بھٹو - ٹیگ

پاکستان کے پہلے آئین کی تاریخ/حسین شہید سہروردی۔۔۔۔۔داؤد ظفر ندیم/قسط10

پاکستان میں جو سیاست دان آئین کی اہمیت کو سمجھتے تھے ان میں حسین شہید سروردی سب سے نمایاں تھے، ایوب خاں کے دور میں سہروردی نے ہر ممکن طریقے سے یہ بات مقتدر حلقوں تک پہنچائی کہ سہروردی وہ←  مزید پڑھیے

ایک زرداری سب پر بھاری تھا،ہے اور رہے گا۔۔۔۔۔عارف خٹک

کراچی کے معروف صنعتکار خاندان، جس کی دو ملز نوشہرو فیروز سندھ میں لگی ہیں۔ پانچ ہزار ملازم ہیں،جس میں نوے فی صد سندھی ہیں۔ اس صنعت کار سے زرداری اور اس کی بہن فریال تالپور نے پچھلے دورِ حکومت←  مزید پڑھیے

سقراط، بھگت سنگھ، بھٹو اور نیلسن منڈیلا نے یو ٹرن کیوں نہ لیا۔۔۔۔ارشد بٹ

سقراط کے سر پر انسانی تاریخ کے بے وقوف اعظم کا تاج پہنایا جانا چاہے کہ وہ یو ٹرن کے عظیم فلسفہ سے بے بہرہ تھا۔ حاکموں کے جھوٹ کو سچ نہ کہا، نام نہاد منصفوں کے سامنے کلمہ حق←  مزید پڑھیے

بھٹو کا دوست ، گدھے والا فقیر ۔۔۔ اسلم ملک

لاڑکانہ کے پرانے لوگوں کو آج بھی ذوالفقار علی بھٹو اور ایک درویش صفت فقیر شخص جمعہ فقیر کی دوستی یاد ہوگی۔ یہ واحد شخص تھا جو بھٹو صاحب سے مذاق بھی کرتا تھا اور طنزیہ جملے بھی کس دیتا←  مزید پڑھیے

بدلے بدلے میرے سرکار نظر آتے ہیں۔۔۔۔محمد اقبال دیوان/قسط2

تبدیلی کے یوں اچانک آجانے پر اقبال دیوان کا مضمون، اقبال دیوان ہمارے مومن مبتلا،ایک فقیر راہ گزر ہیں ۔سندھ سرکار کے سابق سیکرٹری اور فورتھ کامن کے افسر ہیں۔ہماری طرح یہ بھی عمران خان کے فدائیان خلق میں شمار←  مزید پڑھیے

ریاست کی قوت نافذہ کس کے ہاتھ میں ہے؟۔۔۔تنویر افضال/قسط1

فیصلہ آگیا اور اس کےصاف و شفاف ہونے کے بارے میں اس سے زیادہ کیا کہا جائے کہ  دوست و دشمن سبھی کو پہلے ہی سے اندازہ تھا کہ کیسا فیصلہ ہوگا۔ اس کے قانونی پہلوؤں کے بارے میں بھی←  مزید پڑھیے

میاں صاحب!بھٹو بننا آسان نہیں۔۔۔۔کاشف بلوچ

اس کے اندر ایک قبیح بدبو دار چھپا ہوا تھا۔یہ تو بھلا ہو ضیا کا کہ اس نے ساری بدنامی اپنے سر لے لی ورنہ بھٹو سے وہ تمام سیاہ کاریاں مرتکب ہونے والی تھیں جو ضیا نے اپنے گیارہ←  مزید پڑھیے

بھٹو زندہ ہے۔منصور ندیم

پاکستان میں مسلم لیگ تحریک کے قائدین کے بعد اگر کسی سیاستدان کو عوامی شہرت اور پذیرائی ملی وہ ذوالفقار علی بھٹو تھے، یہ الگ بات ہے کہ ان کے آباء کے پاس بھی انگریزوں کی غلامی کا  سرٹیفکیٹ  تھا ←  مزید پڑھیے

اپُن کا کراچی،شیخ دیدات سے ملاقات۔۔محمد اقبال دیوان/قسط4

شہر کراچی سے ہماری شعوری یادوں کا سفر سن ساٹھ کی دہائی سے شروع ہوتا ہے۔یہ سفر تاحال جاری ہے۔ سوچا ہے کہ کراچی کے بارے میں جو پڑھا،دیکھا اور سنا ان کو یک جا کرکے آپ کی خدمت میں←  مزید پڑھیے

کمانڈو بابو اور سول سروس آف پاکستان (1947-2018)۔۔عارف انیس ملک

کیا سول سروس آف پاکستان مر چکی ہے یا نزع کے عالم میں ہے؟اگر میرے بس میں ہو تو یہ کتبہ بیوروکریسی کی قبر پر آویزاں کردینا چاہیے. ویسے سول سروس کب کی دم توڑ چکی ہے، باضابطہ تدفین کا←  مزید پڑھیے

صرف دو آپشنز ہیں۔۔طارق احمد

ملک میں ستر سال سے جاری خاکی و سول برتری کی کشمکش ایک نئے فیز میں داخل ہو گئی  ہے۔ اور اس وقت مسلم لیگ ن کے پاس صرف دو ہی  آپشنز بچے  ہیں۔ ایک سیدھا کھلا ٹکراؤ ۔ اس←  مزید پڑھیے

سقوط ڈھاکہ 16دسمبر 1971۔محمد عتیق اسلم

 وہی قومیں ترقی کرتی ہیں جو ماضی کے تلخ حقائق کو مدنظر رکھتے  ہوئے اپنے مستقبل کو تابناک بناتی ہیں مگر ہم ہیں کہ ماضی کی غلطیوں سے سبق سیکھنے کی بجائے اسی ڈگر پر چلے جارہے ہیں یہاں46سال قبل←  مزید پڑھیے

زرداری پر ایمانداری کا کوئی الزام نہیں

ضیا الحق نے جب یہ دیکھا کہ پیپلز پارٹی کے بانی اور چیئرمین ذوالفقار علی بھٹو کی مقبولیت اقتدار سے علیحدہ ہونے کے بعد بھی کم نہیں ہورہی تو اُس نے غیر سیاسی ہتھکنڈے استعمال کیے۔ سب سے پہلے اُس←  مزید پڑھیے