نگارشات

ایک لیونگ لیجنڈ فنکار کی دلچسپ داستاں۔۔۔مرزا شہباز حسنین بیگ

فنون لطیفہ انسان کے اشرف المخلوقات ہونے کی گواہی ہے۔انسان اور دنیا کی دوسری مخلوقات میں بنیادی فرق اظہار کا ہے ۔انسان اپنی قلبی اور جسمانی کیفیات کا اظہار کرنے پہ قادر ہے ۔قدرت نے یہ صلاحیت انسان کو بخشی←  مزید پڑھیے

ڈاکٹر جمیل جالبی ۔۔۔۔رضا علی عابدی

کراچی، اردو کے سینئر ادیب، نقاد، ماہرِ لسانیات، ادبی مؤرخ، اور دانشور ڈاکٹر جمیل جالبی انتقال کرگئے۔ وہ 12 جون، 1929ء کو علی گڑھ، ہندوستان میں ایک تعلیم یافتہ گھرانے میں پیدا ہوئے۔ ان کا اصل نام محمد جمیل خان←  مزید پڑھیے

نیا فرش۔۔امبر زہرا

اُس نے اپنی شادی کے چار بہترین جوڑے اٹھائے جو اُس کی اماں نے بڑے پیار سے 12 سال پہلے اُس کے بیاہ کے وقت اپنے ہاتھوں سے بنائے تھے۔ اِن چار جوڑوں کی قیمت اتنی ہی بن رہی تھی←  مزید پڑھیے

شب برات بخشش ومغفرت کی رات۔۔۔۔حافظ کریم چشتی

شعبان المعظم کی پندرہویں رات کو”شب براء ت کہاجاتاہے۔شب کے معنی رات اوربراء ت کے معنی چھٹکارے کے ہیں اس رات میں اللہ رب العزت قبیلہ بنی کلب کی بکریوں کے بالوں کی تعدادسے زیادہ گناہ گاروں کی بخشش فرماتاہے۔←  مزید پڑھیے

ناچ میری بُلبل کہ کچھ نہ ملے گا۔۔۔عبداللہ خان چنگیزی

عنوان میں جو لکھا ہے وہ ایک قیاس ہے آپ اِسے ایک دیوانے کی ذہنی اختراع سمجھ سکتے ہیں ایک ایسا جملہ جس کے معانی بظاہر تو واضح دکھائی دے رہے ہیں مگر جن وجوہات کی بنا پر یہ جملہ←  مزید پڑھیے

تم قتل کرو ہو کہ کرامات کرو ہو ۔۔۔عامر عثمان عادل

ہر سو بگاڑ سا بگاڑ ہے کسی جانب سے کوئی  خیر کا سندیسہ نہیں آتا مہنگائی بد امنی لاقانونیت کا دور دورہ ہے اب تو اخبار پڑھنے کو بھی دل نہیں مانتا وہی سیاست کے جھمیلے سیاستدانوں کی ایک دوسرے←  مزید پڑھیے

ارماڑہ کی وہ رات۔۔۔ معاذ بن محمود

  یہ قصہ  اس ایک رات کا ہے جس کا احساس میں آج بھی لفاظی کا سہارہ لے کر سہی معنوں میں بیان نہیں کر سکتا۔ کوشش کرنے میں بہرحال کوئی مضائقہ نہیں۔ ۲۰۱۳ جنوری میں ان دنوں ارماڑہ نیول←  مزید پڑھیے

آہ کہ خون اتنا ارزاں ہے ۔۔۔ منصور ندیم

  بلوچستان کے ساحلی علاقے مکران اورماڑہ میں مسافر کوسٹل بسوں سے اتار کر 14 افراد کو شہید کردیا گیا۔ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب مسلح افراد نے کراچی سے گوادر جانے والی کئی مسافر بسوں کو اورماڑہ کے←  مزید پڑھیے

خط و کتابت۔۔۔محمد خان چوہدری

آج کل اس مہم کا تصور بھی محال ہے جو کچھ عشرے قبل،ربط باہم کے لئے اسیران محبت اٹھاتے تھے۔۔۔ایسی ہی ایک روداد پیش ہے۔پچاس سال قبل ، محبت کے اسلوب کی جھلک ،تقریباً سچی کہانی۔۔۔ مین بازار تو مغرب←  مزید پڑھیے

جمال سخن۔۔۔۔ڈاکٹر محمد اسلم مبارکپوری/بُک ریویو

”جمال سخن ”ایک عارف سخن کا شعری مجموعہ ہے جس میں بکھرے ہوئے خیالات وافکار کوبحور واوزان کی لڑی میں بڑی ہنر مندی اور سلیقہ مندی سے پرو دیا گیا ہے ۔کتاب کی صفحہ گردانی نے اس خیال کو تقویت←  مزید پڑھیے

سیانے کے خواب مگر حقیقت؟۔۔۔ایم۔اے۔صبور ملک

دنیا کی سب سے بڑی مگر کچھ حوالوں سے تاریک جمہوریت بھارت میں عام انتخابات کے لئے ووٹنگ کا عمل شروع ہوچکا ہے،نتائج کیا ہوں گے اس پر فی الحال تبصرے اور تجزئیے جاری ہیں،تاہم چند ماہ قبل پانچ ریاستوں←  مزید پڑھیے

دوسرا رُخ ۔۔۔ ماسٹر محمد فہیم امتیاز

موٹیوشن آپکے آگے ہوتی ہے آپ اس کو پکڑنا ہی نہیں چاہتے۔ کیونکہ آپ ان رخوں سے آشنا ہوتے ہوئے بھی ناآشنا رہتے ہیں، جن رخوں میں دریچے اور پھر دریچوں کی بھی پرتیں ہیں۔ ایک ایک پرت ایسی ہے←  مزید پڑھیے

مقامِ اقبال ،پیغام اقبال۔۔۔۔ابوعبدالقدوس محمد یحییٰ

توصیف بنام اقبال: جب مسلمانوں نے ترک کئے احکام المتعال اورپسِ پشت ڈالی شریعتِ سید بشروصاحب جمال، اورکئے انہوں نے اقدارِ اسلامی پامال،آیا ان پر بدترین زوال،فرنگیوں نے جب دیکھی یہ صورتحال،چلی انہوں نے شاطرانہ چال،بچھایا عیاری سے ایسا جال←  مزید پڑھیے

ماں ۔۔۔۔ ایم بلال ایم

سیروسیاحت سے واپسی پر بعض اوقات امی جان کو کچھ کچھ احوال سناتا۔ تصاویر دکھاتا۔ نئے بننے والے دوست اور اپنے ہمسفروں کے متعلق بتاتا۔ میرے بلاگر، لکھاری، فوٹوگرافر یا سوشل میڈیا کے قریبی دوست ہوں یا میرے ساتھ سفر←  مزید پڑھیے

احباب چارہ سازی ِ وحشت نہ کرسکے۔۔۔۔(سفرِ جوگی)اویس قرنی۔۔گیارہوریں ،آخری قسط

طلسم ہوش ربا میں خیال غالب سے جڑا ہوا تھا کہ اچانک ہماری نگاہیں ٹیلے کے قدموں میں پڑی ایک خالی بوتل سے جا ٹکرائیں۔ بہت ہنسی آئی کہ استاد بھی ہر جگہ اپنی موجودگی کی کوئی نہ کوئی نشانی←  مزید پڑھیے

سیاسی ٹیٹریاں اور “ٹی ٹیوں” کا حساب (ایک تجزیہ )

مکالمہ پر محترم حسن نثار صاحب کا کالم “سیاسی ٹیٹریاں اور ٹی ٹیوں کا حساب“ کے عنوان سے پڑھا ۔ حسن نثار صاحب کو میں پڑھنے سے زیادہ سننا پسند کرتا ہوں۔ سچ بولتے ہیں تو زیادہ تر کڑوا ہی←  مزید پڑھیے

سر راہ ایک مکالمہ۔۔۔۔محمد اسد شاہ

میں کالج سے واپس آ رہا تھا – گھر کی گلی مڑنے لگا تو علاقے کا کونسلر مل گیا – سلام دعا کے بعد مجھ سے کہنے لگا؛ “شاہ جی ! مجھے آپ سے ایک رائے لینا ہے- ” مجھے←  مزید پڑھیے

مشرانوں ۔ دستک اور دروازہ توڑنے میں فرق رکھیں۔۔۔عبدالمجید داور

طالبان اٹھے، شریعت کے نفاذ کے نام پر دستک کی بجائے دروازہ توڑنے کی کوشش کی ۔ ۔ ۔ فوج دروازہ توڑنے والوں سے حساب کرنے آئی، پر عام آدمی کا دروازہ توڑ گئی  ۔ ۔ ۔ آج عام آدمی←  مزید پڑھیے

لسانی جزیرے۔۔۔اسلم ملک

لاہور سے ٹرین پر بہاولپور آیا تو ایک 25 سالہ پٹھان ہم سفر تھا۔ ایک بزرگ اسے رخصت کرنے آئے۔ میرے ذمہ  لگایا کہ اس کا خیال رکھوں۔ اسے اردو نہیں آتی۔ روٹی پانی تو خیر مانگ لیتا ہے۔ ٹکٹ←  مزید پڑھیے

بوٹ پالش۔۔۔محمد خان چوہدری

یہ واقعہ 1960 میں اسلامیہ پرائمری سکول چکوال ، محلہ غربی، نزد بھون روڈ کا ہے، ” معلم پدر بُود” خادم حسین ہونہار بچہ تھا، سیدھا دوسری جماعت میں داخل ہوا، چوتھی جماعت پاس کی تو پانچویں میں اسے وظیفہ←  مزید پڑھیے