کالم

زمانے کے انداز بدلے گئے۔۔۔۔اسلم اعوان

نواز لیگ کے قائد میاں نوازشریف اور دیگر رہنماؤں کی سزاؤں اور گرفتاریوں کے بعد پیپلزپارٹی کے چیئرمین آصف علی زرداری کی گرفتاری سے ظاہر ہوتا ہے کہ مسلم لیگ کے بعد اب پی پی پی بھی”مفاہمتی“سیاست کے حصار سے←  مزید پڑھیے

تھوک کر چاٹنے والے۔۔۔۔حامد میر

پاکستان میں جو کچھ بھی ہو رہا ہے بہت اچھا ہو رہا ہے۔ یہ مت سمجھئے گا کہ میں بڑھتی ہوئی مہنگائی اور خوف کی فضا پر بہت خوش ہوں۔ کل سیالکوٹ میں شادی کی ایک تقریب کے دوران ایک←  مزید پڑھیے

جڑیں کاٹ دیں، شاخیں چھانگ دیں۔۔۔۔حسن نثار

چند سال پہلے پہلی بار جب میں نے کہا کہ ’’پاکستانی نظام کو تیزاب سے غسل دینے کی ضرورت ہے ‘‘تو یہ جملہ تیزی سے پھیلتا چلا گیا۔تب یہ کسی خواب یا سراب سے زیادہ کچھ بھی نہ تھا۔بیرون اور←  مزید پڑھیے

پاپا وپھپھو کی گرفتاری اوربلاول کی مسکراہٹ۔۔۔۔۔ سید عارف مصطفیٰ

حسب توقع پیارے پاپا اور دلاری پھپھو گرفتار کیے جاچکے ہیں لیکن ایک بلاول ہے کہ گرفتاریوں کے وقت بھی مسکراتا دیکھا جا رہا تھا اور اب بھی اسکے چہرے پہ تبسم رقصاں ہے ۔۔۔ لیکن اسکی یہ مسکراہٹ کیا←  مزید پڑھیے

ہینڈسم، موریاں، تسبیح، چپیڑیں۔۔۔۔ہارون الرشید

ارادہ تو یہ تھا کہ اپنے یوتهی دوستو  کو مشورہ دوں کہ سمیع ابراہیم، جس کی دن رات کی گئی خان صاحب کی جھوٹی سچی تعریفوں سے متاثر ہو کے وہ خان صاحب کو ووٹ دے کر آئے تھے اور←  مزید پڑھیے

صرف 14دن میں۔۔۔۔روف کلاسرا

عبدالرحمن سوم کا مسلم سپین میں اموی سلطنت کے اہم بادشاہوں میں شمار کیا جاتا ہے۔ عبدالرحمن الثالث کی مشہوری کی وجہ یہ تھی اس نے دسویں صدی میں اندلس میں مسلمانوں کی حکومت کو سنبھالا۔ گرتی ہوئی سلطنت کو←  مزید پڑھیے

ہمارے ذہن کی کنجوسی۔۔۔یاسر پیرزادہ

امریکہ کی ایک کمپنی ہے، الفابٹ، اپنے ہاں کم ہی لوگوں نے اس کا نام سنا ہے، یہ دنیا کی پانچویں بڑی ٹیکنالوجی کی کمپنی ہے، دنیا بھر میں پھیلے اس کے ملازمین کی تعداد تقریباً 80ہزار ہے، سالانہ منافع12.7←  مزید پڑھیے

علی مردان خان اور بُدھو کا مقبرہ۔۔۔۔مستنصر حسین تارڑ

ہم جب کبھی روزمرہ کی گفتگو کے دوران کسی گائوں، کسی شہر، آس پاس کے کسی گلی محلے یا علاقے کا نام لیتے ہیں تو سرسری گزر جاتے ہیں کہ یہ محض ایک نام ہے ایک پہچان ہے۔ ہم کم←  مزید پڑھیے

وقت آ گیا ہے کہ ہم بھی آسمان کی طرف دیکھیں۔۔۔محمد اظہار الحق

مرض تھا اور ایسا کہ ناقابل بیان!طبیب سر جوڑ کر بیٹھے مگر تشخیص نہ کر پائے۔ کئی دن کے بعد ایک طبیب نے کہ ممتاز تھا، کہا بادشاہ کو فلاں بیماری ہے اور علاج اس کا ایک ہی ہے۔ نوجوان←  مزید پڑھیے

ایک ہاتھ سے کام کرنے والی ٹنڈی قوم۔۔۔۔عطا الحق قاسمی

میں جب اقبالؔ کو پڑھتا ہوں تو میں سوچتا ہوں کہ خدا نے کنول کا یہ پھول کن پانیوں میں اُگایا ہے؟ گزشتہ رات کلیاتِ اقبال کا مطالعہ کرتے ہوئے میں ایک دفعہ پھر اس نتیجے پر پہنچا کہ اقبال←  مزید پڑھیے

پیارے مفتی صاحب کے جواب میں۔۔۔۔سلیم صافی

گزشتہ روز جنگ کا ادارتی صفحہ اٹھایا تو اس میں شائع شدہ اپنے پیارے حضرت مفتی منیب الرحمٰن صاحب کی تصویر اور تحریر پر نظر پڑی۔ سوچا کہ انہوں نے دیگر علمائے کرام کی طرح گزشتہ رات قوم سے خطاب←  مزید پڑھیے

ایوان صدر کے طوطے۔۔۔آصف محمود

وزیر اعظم ہائوس کی بھینسیں 23 لاکھ میں نیلام کرنے والی حکومت نے ایوان صدر کے طوطوں کے پنجرے کے لیے 19لاکھ 48 ہزار کا پنجرہ تیار کرانے کے لیے ٹینڈر جاری فرما دیا ۔ بیوروکریسی کی یہ ادا دیکھی←  مزید پڑھیے

جناب مفتی منیب الرحمن کے مکتوب گرامی کا جواب۔۔۔۔محمد اظہار الحق

محترم مفتی منیب الرحمن صاحب! سلام مسنون! معذرت خواہ ہوں کہ جو مکتوب آپ نے ای میل کے ذریعے ارسال فرمایا‘ میں نے اسے کالم میں شائع کیا۔ مقصد صرف یہ تھا کہ آپ کا موقف‘ بلا کم و کاست‘←  مزید پڑھیے

جمیل نقش کی یاد میں۔۔۔۔۔محمد اقبال دیوان

نوٹ۔ادارہ مکالمہ ادبی جریدے دیدبان کے حالیہ شمارے میں بلا تصویر شائع ہونے والا یہ مضمون مصنف کے ایما پرمعمولی ترامیم اور تصاویر کے ساتھ بشکریہ دید بان شائع کررہا ہے! یہ ایک مختصر سا تاثراتی مضمون ہے۔ کل دو←  مزید پڑھیے

بجٹ، حکومتی دعوے اور حقائق۔۔۔ طاہر یاسین طاہر

حکومتوں کے اپنے مسائل، اہداف اور اقدامات ہوتے ہیں، جن پر اپوزیشن جماعتیں ہمیشہ واویلا کرتی ہیں۔ بالخصوص جب بھی کوئی حکومت بجٹ پیش کرتی ہے تو اپوزیشن بجٹ کی کاپیاں اسمبلی میں پھاڑتی ہے، سپیکر کے ڈائس کا گھیرائو←  مزید پڑھیے

ملازمت، نجی زندگی اور کارپوریٹ ایتھکس ۔۔۔ معاذ بن محمود

تنخواہ دفتر میں کام کرنے کی ملتی ہے۔ پڑوسی سے نہ لڑنے کی نہیں۔ ہمیں ملازمت کی تعریف کو دیکھنا ہوگا۔ ملازمت اپنی خدمات کے عوض معاوضہ لیے جانے کا نام ہے۔ ہر معاہدے کی طرح اس معاہدے کے حقوق و فرائض بھی محدود پیمانے پر طے کیے جا سکتے ہیں۔ ہر معاہدے کی طرح یہ معاہدہ بھی ریاستی قوانین کی خلاف ورزی کرتی کوئی شق نہیں ڈال سکتا۔ ہاں ادارے کا کوڈ آف کانڈکٹ ہو جس کے تحت آپ نے سوشل میڈیا پر بھی اچھا بچہ بن کر رہنا ہے، اور جسے معاہدے کے حصے کے طور پر قبول کر کے آپ نے ملازمت قبول کی ہو تو معاملہ الگ ہے۔ تب آپ پابند ہیں سوشل میڈیا پر وہ سب کچھ نہ کرنے کے جسے نہ کرنے کا آپ نے معاہدے میں عہد کر کے دستخط کیا ہے۔ ←  مزید پڑھیے

ہوتا ہے شب و روز تماشہ میرے آگے ۔۔۔ رضوان ظفر گورمانی

حفیظ شیخ، فردوس عاشق اعوان، شوکت بصرہ، فواد چودھری، ندیم چن جب پیپلز پارٹی کی حکومت میں تھے تب حکومت کرپٹ تھی۔ آج وہ انصاف لانڈری سروس سے دھل کر صاف شفاف ہو چکے ہیں۔ عمر ایوب خان، چودھری سرور، خسرو بختیار سمیت ن لیگی انصافی جب ن لیگ میں تھے تو حکومت کا ہر ایم پی اے ایم این اے کرپٹ تھا آج تحریک انصاف میں سب اچھا ہے۔←  مزید پڑھیے

پاک افغان تعلقات کا پس منظر۔۔۔۔اسلم اعوان

پچھلے ستّر سالوں میں ہم برادر اسلامی ملک افغانستان کے ساتھ ابھرنے والی مہیب کشیدگی سے دامن چھڑا پائے نہ وقت کی آغوش میں پلتے تنازعات کو تحلیل کرنے میں کامیاب ہوئے،حالات کی جبریت دیکھیے کہ1947 میں نوآزاد مملکت پاکستان←  مزید پڑھیے

سرمایہ داری،یہ ایک عالمی ہمہ گیر مسئلہ ہے۔۔۔۔۔اسدمفتی

امریکہ کے ایک ایم ادارہ راسموس نے ایک رپورٹ جاری کی ہے اس سروے میں بتایا گیا ہے کہ اقتصادی بحران کا شکار اور قوم اور سرمایہ دارانہ نظام کی مقبولیت میں تیزی سے کمی کے ساتھ”سوشلزم”جس کو کچھ عرصہ←  مزید پڑھیے

انور سجاد کا خوشیوں کا باغ۔۔۔مستنصر حسین تارڑ

کہاوت تو یہی ہے کہ ’’آج مرے اور کل دوسرا دن‘‘ ویسے کہنا تو یہ چاہئے کہ ’’آج مرے تو کل قیامت‘‘ انور سجاد کو مرے ہوئے آج دوسرا نہیں پانچواں دن ہے۔ میرا دُکھ قدرے کم ہو گیا ہے←  مزید پڑھیے