سولفظوں کی کہانی ۔ سیٹ/مدثر ظفر

میں ڈاکٹر ہوں میری ڈیوٹی ایمرجنسی میں ہے ۔
مقررہ وقت سے ایک گھنٹہ لیٹ ہاسپٹل پہنچا ۔

جیب میں ہاتھ ڈالا خیال آیا بجلی کا بل جمع کروانا ہے ۔

بینک پہنچا لیکن متعلقہ افسر سیٹ پر نہیں تھا ۔

وہاں سے بیٹے کے اسکول گیا پرنسپل نے بلوایا تھا اسکول پہنچا لیکن پرنسپل سیٹ پر نہیں تھا ۔

فون کی شکایت لے کر ٹیلی فون کے محکمہ میں گیا لیکن لائن مین  سیٹ پر نہیں تھا ۔

غصے میں بڑبڑاتے موٹر سائیکل چلاتے ہوئے ایکسیڈنٹ ہوا ۔

لوگوں نے اٹھا کر ایمرجنسی میں پہنچایا لیکن جانبر نہ ہو سکا ۔

ایمرجنسی ڈاکٹر سیٹ پر نہیں تھا ۔

Save

مدثر ظفر
مدثر ظفر
فلیش فکشن رائٹر ، بلاگر

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *