گلزار اور راکھی کیوں الگ ہوئے ۔۔۔۔ظفر عمران

شاعر، مصنف و ہدایت کار گلزار اور اداکارہ راکھی موجمدار کی شادی ہوئی تو اُن کے بیچ میں طے ہوا تھا، کہ راکھی اب فلموں میں کام نہیں کریں گی۔ یش چوپڑا نے ’’کبھی کبھی‘‘ بنانے کا ارادہ کیا، تو راکھی گلزار کو امیتابھ بچن اور ششی کپور کے مقابل کاسٹ کرنے کی پیش کش کی۔ راکھی نے یش چوپڑا سے وعدہ نہیں کیا، اس سے پہلے گلزار سے ملنے کاشمیر روانہ ہوئیں، تا کہ گلزار سے مشورہ کر کے کوئی فیصلہ کریں۔ گلزار اُن دِنوں کاشمیر میں فلم ’’آندھی‘ کی شُوٹ میں مصروف تھے۔
سنجیو کمار اور سچترا سین ’’آندھی‘‘ کے مرکزی کردار نبھا رہے تھے۔ یہ جس رات کا واقعہ ہے، اس شب سنجیو کمار شوٹنگ کے بعد کچھ زیادہ شراب چڑھا بیٹھے، اور سچترا سین کا ہاتھ پکڑ کے اپنے کمرے میں لے جانا چاہا۔ سچترا نے سنجیو کا ہاتھ جھٹک دیا، تو سنجیو نے سچترا کو زبردستی لے جانا چاہا۔ سچترا نے چیخنا چلانا شروع کر دیا۔ ایسے میں گلزار، جو سنجیو کے قریبی دوست بھی تھے، نے سچترا کو سنجیو  سے بچایا، اور سچترا کو اُن کے کمرے میں چھوڑنے چلے گئے۔

گلزار، سچترا کو تسلی دے کر کمرے سے باہر آئے تو یہ وہی لمحہ تھا، جب راکھی وہاں پہنچیں۔ فلم والے ایسی سچوایشن کری ایٹ کر کے ناظرین  کو حیران کرتے ہیں، قدرت نے فلم والوں کو ایسے ہی منظر کا حصہ بنا دیا۔ گلزار نے راکھی کو اصل بات سمجھانے کی کوشش کرنا چاہی، لیکن راکھی جن کے بارے میں مشہور تھا، کہ وہ غصے کی بہت تیز ہیں، گلزار کو بُرا بھلا کہنے لگیں۔ اُن کے بیچ میں ہاتھا پائی شروع ہو گئی، لوگ اکٹھے ہو گئے۔ کہا جاتا ہے، کہ گلزار نے سب کے سامنے راکھی سے مار پیٹ کی۔
یش چوپڑا اُن دنوں ’’کبھی کبھی‘‘ کی لوکیشن کی ریکی کرنے کاشمیر ہی میں تھے۔ اگلے روز راکھی نے اُن سے ملاقات کی، اور گلزار کی خواہش کے بر عکس ’’کبھی کبھی‘‘ سائن کر لی۔
اس رات کے بعد راکھی اور گلزار کبھی ایک ساتھ نہیں رہے۔ راکھی نے بمبئی میں رہتے اپنا ٹھکانا الگ کر لیا۔ کاغذی طور پہ دونوں آج بھی میاں بیوی ہیں۔ ان دونوں کی ایک بیٹی ہے، جس کا نام میگھنا ہے، اور پیار سے ’بوسکی‘ کہتے ہیں۔

مکالمہ
مکالمہ
مباحثوں، الزامات و دشنام، نفرت اور دوری کے اس ماحول میں ضرورت ہے کہ ہم ایک دوسرے سے بات کریں، ایک دوسرے کی سنیں، سمجھنے کی کوشش کریں، اختلاف کریں مگر احترام سے۔ بس اسی خواہش کا نام ”مکالمہ“ ہے۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *