فخر اقبال خان بلوچ کی تحاریر
فخر اقبال خان بلوچ
فخر اقبال خان بلوچ
بی کام- ایل ایل بی لہو رستے قلم کا ہاتھ

جنسی ہراسانی یا دعوت عام ۔۔۔۔فخر اقبال خان بلوچ

میری عرضداشت کا مقصد کسی کی اٹھائی گئی آواز کو جھوٹا سچا ثابت کرنا نہیں بلکہ معاملے کو مزید واضح کرنا ہے ۔ پچھلے کچھ ماہ سے جنسی ہراسانی کے حوالے سے بہت سارے واویلے اچانک شروع ہوۓ اور ایک←  مزید پڑھیے

لیہ ۔۔۔۔فخر اقبال خان

سوچتا ہوں یہ تحریر میرے من میں تھی گویا  ایک قرض تھا جان پر، ایک پیار تھا جس کا اظہار جیتے جی ضروری تھا، سوچا زندگی کا کیا بھروسہ ؟۔۔۔۔ یہ تحریر شاید بہت سارے لوگوں کے لیے اہم نہ←  مزید پڑھیے

جنگل کہانی۔۔فخر اقبال خان بلوچ

تاریخ بتاتی ہے کہ کہیں ایک جنگل تھا، جو شیروں کا جنگل کہلاتا تھا-وہاں کچھ پرندے بھی تھے جو امن کے گیت گاتے تھے، خوش رہتے تھے مگر افسردہ افسردہ۔شیروں کے جنگل کی حدوں کے آس پاس دوسرے جنگل باسیوں←  مزید پڑھیے

چٹھی آئی ہے۔۔فخر اقبال خان بلوچ

میں  تمہارا ایک پرانا ساتھی ہوں ،میں اب کافی بوڑھا ہوچکا ہوں ،اور مختلف جگہوں پر بوسیدہ سی لاٹھیوں کے سہارے تمہارا منتظر رہتا ہوں،ماضی میں میرا ایک ہی رنگ تھا ، جو وقت کے ارتقاء کے ہاتھوں اب چند←  مزید پڑھیے