پشاور، سکھ نوجوان کاقتل 7 لاکھ میں منگیتر نے کرایا

پشاور میں چند روز قبل قتل کئے گئے سکھ نوجوان رویندر سنگھ کے کیس میں اہم پیش رفت ہوئی ہے، پولیس ذرائع کے مطابق رویندر سنگھ کے قتل میں اس کی منگیتر پریم کماری ملوث نکلی۔

پولیس ذرائع کے مطابق مقتول رویندر سنگھ کی مبینہ ملزمہ منگیتر پریم کماری کے ساتھ شادی ہونے والی تھی لیکن اس کی منگیتر اس رشتہ پر خوش نہیں تھی۔

پولیس ذرائع کے مطابق ملزمہ نے 3 اجرتی قاتلوں کو 7 لاکھ روپے دے کر سکھ نوجوان رویندر سنگھ کو مردان بلایا جہاں ملزمان اسے اغواء کرکے قریبی کالونی میں لے گئے۔

پولیس ذرائع کے مطابق قاتلوں نے رویندر کی لاش پشاور منتقل کردی تاکہ قتل کا سراغ نہ مل سکے۔

پولیس ذرائع کے مطابق مقتول کی منگیتر اور اجرتی قاتلوں کو آلہ قتل سمیت گرفتار کیا جبکہ واردات میں استعمال کی گئی گاڑی بھی برآمد کرلی۔

پولیس ذرائع کے مطابق ملزمہ کو عدالت کے روبرو پیش کر دیا گیا ہے۔

عدالت نے ملزمہ پریم کماری کو جیل بھجوا دیا، جس کو ٹرانزٹ کسٹڈی پر آج پشاور پولیس کے حوالے کیے جانے کا امکان ہے۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *