اسلم اعوان - ٹیگ

پولیس کی زیادتیوں کا تدارک کون کرے گا؟۔۔اسلم اعوان

پولیس آرڈر 2000 کی منظوری کے ذریعے اس امید پہ پولیس کو جوابدہی کے روایتی نظام سے ماورا کرکے وسیع اختیارات دیئے گئے کہ یہاں سیاسی مداخلت سے آزاد ہو کے فرینڈلی ماحول میں اعلی سطح کی مہارت پہ مبنی←  مزید پڑھیے

ضم شدہ اضلاع کے مسائل۔۔اسلم اعوان

خیبر پختونخوا میں ضم ہونے والے قبائلی اضلاع میں بنیادی انتظامی ڈھانچے کی تشکیل جیسے اہم کام کی تکمیل میں غیر ضروری تاخیرکئی سیاسی‘سماجی اور قانونی پیچیدگیوں کا سبب بن رہی ہے۔فاٹا کو ہنگامی بنیادوں پہ صوبہ خیبر پختونخوا کا←  مزید پڑھیے

جنگ بھڑک اُٹھی ہے۔۔۔اسلم اعوان

مولانا فضل الرحمٰن کے آزادی مارچ کے دوران مسلم لیگ کے سپریم لیڈر نواز شریف کی نیب تحویل میں گرتی ہوئی صحت سے منسوب خبروں نے پورے سیاسی ماحول کو گرفت میں لے لیا،سوشل میڈیا کے علاوہ قومی دھارے کا←  مزید پڑھیے

بعدازخرابی بسیار۔۔۔اسلم اعوان

طویل ردّ و کد کے بعد بلآخر حکومت نے مولانا فضل الرحمٰن سے بات چیت کےلئے وزیر دفاع،پرویز خٹک،کی سربراہی میں مذاکراتی کمیٹی بنا دی،مگر اس مرحلہ پہ مولانا کےلئے حکومت کے ساتھ مذاکرات کی میز پہ بیٹھنا ممکن نہیں←  مزید پڑھیے

قومی وسائل کا تحفظ کیسے ممکن ہو گا؟۔۔۔اسلم اعوان

پچھلی دو دہائیوں میں دہشتگردی کے آشوب کے باعث خیبرپختون خوا کے سرکاری اداروں کی قوت کار میں کمی آئی اور صاحب اختیار افسران نے قومی امانتوں کے تحفظ کی ذمہ داری کو پس پشت ڈال کے مصلحت اوربزدلی کو←  مزید پڑھیے

جمہوریت اور ہمارا اضطراب۔۔اسلم اعوان

یوم جمہوریت کے موقع  پہ جمہوریت کے متلاشی اس ملک میں کوئی تقریب منعقد ہوئی ،نہ کسی کو ڈیموکریسی کی برکات زیربحث لانے کا خیال آیا،بلاشبہ عام انسانوں کےلئے جمہوریت ہمیشہ ایک پُرکشش چیز رہی کیونکہ اس نظام میں دانا←  مزید پڑھیے

خطّے کو جنگ سے بچا سکتے ہیں؟۔۔۔اسلم اعوان

امریکہ اور طالبان کے درمیان کم و بیش سات ماہ تک جاری رہنے والے امن مذاکرات فی الوقت اس پیچیدہ جنگ کی حرکیات میں ڈوب گئے ہیں،مذاکرات کے دوران سال رواں کی پہلی شش ماہی میں جنگ سے منسلک واقعات←  مزید پڑھیے

دنیاکا محافظ ہار گیا؟۔۔۔۔اسلم اعوان

امریکہ اور طالبان کے درمیان اصولی طور پہ امن معاہدہ طے پا جانے کے باوجودپانچ ستمبر کی صبح کابل کے محفوظ ترین علاقہ میں کاربم دھماکہ میں چار غیر ملکیوں سمیت دس افراد کی ہلاکت کے بعد امریکی صدر کی←  مزید پڑھیے

جنگ کی طرف بڑھتے قدم۔۔۔اسلم اعوان

یہ سوئے اتفاق ہے یا تقدیر کا جبر کہ سنہ 1971 کی طرح آج بھی روایتی دشمن بھارت کے ساتھ عین اس وقت کشیدگی انتہاؤں کو چھونے لگی ہے جب قوم کی اجتماعی قوت منتشر اور ریاستی نظام بتدریج ڈھلوان←  مزید پڑھیے

