ابرار خٹک کی تحاریر
ابرار خٹک
ابرار خٹک
میں کہ مری غزل میں ہے آتش رفتہ کا سراغ۔ مری تمام سرگزشت کھوۓہوٶں کی جستجو۔۔۔(اقبال)

جوہری کو کیا معلوم۔۔ ابرارخٹک

سوچ و فکر کے دائرے تنگ ہوں تو وسعت قلب و ذہن کی توقع بھی حسرت کا کفن اوڑھ لیتی ہے کہ اخلاقی لحاظ سے روبہ تنزل افرادحسد ، بغض، تعصب اور لالچ کی آگ میں مسلسل جل کر ہر←  مزید پڑھیے

تنخواہ نہ بڑھاؤ،  مراعات واپس  لو یا برابر کرو۔۔ابرار خٹک

کہا جاتا ہے کہ ایک بادشاہ  شدید سردی کی رات اپنے محل میں داخل ہورہا تھا تو رستے  میں ایک بوڑھے دربان سے ملاقات ہوئی، جس نے    باریک لباس پہنا تھا  او ر سردی سے کانپ رہا تھا۔بادشاہ نے اس←  مزید پڑھیے

مسئلہ کرنل کی بیوی کا نہیں۔۔         ابرارخٹک

مسئلہ کرنل کی بیوی کا نہیں،بلکہ یہاں کی اکثریت اپنی بنیادو ں  سے سِرک گئی ہے۔یہ ایک نفسیاتی مسٔلہ ہے،جس میں ہم  پاکستانی،قبل از آزادی ,  نوآ  بادیاتی دور سے بھی پہلے کے  گرفتار  چلے آرہے ہیں۔کسی بھی محکمے ،←  مزید پڑھیے

امتحانات کی منسوخی ؛ جلدی نہ کیجیے۔۔ابرار خٹک

پاکستانی بچوں میں ’’کرونا ‘‘کے پھیلاؤ کے خدشے کے پیش نظر تمام بورڈز کے امتحانات منسوخ کرنے کا اعلان کیا گیا ہے جب کہ یونیورسٹیوں اور کالجوں کو ہائیر ایجوکیشن کی ہدایات اور خود یونیورسٹیوں کے صوابدید پر چھوڑ دیا←  مزید پڑھیے

مُلا کو اُن کے کوہ و دمن سے نکال دو۔۔ابرار خٹک

ہاں!آپ لوگ اس کرّ ہ ارض پر جس دنیا کا خواب دیکھ رہے ہیں ،یہ تہذیب ناآشنا ان سے بے بہرہ ہیں۔لمبی عباؤں ، قبائیوں کے یہ خاک نشین ، داڑھی و مسواک کے دور میں رہنے والے زمانہ ناشناس،←  مزید پڑھیے

کشمال کاکا۔۔ابرار خٹک

کشمال کا کا جب بھی یاد آتے ہیں، دل میں کمی سی محسوس ہوتی ہے اور پھر پہروں ان کے متعلق سوچنے لگتا ہوں۔حالات ہمیشہ ایک جیسے نہیں رہتے ، انسان معاملاتِ زیست میں کسی سے خوش یا دل برداشتہ←  مزید پڑھیے

غربت کا وائرس۔۔ابرارخٹک

ابرار آج معمول کی سیر پہ نکلا توموسم بہت خوشگوار تھا۔رات کی طوفانی بارش اور آندھی نے فضااور ماحول پر گہرے اثرات چھوڑے   تھے۔کئی دنوں کے بعد سورج نکلنے سے گویا زمین کے بھی چودہ طبق روشن ہوگئے ہوں جیسے۔جرنیلی←  مزید پڑھیے