احتساب عدالت کا نواز شریف کو پیر کو پیش کرنے کا حکم

اسلام آباد:احتساب عدالت نے العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنسز کی سماعت کے دوران مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف کو پیر (13 اگست) کو پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

جمعرات کو اسلام آبادکی احتساب عدالت نمبر 2 کے جج محمد ارشد ملک نے سابق وزیراعظم نواز شریف کیخلاف العزیزیہ اسٹیل ملز اور فلیگ شپ ریفرنسز کی سماعت کی۔

tripako tours pakistan

آج سماعت کے آغاز پر ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل نیب سردار مظفر عباسی نےعدالت کو بتایا کہ ہائیکورٹ نے دونوں ریفرنسز احتساب عدالت منتقل کر دیئے ہیں۔

جج محمد ارشد ملک نے  سردار مظفر عباسی سے استفسار کیا کہ دونوں ریفرنسز میں کارروائی کہاں تک پہنچی؟۔

سردار مظفر عباسی نے آگاہ کیا کہ العزیزیہ اسٹیل ملز میں پاناما جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیاء کے بعد صرف ایک گواہ کا بیان باقی ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ دونوں ریفرنسز میں 3 ملزمان ہیں، نوازشریف کیخلاف کارروائی چل رہی ہے جبکہ ان کے صاحبزادوں حسن اور حسین نواز کو احتساب عدالت عدم حاضری پر اشتہاری قرار دے چکی ہے۔

نیب پراسیکیوٹر نے کہا کہ نوازشریف کوسیکیورٹی خدشات کے باعث پیش نہیں کیا گیا احتساب عدالت کے جج نے کہا کہ دفاع کے وکیل آجائیں پھردیکھتے ہیں۔

احتساب عدالت کے جج محمد ارشد ملک نے پیر کو نوازشریف کو پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے آئندہ سماعت پرجے آئی ٹی سربراہ واجد ضیاء کو بھی طلب کرلیا۔

Advertisements
merkit.pk

بعدازاں معزز جج محمد ارشد ملک نے شریف خاندان کیخلاف العزیزیہ اسٹیل ملز اور فلیگ شپ ریفرنسز کی سماعت پیر تک ملتوی کردی۔

  • merkit.pk
  • merkit.pk

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply