• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • 14 سالہ بچے نے خفیہ ایجنسی کا کوڈ ایک گھنٹےمیں حل کردیا

14 سالہ بچے نے خفیہ ایجنسی کا کوڈ ایک گھنٹےمیں حل کردیا

دنیا بھر کی خفیہ ایجنسیاں اہم رازوں کیلئے مشکل ترین کوڈز کا استعمال کرتی ہے، تاکہ اسے کوئی اور نہ جان سکے اور یہ معلومات خفیہ ہی رہیں، لیکن تسمانیہ سے تعلق رکھنے والے 14 سالہ بچے نے ان ماہرین کو حیران کر دیا۔

آسٹریلین انٹیلی جنس کے ادارے کی جانب سے سائبرسیکیورٹی ٹیم نے 75 ویں سالگرہ پر ایک خصوصی سکہ جاری کیا، 50 پیسے کے اس یادگاری سکے پر ایک کوڈ درج تھا، جس کے پانچ مراحل تھے، جس کے 4 مراحل ایک بچے نے ایک گھنٹے میں حل کر لیے۔ تاہم اس کا پانچواں مرحلہ اب تک کوئی حل نہیں کرسکا ہے۔

FaceLore Pakistan Social Media Site
پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

سکے کو ایسے تیار کیا گیا تھا، جس میں کوڈ حل کرنے کے اشارے دونوں طرف موجود تھے، لیکن اسے مرحلہ وار مشکل سے مشکل ترین بنایا گیا تھا، بچے نے جب ایک ہی گھنٹے میں چار مرحلے پورے کر لیے، تو اس نے سب سے زیادہ پریشان ایجنسی ٹیم کو کیا، کیونکہ ماہرین کے مطابق یہ آسان کوڈ ہرگز نہیں تھا۔

Advertisements
julia rana solicitors london

75ویں سالگرہ پر سکے کے دونوں طرف کی تصویر صبح 8 بج کر 45 منٹ پر جاری کی گئی اور عوام سے ایک فارم بھرکر کوڈ حل کرنے کا کہا گیا، اور ایک گھنٹے بعد ہی اس کا جواب ایک 14 سالہ لڑکے نےدیدیا۔

  • merkit.pk
  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • julia rana solicitors london
  • julia rana solicitors

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply