کالم

کتھارسس یا قانون کی حکمرانی؟ ۔۔۔۔۔۔آصف محمود

دو خواتین کے لاشے سڑک پر پڑے ہیں ۔ ایک بوڑھی ماں ہے اس کا لاشہ اوندھے منہ پڑا ہے ، دوسری شاید اس کی بیٹی ہے ۔ ہجوم جمع ہے ۔ ایک صاحب کے ہاتھ میں موبائل ہے ،←  مزید پڑھیے

کیا سانحہء پکا قلعہ کو مقننہ عدلیہ اور میڈیا نے یکسر بھلادیا ؟۔۔۔۔۔سید عارف مصطفٰی

شدید حیرت بھی ہے اور افسوس بھی ۔۔۔۔ ! پاکستانی میڈیا بھی فراموشی و بے حسی کے سناٹوں کا اسیر بنا نظر آتا ہے کیونکہ شاید اس نے بھی خود کو سیاسی اغراض اور مصلحتوں کے تابع کردیا ہے۔۔۔ اور←  مزید پڑھیے

ظفر الطاف کے بغیر پاکستان کے تین سال۔۔۔۔محمد اقبال دیوان

ظفر الطاف ڈپٹی کمشنر ساہیوال تھے۔ سن تھا 1977.۔ چیف سیکرٹری مسعود نبی نور ان سے ناراض ہوئے۔بڑے صاحب ان سے کچھ ایسے کام لینا چاہتے تھے جو وہ کرنے پر کبھی بھی رضامند نہ ہوتے۔ان میں سے ایک کام←  مزید پڑھیے

چند معاشی و مالیاتی اصطلاحیں اور عمران حکومت۔۔۔۔طارق احمد

1۔ تجارتی خسارہ ملکی درآمدات اور برآمدات میں فرق اگر منفی ھو۔ یعنی درآمدات زیادہ ھوں ۔ برآمدات کم ھوں ۔ تو اسے تجارتی خسارہ کہتے ھیں ۔ اس وقت پاکستان کا تجارتی خسارہ 37 ارب ڈالر کے قریب ھے۔←  مزید پڑھیے

بلاگرز “شہادت” سے گریز کریں۔۔۔۔انعام رانا

عرصہ ہوا نوجوانی کا دور تھا کہ کسی جگہ تقریر کرتے ہوے الفاظ تمیز کے دائرے سے نکل گئے اور تنقید تضحیک میں بدل گئی، تالیاں پٹیں، مسرور و مخمور محفل سے نکلا کہ جیسے چی گویرا کیوبا میں داخل←  مزید پڑھیے

نئے عزم سے آگے بڑھتا پاکستان۔۔۔طاہر یاسین طاہر

قوموں کو ترقی اور علمی و معاشی برتری کے لیے لیڈر شپ کے سوا یکسوئی کی بھی ضرورت ہوتی ہے۔قائد اعظم جیسا رہنما کوئی دوسرا نہیں ہو گا۔ بھٹو آئے مگر اپنے سیاسی اور صوبائی تعصبات کو ساتھ لے کر←  مزید پڑھیے

ڈاکٹر ظفر الطاف کے بغیر تین سال۔۔۔۔۔رؤف کلاسرا

عسکری حسن سید کا فون تھا ۔ وہ بیرون ملک دو  ماہ گزار کر واپس لوٹے ہیں۔ شام ڈھلے ایک کیفے پر جا بیٹھے اور پھر یادوں کا دریچہ کھل گیا ۔ میں اور عسکری مل بیٹھیں اور ڈاکٹر ظفر←  مزید پڑھیے

دنیا کے دس میں سے نو تنازعات میں مسلمان شامل ہیں۔۔۔۔اسد مفتی

سپین کے شہر لائٹرا کے مئیر اور اس کی کونسل نے کہا ہے کہ انہیں اس بات پر فخر ہے کہ لائٹرا سپین میں خواتین کے خلاف امتیاز برتے جانے سے متعلق برقعہ جیسی چیز کے خلاف انتظام کرنے کے←  مزید پڑھیے

میری ذات شکست ِ ذات اک آواز تو ہے۔۔۔۔۔روبینہ فیصل

محبت جتانے کے ہزار طریقے ہیں مگر کیا کیجئے کئی دفعہ ہم محبت صرف تب جتاتے ہیں جب نفرتوں کی پچکاریاں چاروں طرف چل رہی ہوں ۔ حضورِ پاکﷺ سے محبت کا بھی یہی پیمانہ مقرر کر دیا گیا ہے←  مزید پڑھیے

سلطان احمت میں تھوڑی سی آوارہ گردی اور تھوڑی سی دل پشوری۔۔۔سلمٰی اعوان(سفر نامہ)قسط 7

یہ بڑا سنہری موقع تھا مجھ جیسی آپ پُھدری عورت کیلئے۔ میں سیماکے تسلّط سے آزاد تھی اورخود کو بے حد ہلکی پھلکی سی محسوس کررہی تھی۔جی چاہ رہاتھا وہ گیت گاؤں۔ پنچھی بنوں،اڑتی پھروں نیل گگن میں آج میں←  مزید پڑھیے

سارہ تواب اگر اسسٹنٹ کمشنر نہ ہوتیں؟ ۔۔۔۔۔۔آصف محمود

فرض کریں سارہ تواب ایک سسٹنٹ کمشنر نہ ہوتیں ۔ ننھے سے بچے کو گود میں لے کر پشاور میں تجاوزات کے خلاف مہم کی قیادت کرتی اسسٹنٹ کمشنر سارہ تواب کی پہلی تصویر دیکھی تو اچھا لگا ۔ ممتا←  مزید پڑھیے

ارد شیر کاؤس جی اور فریال نینسی۔۔۔۔محمد اقبال دیوان/دو سری اور آخری قسط

ارد شیر کاؤس جی حسب وعدہ ہمیں اپنی مرسڈیز اسپورٹس میں لینے پہنچ گئے۔پھولدار شرٹ اور خاکی ٹراؤزر۔ہم نے کار میں بیٹھ کر انہیں تنگ کرنے کے لیے جب گجراتی میں یہ کہا کہ Wire-Tapping نوں تو پروگرام نتھی؟ (خفیہ←  مزید پڑھیے

اصلاحات کمیشن کا سربراہ کسی سیاستدان کو بنائیے ورنہ۔۔۔۔محمد اظہار الحق

نوجوان شوکت علی یوسف زئی نے اگر ایسا کہا ہے تو غلط کہا ہے! خلاق عالم کا ایک نظام ہے۔ اس نظام میں مداخلت کی کوشش ہمیشہ ناکام ثابت ہوتی ہے۔ بڑ ہانکنا متین لوگوں کو زیب نہیں دیتا۔ اگر←  مزید پڑھیے

انڈے ، مرغیاں ، کٹے اور ہمارا احساس کمتری ۔۔۔۔۔آصف محمود

عمران خان نے اپنی تقریر میں انڈوں ، مرغیوں اور کٹوں کا ذکر کیا کر دیا ، احباب بد مزہ ہو گئے ۔ طنز اور تضحیک کے دیوان لکھے جا رہے ہیں ۔ معلوم نہیں یہ روایتی احساس کمتری کا←  مزید پڑھیے

آسیہ بی بی کی رہائی : سپریم کورٹ کے فیصلے کی اخلاقی وشرعی حیثیت۔۔۔۔۔ڈاکٹر محمد شہباز منج

توہینِ رسالت کے مقدمے میں آسیہ  بی بی کیس میں  ملزمہ کو شک کا فائدہ دے کر رہا کرنے کے حوالے سے  سپریم کورٹ کے حالیہ فیصلے  کے نتیجے میں ایک دفعہ پھر سخت بحرانی و  ہیجانی کیفیت پیدا ہو←  مزید پڑھیے

ارد شیر کاؤس جی اور فریال نینسی۔۔۔۔محمد اقبال دیوان/قسط1

دو اقساط کی قسط اول عبداللہ کو سب پتہ تھا۔ پرانے کراچی کی ساری پرانی بلڈنگز کی تعمیر سے ملکیت تک کے تمام رموز جتنے سٹی سروے کی  رجسٹر میں محفوظ تھے ان کے بارے میں کہیں زیادہ تفصیلات اس←  مزید پڑھیے

مجھ پہ ہنستے تو ہیں پر دیکھنا روئیں گے رقیب

اکبر الٰہ آبادی نے شبلی نعمانی کو دعوت نامہ بھیجا تو لکھا: آتا نہیں مجھ کو قبلہ قبلی بس صاف کہوں کہ بھائی شبلی تکلیف اٹھائو آج کی رات کھانا یہیں پکائو آج کی رات حاضر ہے جو کچھ دال←  مزید پڑھیے

آپ کہاں مصروف تھے؟ ۔۔۔۔۔آصف محمود

حکومت کے 100 دن مکمل ہو چکے ہیں اور عالم یہ ہے کہ قومی اسمبلی میں ابھی تک کوئی ایک سٹینڈنگ کمیٹی بھی نہیں بنائی جا سکی ۔ حالانکہ قومی اسمبلی کے رولز آف پروسیجر ایند کنڈکٹ آف بزنس کے←  مزید پڑھیے

ان پڑھ سرحد پر میرا منہ چڑاتا”بابِ آزادی”۔۔۔۔۔اسد مفتی

برِ صغیر کے معروف کالم نگار اور پاک و ہند دوستی کا روشن استعارہ کلدیپ نئیر (مرحوم) گزشتہ ایک کالم میں ہی لکھتے ہیں “میں واہگہ بارڈر سے دل شکستہ لوٹا ہوں ،اس وجہ سے نہیں کہ غروب آفتاب کی←  مزید پڑھیے

قیصر کا حصہ قیصر کو اور پوپ کا پوپ کو۔۔۔۔محمد اظہار الحق

جناب احسن اقبال نے کرتارپور کوریڈور اقدام کو سراہا۔ یہ حمایت سیاسی پختگی کی علامت ہے۔ لگتا ہے اہل سیاست زیادہ بالغ نظر ہورہے ہیں۔ ذہنی سطح بلند ہورہی ہے۔ جن ملکوں میں جمہوری سفر کئی سو سال پہلے شروع←  مزید پڑھیے