مہمان تحریر کی تحاریر
مہمان تحریر
مہمان تحریر
وہ تحاریر جو ہمیں نا بھیجی جائیں مگر اچھی ہوں، مہمان تحریر کے طور پہ لگائی جاتی ہیں

ڈاکٹر جمیل جالبی ۔۔۔۔رضا علی عابدی

کراچی، اردو کے سینئر ادیب، نقاد، ماہرِ لسانیات، ادبی مؤرخ، اور دانشور ڈاکٹر جمیل جالبی انتقال کرگئے۔ وہ 12 جون، 1929ء کو علی گڑھ، ہندوستان میں ایک تعلیم یافتہ گھرانے میں پیدا ہوئے۔ ان کا اصل نام محمد جمیل خان←  مزید پڑھیے

پاکستانیوں کے مغالطے۔۔۔۔گل نوخیز اختر

ایک دور تھا جب مجھے اپنا آپ سو فیصد ٹھیک سمجھنے کی بیماری تھی۔مجھے لگتا تھا کہ جو کچھ میں سمجھتا ہوں وہی حقیقت ہے اور اس کے علاوہ ہر بندہ غلط ہے۔ پاک ٹی ہاؤس نے اس بیماری کا←  مزید پڑھیے

جنرل ڈائر او ر ادھم سنگھ۔۔۔۔یاسر پیرزادہ

پہلی جنگ عظیم اپنے عروج پر تھی، ایک جانب برطانیہ اس جنگ میں الجھا ہوا تھا تو دوسری جانب ہندوستان میں بڑھتی ہوئی ’’بغاوت‘‘ نے اس کا ناطقہ بند کر رکھا تھا، ان باغی سرگرمیوں کو کچلنے کے لئے تاج←  مزید پڑھیے

جعلی کلیم، جعلی ذاتیں، جعلی اکاؤنٹس۔۔۔حسن نثار

کچھ لوگ کرپشن کو کرپشن سمجھتے ہی نہیں، اسی لئے قسمیں کھا کھا کر اس سے انکار کرتے ہیں اور احتساب کو انتقام قرار دیتے ہیں۔ ان لوگوں نے خود کو قائل کرلیا ہوتا ہے کہ جو وہ ’’وصولتے‘‘ ہیں←  مزید پڑھیے

’’گلہریاں اور استاد بشیر احمد‘‘

جی ہاں اُن دنوں یہ عین ممکن تھا کہ نیشنل کالج آف آرٹس میں مختصر مصوری کے استاد بشیر احمد کے کمرے میں آپ ایک بے ہوش گلہری پڑی دیکھ لیں تو یہاں سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ آخری←  مزید پڑھیے

سیاسی ٹٹیریاں اور ’’ٹی ٹیوں‘‘ کا حساب۔۔۔۔حسن نثار

میرے ساتھ دلچسپ آنکھ مچولی جاری ہے۔ میں نیوٹرل ہو کر مکمل غیر جانبداری کے ساتھ پی ٹی آئی کے حوالہ سے حق تنقید ادا کرنا چاہتا ہوں لیکن پیپلز پارٹی، ن لیگ اور حضرت مولانا فضل الرحمٰن ٹائپ لوگ←  مزید پڑھیے

عہد جدید کے بہزاد کا”کارخانہ”۔۔۔۔مستنصر حسین تارڑ

کیا آپ جانتے ہیں کہ گلہریوں کا مصوری سے گہرا تعلق ہے‘ اگر خدانخواستہ گلہریاں نہ ہوتیں تو ایک مخصوص قسم کی مصوری بھی نہ ہوتی۔ اور مصوری کا لاہور کے نیشنل کالج آف آرٹس سے گہرا تعلق ہے۔ یوں←  مزید پڑھیے

رام چندر گہا کا کالم: جلیاں والا باغ –جس نے انگریزی حکومت کے زوال کی کہانی لکھ دی …

جلیاں والا باغ : اس قتل عام کے بعد ہندوستانیوں کو بھلے برے کی تمیز ہونے لگی تھی اور وہ اب مزید جی حضوری نہیں کرنا چاہتے تھے۔ 13 اپریل 1919، یعنی آج سے ٹھیک سو سال پہلے، ‘ریجینل ڈائر’ نام←  مزید پڑھیے

جلیانوالہ باغ قتلِ عام کے سو سال۔۔۔۔وقار احمد شیخ

ٹائی ٹینک فلم سے کون واقف نہیں؟ 1997 میں جب یہ فلم پردہ اسکرین پرجلوہ گر ہوئی تو تاریخ سے دلچسپی نہ رکھنے والوں کو بھی علم ہوا کہ یہ فلم ایک حقیقی حادثے پر بنائی گئی ہے، وہ حادثہ←  مزید پڑھیے

سری لنکن قوم کے ہیرو ،افواج پاکستان اور آئی- ایس- آئی۔۔۔تہذیب الحسن

سری لنکا سے ہمارے سٹریٹیجک نوعیت کے تعلقات کا آغاز جنرل ضیاء کے دور میں ہوا۔ بھارت سری لنکا میں 70 کی دہائی کے آخر میں تامل علیحدگی پسند تحریک کی بنیاد ڈال چکا تھا جو 1984ء میں باقاعدہ عسکری←  مزید پڑھیے

مجبور بس ہوسٹس۔۔۔شہنیلا بیلگم والا

دو تین دن پہلے ایک وڈیو وائرل ہوئی  جس میں ایک کوچ سروس کی ہوسٹس کو ایک شخص بس سے اٹھا کر باہر پھینکنے کی دھمکیاں دے رہا تھا۔ وہ ہوسٹس ذلت اور بے بسی کی شدت کے احساس سے←  مزید پڑھیے

تاج محل کا اک گوشہ اور آصف جاہ کے گنبد کے گِدھ

کچھ عرصہ ہوا جب میں نے شاہ دارا کے نام کی بستی شاہدرہ کے گلی کوچوں میں دوستوں کی مدد سے شاہ حسین کی بیٹھک تلاش کر لی کہ شاہ حسین اکثر لاہور کی گلیوں میں رقص کرتے اپنے مُریدوں←  مزید پڑھیے

سستے ڈراموں کے شوقین حکمران۔۔۔روف کلاسرا

ابھی کچھ دیر پہلے ٹوئیٹر پر وزیراعلیٰ پنجاب کا ویڈیو کلپ دیکھا ‘جس میں وہ راولپنڈی کی پناہ گاہ کا دورہ کررہے تھے۔ اس ٹوئیٹ میں لکھا تھا: وزیراعلیٰ پناہ گاہ میں جا کر عام لوگوں سے گھل مل گئے←  مزید پڑھیے

ہاف چمچ۔۔۔۔گل نوخیز اختر

برداشت کرنے والوں میں شاعروں، فوک گلوکاروں اور پتے کے مریضوں کا کوئی ثانی نہیں۔میرا شمار موخر الذکر میں ہوتا ہے ۔ آج سے تین سال پہلے جب مجھے پہلی بار پتے کی تکلیف ہوئی تو پتا ہی نہ چل←  مزید پڑھیے

تو اب کافر مروں؟۔۔۔روف کلاسرہ

سینیٹر انور بیگ کا میسج تھا: پاکستان کو بچایا جائے۔ اپنی بے بسی کا اظہار کرتے ہوئے لکھتے ہیں: ہمارے پاس تو کہیں اور جا کر رہنے کیلئے جگہ بھی نہیں ہے۔ اب اس عمر میں پاکستان چھوڑ کر کہاں←  مزید پڑھیے

تل ابوندا۔ تل احرام۔ تل کمتانیہ۔ گولان کی پہاڑیاں

دمشق سے باہر نکلے تو ہر سو ویرانی تھی۔ جنگ کی تباہ کاریوں کے آثار تھے۔ شاہراہ پر صرف ہماری کار تھی جس کا رخ گولان کی پہاڑیوں کی جانب تھا۔ بارود کی سیاہی پتھروں کے چہروں پر ملی ہوئی←  مزید پڑھیے

گولان ہائیٹس، امریکی سلطنت کی رسوائی۔۔۔ثاقب اکبر

 امریکی صنم نے اتنی بے وفائیاں کی ہیں کہ اب اس کے عاشقوں نے بھی مجبور ہو کر اسے بے وفا کہنا شروع کر دیا ہے، عالم یہ ہے کہ صنم کے بے وفا ہونے پر سب عاشقوں کا اتفاق←  مزید پڑھیے

اسلامی معاشروں کیلئے بعثت پیغمبر اکرم ﷺ کے پیغامات۔۔۔۔حجت الاسلام والمسلمین محمد حسین مختاری

اسلامی تعلیمات کی روشنی میں خاتم النبیین حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی بعثت کا واقعہ اہل ایمان کی دیرینہ آرزو تھی۔ قرآن کریم میں حضرت ابراہیم علیہ السلام کا یہ جملہ نقل ہوا ہے: “رَبَّنا←  مزید پڑھیے

کراچی کے میمن کے ساتھ ایک شام۔۔۔۔رؤف کلاسرا/دوسرا ،آخری حصہ

اقبال دیوان نے ادھر ادھر نظریں گھمائیں تو انہیں کہیں بھی پرانی کتابوں کی وہ دکانیں نظر نہ آئیں‘ جن کی امید پر وہ مجھے یہاں لے آئے تھے۔ وہ کافی عرصے سے کہہ رہے تھے: اگر پرانی کتابیں چاہئیں←  مزید پڑھیے

’’ایم ایم عالم دمشق میں اور…گولان‘‘

ابھی پچھلے دنوں امریکی صدر نے نیتن یاہو کو الیکشن جتوانے کے لئے ایک تحفہ پیش کر دیا اور گولان کی پہاڑیوں کو اسرائیل کی ریاست قرار دے دیا۔ اس سے پیشتر امریکہ کی جانب سے مقبوضہ علاقوں میں یہودیوں←  مزید پڑھیے