سو لفظوں کی کہانی – پکا انتظام

ثبوت تمھارے خلاف ہیں، تم اس بار پکے پھنسے ہو۔
دس بندوں نے تمھیں قتل کرتے دیکھا ہے۔ ڈیش کیم سے بنی وڈیو ہے جس میں تمھیں قتل کرتے دیکھا جاسکتا ہے
آلہ قتل پر تمھاری انگلیوں کے نشان ملے ہیں جو تمھارے ہاتھوں کی لکیروں سے میچ ہیں۔
وہاں چوٹ لگنے سے تمھارا خون نکلا جس سے تمھارا ڈی این اے میچ کر گیا ہے۔
کچھ نہیں ہوگا اس نے کہا۔
کیسے نہیں ہوگا؟ ان کے پاس ثبوت ہیں تمھارے پاس کیا ہے؟
اس نے سگریٹ سُلگایا اور دھواں اس کے منہ پر چھوڑتے ہوئے بولا۔
*میرے پاس جج ہیں* ۔

مدثر ظفر
مدثر ظفر
فلیش فکشن رائٹر ، بلاگر

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *