کہا جاتا تھا جو روشنی پھیلا کر کائنات کو منور کرتے ہیں مگر اس پرسرار کائنات میں کچھ ایسے ستاروں کا سائنسدانوں نے پتہ چلایا جو کہ روشنی کی←  مزید پڑھیے

زیب نامہ۔محمد شاہزیب صدیقی

ناسا نے 1963 سے 1972 تک چاند کے لئے 12 اپولو مشنز لانچ کیے جن میں سے 6 چاند کی سطح پر اترے، یہ ایک الگ بحث ہے کہ 1969 والے اپولو 11 مشن پر دنیا بھر میں انگلیاں اٹھائی←  مزید پڑھیے

زیب نامہ۔محمد شاہزیب صدیقی

زمین اور چاند کی یہ تصویر voyager-1 نے آج سے 40 سال پہلے 18 ستمبر 1977 کو ناسا کو بھیجی، اس وقت وائیجر ون کو خلاء میں بھیجے صرف 13 دن ہوئے تھے، اس نے 13 دنوں میں 1 کروڑ←  مزید پڑھیے