Khatak کی تحاریر
Khatak
مجھے لوگوں کو اپنی تعلیم سے متاثر نہیں کرنا بلکہ اپنے اخلاق اور اپنے روشن افکار سے لوگوں کے دل میں گھر کرنا ہے ۔یہ ہے سب سے بڑی خدمت۔

ایم کیو ایم میں ٹوٹ پھوٹ ۔۔عبدلرؤف خٹک

بچپن میں  ایک  نعرے کی گونج ہر وقت دیتی تھی ” تم کتنے بھٹو مارو گے ہر گھر سے بھٹو نکلے گا” ،یہ نعرہ اتنا مشہور ہوا کہ ہر جگہ اس نعرے کو دہرایا جانے لگا ،پھر بھٹو خاندان کے←  مزید پڑھیے

انعام رانا ،اور مکالمہ کو خراج تحسین۔۔عبدالرؤف خٹک

آج کے اس دور جدید میں اور اس تیز رفتار دنیا میں جہاں کسی کو اپنا ہوش نہیں ،وہ کسی اور کے لیے کیا وقت نکال پائے گا اور کیا کسی کی خدمت کرپائےگا ،جیسے جیسے وقت گزرتا گیا دنیا←  مزید پڑھیے

کسی کی دل آزاری نہیں ہونی چاہیے۔۔عبدالرؤف خٹک

دوستو کی ایک محفل میں بر سبیل تذکرہ اچانک سے زبان کی بات چل نکلی تو ایک دوست جو بہت محترم ہیں ہمارے لیے ہم سے انھوں نے اچانک سے پشتو زبان میں کچھ کہا تو دوسرے ساتھی نے کہا←  مزید پڑھیے

ایشین انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنس کی اک اور کامیابی

رپورٹ(عبدالرؤف خٹک)الحمداللہ یہ ہمارے لئے  بڑے فخر کی بات ہے  کہ ہم نے بڑی ہی خوش اسلوبی اور نیک نیتی سے اک اور معرکہ بھی سر کر لیا ۔یہ ہمارے ادارے کے لئے  بڑے اعزاز کی بات ہے کہ ہم←  مزید پڑھیے

الطاف حسین اور کراچی کی سیاسی جماعتیں۔عبدلرؤف خٹک

کیا کراچی کی سیاست میں کوئی نیا موڑ آئے  گا؟ابھی حال ہی میں جو کچھ پی ایس پی اور متحدہ قومی موومنٹ  نے کیا اس کا تماشہ پوری دنیا نے دیکھا دونوں جماعتیں اب تک ایک دوسرے کو شک کی←  مزید پڑھیے

ایک ابھرتا ہوا نام،ڈاکٹر سہیل سومرو۔۔۔ عبدالروف خٹک

انھوں نے بہت ہی کم وقت میں اپنا نام اور اپنے نام کا سکہ منوایا ۔اس دور میں ایسے لوگ خال خال ہی پائے جاتے ہیں جو بہت قلیل مدت اور وقت میں بہت جلدی آگے نکل جاتے ہیں ۔ایسے←  مزید پڑھیے

سادہ عوام۔۔۔ عبد الروف خٹک

میں اپنے ہسپتال سے باہر ممتاز چائے والے کے ڈابے پر کھڑا گاڑیوں میں موجود لوگوں کو دیکھ رہا تھا ،ایسا لگ رہاتھا جیسے ان لوگوں کو گاڑیوں میں زبردستی ٹھونسا گیا ہو۔ ان کے چہرے سے کہیں بھی یہ←  مزید پڑھیے

کیا بات ہے پنجاب کی۔۔۔ عبدالروف خٹک

کبھی کبھار کچھ سانحے ایسے ہوتے ہیں کہ وہ ہمیشہ یاد بن کر رہ جاتے ہیں اور گلے کا  ہار بھی بن جاتے ہیں۔ ان یادوں میں کچھ ایسا میٹھا اور دکھ بھرا لطف ہوتا ہےکہ انسان اپنی ہنسی اور←  مزید پڑھیے

کراچی کا سیاسی اونٹ کس کروٹ بیٹھے گا؟

دیکھنا یہ ہے کہ کراچی میں سیاسی اونٹ کس کروٹ بیٹھے گا ۔ایم کیو ایم لندن ،ایم کیو ایم پاکستان، پی ایس پی یا ایم کیو ایم مہاجر۔ ایک جماعت سے حال ہی میں دو جماعتوں کا نکلنا ۔اس میں←  مزید پڑھیے

آزادی اور اس کی بہاریں

بیگم کی قیدوبندکی صعوبتیں برداشت کر کر کے اب تو آزادی کا لفظ بھی ہم پر گراں گذارتا ہے۔مطلب یہ ہےکہ بیگم پیر میں رسہ ڈال کر رکھتی ہیں۔دوستوں کے ساتھ رات بھر گھومنے کے مزے ہمیشہ کے لیئے اڑن←  مزید پڑھیے

بات تو سچ ہے ۔مگر

میرا ملک واقعی بڑا زرخیز ہے ۔جہاں روز نت نئے تماشے پیدا ہوتے رہتے ہیں۔ہر تماشے کو تماش بین خوب انجوائے کرتے ہیں۔اور جب خوب مکمل سیر ہوجاتے ہیں۔ پھر اس پر بھانت بھانت کے تبصرے شروع ہوجاتے ہیں۔اس پیارے←  مزید پڑھیے

مزید آگے بڑھنا ہے

انعام رانا صاحب کی باتیں پڑھ کر مجھے کچھ مایوسی کی بو سی آنے لگی ۔مجھے ایسا لگا جیسے رانا صاحب اشاروں کنایوں میں کہنا چاہ رہے ہو کہ مکالمہ کو اب بند کردینا چاھیئے۔ لوگوں میں برداشت کی حد←  مزید پڑھیے

مظلوم کون؟

میں نے اپنے بزرگوں سے سن رکھا تھا کہ یہ عورتیں چڑیل ہوتی ہیں ان سے دور رہا کرو لیکن اکثر میں سوچ میں پڑ جاتا اور ماں کے گلے سے لپٹ جاتا اور پھر ماں ہی سے پوچھتا کہ←  مزید پڑھیے

قندیل بلوچ اور سڑاندزدہ معاشرہ

آج کل ہر سو قندیل اور اس پر بنائی جانے والی فلم کا چرچہ ہے،ہر شخص اسے مختلف ناموں سے پکار رہا ہے۔۔۔ لیکن کیا کسی نے یہ سوچا کہ اگر وہ فاحشہ تھی تو اسے فاحشہ بنایا کس نے؟۔۔۔ہم←  مزید پڑھیے

قربتوں کو زندہ رکھیں

زمانہ کتنا بھی بدل جائے ،بعض انداز کبھی نہیں بدلتے جیسے کہ آج بھی چار دوست مل بیٹھ کر محفل جماتے ہیں ،محفل میں لطف اندوز ہوتے ہیں ،لیکن ایک دوسرے سے بات کرکے نہیں بلکہ اپنے اپنے موبائل کو←  مزید پڑھیے

حیدرآباد میں خدمت کا ایک استعارہ ایشین انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنس

کچھ چیزیں وقت اور عمر سے پہلے ہی خود میں نکھار پیدا کرلیتی ہیں۔اس نکھار کوچار چاند لگانے میں ضرور کہیں نہ کہیں انسانوں کا عمل دخل ہوتا ہے۔کوئی بھی چیز اس وقت تک خود کو نہیں منواسکتی یا خود←  مزید پڑھیے

جیسی قوم ،ویسے حکمران

دس لوگوں کے ساتھ مکالمہ کرنے کے بعد مزید دس لوگوں سے گفت و شنید ہوئی مگر ڈھاک کے وہی تین پات۔۔۔۔ مکالمے کے دوران جب لوگوں سے استفسار کیا گیا کہ آپ کس سیاسی جماعت کی کارکردگی سے مطمئن←  مزید پڑھیے

اندھی تقلید

کیا لکھوں اس ملک کے حالات و واقعات پر جہاں پلک جھپکتے ہی کچھ بھی ہوجاتا ہے۔ابھی ایک واقعے کی گونج پر پورا ملک سیخ پاء ہورہا ہوتا ہے کہ اچانک سے دوسرا واقعہ وجود میں آجاتا ہے۔یہ ملک کم←  مزید پڑھیے

قوم کا نوحہ

میں نوحہ لکھوں بھی تو کس کے لیئے؟۔۔۔ میں آہ و زاری کروں بھی تو کیوں ؟۔۔ یہاں قوم نے بے شرمی کی چادر اوڑھ رکھی ہے۔اسے مارا جائے،زندہ درگور کیا جائے ،اس کےحقوق پر ڈاکہ ڈالا جائے ، لوٹا←  مزید پڑھیے

قوم خود کو پہچانے!

اس قوم کا حافظہ بہت کمزور ہے۔یہ بہت جلد بھول جاتی ہے ۔اسے نسیان کا مرض لاحق ہے۔کئی ماہرین نے علاج کرنے کی کوشش کی اور گاہے بہ گاہے ہوتی رہتی ہے لیکن اس قوم کا حافظہ درست ہونے سے←  مزید پڑھیے