• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • روسی صدر کیلئے کھڑا رہنا مشکل ہو گیا: بیرونی دورے سے پیوٹن کا فضلہ واپس لانے کیلئے گارڈز متعین

روسی صدر کیلئے کھڑا رہنا مشکل ہو گیا: بیرونی دورے سے پیوٹن کا فضلہ واپس لانے کیلئے گارڈز متعین

ماسکو: روس کے صدر ولادی میر پیوٹن کے لیے اپنی ٹانگوں پہ کھڑا رہنا بھی مشکل ہو گیا ہے کیونکہ کچھ ہی دیر میں ان کی ٹانگیں کانپنے لگتی ہیں۔

مؤقر امریکی جریدے نیویارک پوسٹ کے مطابق  کریملین میں منعقدہ ایک ایوارڈ تقریب میں شرکت کے لیے جب صدر ولادی میر  پیوٹن پہنچے اور انہوں نے نہایت مختصر خطاب کیا تو اس دوران ان کی ٹانگیں مسلسل کانپتی رہیں۔

FaceLore Pakistan Social Media Site
پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

امریکی جریدے کے مطابق روسی صدر کی ٹانگیں کانپنے کی ویڈیو سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پہ وائرل بھی ہوئی ہے۔

واضح رہے کہ 69 سالہ روسی صدر کی صحت کے حوالے سے عالمی ذرائع ابلاغ میں گزشتہ کچھ ماہ سے تسلسل کے ساتھ خبریں منظر عام پر آتی رہی ہیں۔

عالمی ذرائع ابلاغ کی جانب سے یہ دعویٰ بھی سامنے آیا تھا کہ ولادی میر پیوٹن کے ڈاکٹروں نے انہیں صحت کی وجہ سے مشورہ دیا ہے کہ وہ کسی بھی عوامی اجتماع میں جانے یا زیادہ دیر تک کھڑے رہنے سے اجتناب  برتیں۔

روسی صدر ولادی میر پیوٹن کی صحت کے حوالے سے جب یہ خبر سامنے آئی ہے تو عین اسی وقت مؤقر برطانوی اخبار انڈیپنڈنٹ نے فرانسیسی جریدے پیرس میچ کے حوالے سے بتایا ہے کہ روسی حکام کی جانب سے اپنے صدر کی حفاظت کے پیش نظر گارڈوں کی ڈیوٹیاں لگائی گئی ہیں کہ بیرون ملک قیام کے دوران ولادی میر پیوٹن کا ٹوائلٹ میں خارج ہونے والا فضلہ ضائع کرنے کے بجائے حفاظت کے ساتھ واپس روس لایا جائے تاکہ کوئی دوسرا ملک ان کی صحت کی بابت لیبارٹری ٹیسٹوں کے ذریعے آگاہی حاصل نہ کر سکے۔ ایسی ہی اسٹوری مؤقر امریکی نشریاتی ادارے فوکس نیوز نے بھی دی ہے۔

پیرس میچ نے اپنی اسٹوری کے ساتھ روسی صدر ولادی میر پیوٹن کی دو تصاویر بھی شائع کی ہیں جن میں دیکھا جا سکتا ہے کہ روسی صدر کی صحت میں نمایاں فرق آیا ہے لیکن حتمی طور پر یہ کہنا نا ممکن ہے کہ تصاویر اصلی ہیں اور یا پھر کسی کمپیوٹر کی شعبدے بازی کا نتیجہ ہیں۔

فرانسیسی جریدے کے مطابق اس مقصد کے لیے روس کے صدر ولادی میر پیوٹن کے ساتھ خصوصی گارڈز متعین کیے گئے ہیں جنہیں خصوصی سوٹ کیس بھی فراہم کیا جاتا ہے جو فضلہ جمع کرنے اور واپس روس لانے کے کام آتا ہے۔

اس ضمن میں کہا گیا ہے کہ روس کے صدر اور روسی خفیہ و حساس ایجنسی کو خدشہ ہے کہ غیر ملکی خفیہ ایجنسیاں ولادی میر پیوٹن کی بابت خارج شدہ فضلے سے بہت کچھ جان سکتی ہیں جو ان کے لیے انتہائی غیر مناسب ہو گا۔ یاد رہے کہ روسی صدر نے اپنے کیریئر کی ابتدا سابقہ روسی خفیہ ایجنسی کے جی بی سے کی تھی۔

Advertisements
julia rana solicitors london

مغربی ذرائع ابلاغ کے مطابق روسی صدر کینسر کے موذی مرض میں مبتلا ہیں جب کہ روسی حکام ایسے کسی بھی دعوے کو یکسر مسترد کرچکے ہیں۔

  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • merkit.pk
  • julia rana solicitors
  • julia rana solicitors london

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply