عید قربان۔۔۔۔ اے وسیم خٹک

دونوں بچے عید الاضحی کی نماز پڑھنے کے بعد گھر آئے ـ اور اپنی ماں سے پوچھنے لگے۔۔

ماں گوشت کب تک آجائے گا ـ ؟

tripako tours pakistan

اُس کی ماں پریشانی کا شکار تھی کیونکہ وہ جس محلے میں رہتی تھی وہاں کوئی عید کے دن بھی گوشت تقسیم نہیں کرتا تھا سب گوشت کو فریزر میں سٹور کرتے تھے ـ اور پھر ہفتوں تک استعمال کرتے تھےـ ۔۔

ماں نے بچوں کی جانب دیکھا اور کہا بیٹا خدا اس دفعہ رحم کرے گاـ

بچوں نے حیرت سے ماں کی جانب دیکھا اور یک زباں ہوکر پوچھا ماں وہ کیسے!

تب ماں نے جواب دیا کہ علاقے میں بجلی کی لوڈشیڈنگ زیادہ ہورہی ہے اور مشکل ہے کہ لوگ گوشت کو اسٹور کرسکیں ـ اس لئے اس سال مسور کی دال کی بجائے گوشت کی ہانڈی پکے گی ـ ۔۔

Advertisements
merkit.pk

وہ یہی باتیں کر رہے تھے کہ دروازے پر دستک ہوئی اور پھر گھر میں ایک ہفتے تک گوشت کی بساند چلتی رہی اور وہ عید قربان مناتے رہے۔۔

  • merkit.pk
  • merkit.pk

اے ۔وسیم خٹک
اے ۔وسیم خٹک
پشاور کا صحافی، میڈیا ٹیچر

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply