• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • الاسکا: گرمی کی شدت، برفانی ریچھ کو بھی پسینہ آ جائے

الاسکا: گرمی کی شدت، برفانی ریچھ کو بھی پسینہ آ جائے

امریکی ریاست الاسکا کے متعدد شہروں میں ریکارڈ درجہ حرارت ماپا گیا ہے۔ اس غیرمعمولی گرمی سے نہ صرف انسان بلکہ فطرت بھی متاثر ہو رہی ہے۔

موسم سرما کے اختتام پر قطبی امریکی ریاست الاسکا کو ریکارڈ درجہ حرارت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ الاسکا میں واقع ماحولیاتی مرکز سے وابستہ ماہر ماحولیات ریک تھامن نے بتایا ہے کہ الاسکا کے شمالی مقامات پر درجہ حرارت میں بیس سینٹی گریڈ کا اضافہ ہوا ہے جو کہ ماضی کی نسبت بہت زیادہ ہے۔ الاسکا کے شمالی ساحلی شہر بارو میں گزشتہ جمعرات کے دن درجہ حرارت منفی ایک سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا تھا جبکہ اس موسم میں اس علاقے کا درجہ حرارت عموماﹰ منفی بیس سینٹی گریڈ تک ہوتا ہے۔

اس امریکی ریاست میں پہلے کبھی بھی اس قدر گرم درجہ حرارت ریکارڈ نہیں کیا گیا۔ ماہرین کے مطابق آئندہ چند روز میں اس خطے میں گرمی کی لہر مزید شدت اختیار کر سکتی ہے۔ ماہرین ماحولیات کے مطابق درجہ حرارت میں تبدیلی کی وجوہات گرم موسم اور زمینی درجہ حرارت میں اضافہ ہیں۔

الاسکا میں ہر سال ’سلیڈ ڈاگ ریسنگ‘ کے متعدد ٹورنامنٹ منعقد کروائے جاتے ہیں۔ لیکن برف کی کمی کی وجہ سے کتوں کی دوڑ کی ایسی تمام تقریبات منسوخ کر دی گئی ہیں۔ اس سے بڑا مسئلہ الاسکا میں ٹرانسپورٹ کے شعبے کو درپیش ہے۔ الاسکا کے دریاؤں پر جمی برف پتلی ہو چکی ہے اور اب ان دریاؤں پر جمی برف کو بطور سڑک استعمال نہیں کیا جا سکتا۔ الاسکا کے متعدد شہروں کو صرف ایسی سڑکیں ہی ایک دوسرے سے جوڑتی ہیں۔ ان شہروں تک ضروریات زندگی کا سامان دریاؤں پر بنی انہی برفیلی سڑکوں کے ذریعے پہنچایا جاتا ہے۔

ماہرین کے مطابق اس گرمی کی وجہ سے سگ ماہی کی نسل کو بھی شدید خطرات لاحق ہو سکتے ہیں۔ کیونکہ سگا ماہی کے بچوں کی پیدائش برف اور ٹھنڈے موسم میں ہوتی ہے۔

اے ایف پی

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *