ایک انڈین فلم کا ریویو۔ احمد ثانی

فلم ری ویو ۔ کارواں مرکزی کاسٹ ۔ دلگیر ، سلمان، عرفان خان، مہتیلا پارکر ۔
حیراں ہوں کہ ایسی سٹوری پر فلم بھی بن سکتی ھے مزید حیراں ہوں کہ نا صرف فلم بن سکتی ھے بلکے ایک ٹیریئجک موؤمنٹ کو قہقہ خیز بھی بنایا جا سکتا ھے ۔ فلم کے ڈائرئکٹر ہیں مسٹر آکرش کھرانہ جو کہ اس سے پہلے متعدد فلمز کے رائٹر رہے  ہیں (کرش، کرش 3، کائٹس ) اور اس فلم میں سکرپٹ، سٹوری رائٹنگ کے ساتھ ساتھ بطور ڈائریکٹر انکی یہ ڈیبئو کاوش ہے ۔  ہیٹس آف !ایک ڈائریکٹر /رائٹر جنہوں نے ایک لو بجٹ مووی کو باکس آفس بلاک بسٹر میں بدل دیا۔ میرے اندازے کے مطابق یہ مووی اس قدر لو بجٹ ہو گی کہ اس فلم کا سارا خرچہ اپالو ٹائر اور ساوتھ انڈیا ٹور ازم ڈپارٹمنٹ کے پروموشن بجٹ سے ہی پورا کر لیا گیا ہو گا ۔ریاست کیرالہ کے دو ہل سٹشنز کوچی اور اُؤٹی کے خوبصورت دلفریب مناظر سے سجی یہ فلم ایک منفرد روڈ ٹرپ سٹوری ھے فلم کی جان عرفان خان کی  جاندار پرفارمنس ہے جس کے ایک دو سینز پر تو آپ ہنس ہنس کر پیٹ پکڑنے پر مجبور ہو جائیں گے۔ یہ پہلی فلم ہو گی جس کے لیئے میں یہ ریکمنڈ کروں گا کہ کاغذ قلم ساتھ لیکر یہ فلم دیکھنے بیٹھیں اس کے کے کئ سنجیدہ ڈائیلاگ بہت کمال کے ہیں۔ میرے لیئے تو یہ فلم کمال حیرت سے  مزین تھی کہ کس طرح رائٹر نے ایک ٹریجئک سٹوری کو کامیڈی بنایا اور پھر کسطرح ڈائریکٹر نے اسے خوبصورت شاعری سے  بھرپور  گانوں سے آراستہ کیا ۔
عرفان خان کے پرستاروں اور ان تمام لوگوں کے لیئے جو موڈ بوسٹر کی تلاش میں ہوں ، یہ ایک لاجواب فلم ہے۔
نوٹ ۔ ( میں نے یہ فلم سینما میں دیکھی  ہے ۔ کسی اور کا گھر بیٹھ کر پائریٹڈ ڈاؤن لوڈنگ کے ذریعے دیکھا جانے والا ایکسپیریئنس مختلف ہوسکتا، بلاشبہ سینمٹک تھیم فلم کے حسن کو دو آتشہ کرتی  ہے ۔ اگر جیب اور دل اجازت دے تو یہ فلم سینما میں دیکھیں ) تمام بڑے شہروں میں اب اچھے اور صاف ستھرے سینی پلیکس کھل چکے ہیں ۔ یہ فلم  آٹھ  سے  اسی سال تک کا ہر فرد بلا جھجک دیکھ سکتا  ہے  ۔

 

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *