نگارشات    ( صفحہ نمبر 2 )

لنگوٹ پوش گینگ۔۔عزیز خان

یہ 1987 کی بات ہے میرا تبادلہ بہاولپور سے رحیم یار خان ڈسٹرکٹ میں ہوچکا تھا دس دن جوائننگ ٹائم گھر گزارنے کے بعد میں نے پولیس لائن رحیم یار خان میں اپنی حاضری کروائی ان دنوں مرزا یاسین SSPہوا←  مزید پڑھیے

دو نمبر افسانہ۔۔سلیم مرزا

میں نے اسے پیچھے سے دیکھا وہ اب بھی ویسی ہی سیکسی تھی ۔اس کی پشت کی گولائیاں اب بھی اتنی ہی سحر آفریں تھی ، وہ اتنی لمبی تو نہیں تھی پھر بھی اس کی چوڑائی سرینا ولیمز جیسی←  مزید پڑھیے

اٹھارہویں صدی کے دو اہم واقعات۔۔۔توقیر کھرل/قسط1

مغل بادشاہ بہادر شاہ ایک وسیع القلب انسان تھے۔وہ ہندوؤں کے جذبات کی بھی قدر کرتے تھے اور ان کی بعض رسوم بھی ادا کرتے تھے۔ انہوں نے شاہ عباس کی درگاہ پر ایک علم چڑھانے کے لیے لکھنؤ بھیجا←  مزید پڑھیے

ائیرپورٹ کا منظر۔۔عاطف ملک

نوٹ : اپنے ایک سفری بیگ سے سامان نکال رہا تھا تو ایک پرانی تحریر کے کچھ صفحات سامنے آگئے۔ یہ کسی ائیرپورٹ پر انتظار کی کیفیت میں کاغذ پر لکھے گئے ہیں۔ کچھ صفحے گم ہوگئے ہیں، یہ علم←  مزید پڑھیے

بیل گری- بیل پتھر۔۔۔ثنااللہ خان احسن

جوڑوں گھٹنوں کے درد کا علاج بیل پتھر بیل پتھر کیا ہے اور کہاں سے ملے گا؟ وکالت کے دور میں ایک مسئلہ در پیش ہوا،کہ میری والدہ کو جوڑوں خصوصاً  گھٹنوں میں درد شروع ہوا وہ بہت تکلیف میں←  مزید پڑھیے

کرونا وائرس اور این جی اوز کا کردار۔۔راجہ عرفان صادق

کسی بھی معاشرے  میں این جی اوز کے کردار سے انکار نہیں کیا جاسکتاہے۔ دنیا میں ایسی بڑی بڑی تنظیمیں موجود ہیں کہ اگر ان کے کردار کو مائنس کردیا جائے تو کئی ممالک میں متعدد سہولیات زیرو ہوکر رہ←  مزید پڑھیے

شہید ہیموں کالانی: سندھو کا بھگت سنگھ ( ایک تحقیق) ۔۔۔مشتاق علی شان

یہ 21جنوری 1943 کی صبح تھی جب سکھر سینٹرل جیل کا پھانسی گھاٹ ” انقلاب زندہ باد “اور ”گورو! ہندوستان چھوڑ دو “ کے فلک شگاف نعروں سے گونج اٹھا اور پھر کچھ دیر بعد ایک، انیس، بیس سالہ جوان←  مزید پڑھیے

کرونا ڈائریز:کراچی،کرفیو سے لاک ڈاؤن تک(تیرہواں دن)۔۔گوتم حیات

آج چار اپریل ہے۔۔۔ جب وہ اپنے اصولوں کی خاطر خوشی خوشی پھانسی کے پھندے میں جھول گیا تھا لیکن اس نے کسی سے رحم کی بھیک نہیں مانگی تھی۔ پھر دیکھنے والوں نے یہ بھی دیکھا کہ ہر گزرتا←  مزید پڑھیے

اگر مجھے قتل کیا گیا۔۔۔مہر ساجد شاد

یہ ذوالفقار علی بھٹو کی وہ کتاب ہے جو سپریم کورٹ میں ان کی طرف سے دائر کردہ فوجداری اپیل کے مواد سے ترجمہ کر کے چھاپی گئی ہے۔ آج کے دن 4اپریل 1979 کو راولپنڈی میں انہیں پھانسی دی←  مزید پڑھیے

جو ایک شہر۔۔۔محمد علی

شہر وہ ہوتا ہے جسے آپ اپنا جانیں، یہ شہر کوئی بھی ہوسکتا ہے، آنے والا کوئی بھی، اور غایتِ آمد و قیام بھی کچھ بھی ہوسکتی ہے۔ کچھ بہتر مستقبل کی خاطر، کچھ لوگ جان کے لالے پڑنے پر،←  مزید پڑھیے

کرونا وائرس: احتیاط، علاج اور توہمات۔۔ڈاکٹر محمد اسد اللہ خاں

ابھی کل مجھے واٹس ایپ پر ایک آڈیو میسج موصول ہوا جس میں ایک صاحب فرما رہے تھے کہ کرونا( Corona) کا علاج بہت آسان ہے اور انہوں نے یہ علاج بہت تحقیق کے بعد دریافت کیا ہے اور تو←  مزید پڑھیے

اک وبا چل پڑی ہے۔۔۔کامریڈ فاروق بلوچ

ایسا نہیں ہے کہ دنیا میں وبا،بیماری ایسے ہی اچانک کہیں سے آتی ہے یا نازل ہوتی ہے یا پیدا ہو جاتی ہے۔ کائنات میں ہونے والے ہر عمل،امر کے پیچھے کوئی نہ کوئی وجہ،جواز،پسِ جواز ضرور ہوتا ہے۔ ہر←  مزید پڑھیے

ہم تیار نہیں تھے ۔۔۔ مسعودچوہدری

ایک پاکستانی باپ ، بھائی، بیٹا، ہونے کی حیثیت سے راقم آپ کے سامنے معافی مانگتا ہے۔ جب آپ معاف کر دیں گے تو اللہ رب العزت بھی فوراً معاف فرما دیں گے۔ آپ حیران ہوں گے کہ میں آپ←  مزید پڑھیے

ماحولیاتی بے خبری اور موسمیاتی جنگ (قسط1)۔۔دیدار علی شاہ

دنیا کی آبادی بڑھ رہی ہے اس آبادی کے بڑھنے سے دنیا کے وسائل میں کمی آرہی ہے۔ ماضی میں اس کمی کو پورا کرنے کے لئے صنعتی دور کا آغاز ہو ا، اور دنیا ترقی کرتی  رہی  اور لوگوں←  مزید پڑھیے

بہار میں خزاں کی رُت۔۔ایم اے صبور ملک

ویراں  ہے میکدہ ،خم و ساغر اداس ہیں تم کیا گئے روٹھ گئے دن بہار کے۔۔ فیض احمد فیض  نے اپنی مشہور زمانہ غزل کا یہ شعر غالباً آج کے د ن کے لئے ہی کہا تھا کہ جب ہر←  مزید پڑھیے

پاکستان میں بے روزگاری۔۔اسماعیل گُل خلجی

بے روزگار اس شخص کو کہا جاتا ہے جو کوئی کام کرنا چاہتا ہو اور اس کام کی اہلیت بھی رکھتا ہو لیکن اسے کام نہ ملے ۔ بے روزگاری پاکستان کے بڑے مسائل میں سے ایک ہے ۔ معاشرے ←  مزید پڑھیے

وائرس ۔ آج اور کل ۔ وائرس (12) ۔۔وہاراامباکر

ایک شکاری جنگل سے برآمد ہوا۔ ایک ہاتھ میں بندوق، ایک میں شکار کیا ہوا بندر۔ وہ کیمرون میں اپنے گاوٗں میں داخل ہوا۔ یہ منظر روزانہ کا ہے جو دیہاتوں میں جاری رہتا ہے۔ صرف افریقہ میں نہیں، دنیا←  مزید پڑھیے

دفعہ 370 کا خاتمہ اور کورونا وائرس کی آمد ۔ خنجر گھونپ دیا ہے سینوں میں ہمارے۔۔۔زاہد احمد ڈار

ماضی بعید میں مختلف ممالک جب آپسی جنگ و جدل کے شکار ہوتے تھے تو وہ اپنے دشمنان کے ساتھ جنگ میں مختلف اقسام کے ایٹم بمبوں،ٹینکوں اور دیگر Arms & Ammunition کو استعمال میں لاتے تھے،جس کی مثال تاریخ←  مزید پڑھیے

“آداب”آج کی ضرورت (حصہ اوّل)۔۔مرزا مدثر نواز

کسی زمانے میں استاد‘ اتالیق‘ پیر و مرشد کی دو ذمہ داریاں ہوتی تھیں‘ ایک تعلیم اور دوسری تربیت۔ پھر زمانے کے انداز بدلنے لگے‘ درس و تدریس نے کاروبار کی صورت اختیار کر لی‘ معاشرے میں اونچی کوٹھی اور←  مزید پڑھیے

چابیاں۔۔سلیم مرزا

میرے اسلام آباد والے فلیٹ کی اکیاون چابیاں اور پینسٹھ سیڑھیاں تھیں ۔لفٹ نہ ہونے کی وجہ سے چوتھی منزل کا یہ دوکمروں کا فلیٹ سستا مل گیا تھا ۔بظاہر میں وہاں اکیلا تھا،لیکن جب میں وہاں  نہیں ہوتا تو←  مزید پڑھیے