کشمیر کی نظریاتی تقسیم۔۔اسلم اعوان

مودی گورنمنٹ نے کشمیر کی آئینی حیثیت  تبدیل کرکے 70 سالوں پہ محیط اُس مہیب جمود کو توڑ ڈالا جو اس اہم مسئلے  کے حل کی راہ میں حائل تھا،دو ایٹمی طاقتوں کے مابین جنگ کے خطرے سے پھوٹنے والے←  مزید پڑھیے

کشمیر کا مستقبل ثالثی سے جڑ گیا ہے؟۔۔۔۔۔اسلم اعوان

اس وقت مملکت کی مشرقی و مغربی سرحدوں پہ کئی دہائیوں سے پنپنے والے جنوبی ایشیا کے دو دائمی تنازعات،کشمیر ایشو اورافغان تنازعہ،بظاہر تحلیل ہوتے نظر آ رہے ہیں اورہمارے خیال میں فریقین اب ان دونوں تنازعات کو بنیادی وجوہ←  مزید پڑھیے

تنازعات میں توسیع نہیں،توازن چاہیے۔۔۔۔اسلم اعوان

مولانا فضل الرحمٰن کی اے پی سی میں اختلافات کی خبروں کے بعد حکومت اگر اپوزیشن جماعتوں کے خلاف احتسابی کاروائیوں کو محدود کرکے چھوٹے گروپوں کو مینج کرلیتی تو سیاسی اضطراب میں کچھ کمی آ سکتی تھی مگر افسوس←  مزید پڑھیے

وار ڈپلومیسی کے مضمرات۔۔۔۔اسلم اعوان

ایک ایسے  لمحے  میں جب پاکستان تاریخ کی طویل ترین افغان جنگ کی  دلدل سے نکلنے  کی کوشش کے علاوہ داخلی معاشی بحران پہ قابو پانے میں سرگرداں ہے،عین اسی وقت ایران،امریکہ کشیدگی کے نتیجہ میں شط العرب اور خلیج←  مزید پڑھیے

تنازعات میں توازن چاہیے۔۔۔اسلم اعوان

 انتخابی عمل کے پہلو بہ پہلو سیاسی جماعتوں اور مقتدرہ کے درمیان پروان چڑھنے والی نامطلوب کشمکش بائیس کروڑ آبادی کی حامل اور اٹیمی قوت سے لیس مملکت کو کسی بڑے سیاسی بحران کی طرف دھکیل سکتی ہے کیونکہ مذہبی←  مزید پڑھیے

انتخابات پہ بے یقینی کے سائے ۔۔۔اسلم اعوان

 عام انتخابات کی مہم کے دوران جہازی سائز کے پینا فلیکس،ہولڈنگ اور پوسٹرز کی بہار جمہوری عمل میں شہریوں کی پُرجوش تلویث اور زندگی کی بوقلیمونی کا پتہ دیتی ہے،اگرچہ نت نئے قوانین و ضوابط کے ذریعے جمہوری آزادیوں کو←  مزید پڑھیے

نئے صوبے کیسے بنیں گے؟ ۔۔۔اسلم اعوان

بد قسمتی سے ایک ایسے وقت میں نئے صوبوں کے قیام کی بازگشت سنائی دی، جب قوم ذہنی طور پر منقسم اور سیاسی انتشار میں الجھی ہوئی ہے، ملک کی تینوں بڑی جماعتوں کے اختلافات نے قومی اتفاق رائے کے←  مزید پڑھیے

ہم آزادی سے خائف ہیں؟ ۔۔۔اسلم اعوان

ہمارے سماج میں جس سرعت کے ساتھ سیاسی تبدیلیوں کے عمل کو ہوا دی گئی اس سے عدم استحکام کے خطرات بڑھتے جا رہے ہیں،انیس سو نوے کی دہائی میں سیاسی جماعتوں نے کھینچاتانی کے نامطلوب نتائج اور جنرل مشرف←  مزید پڑھیے

شہر کی روح تھک گئی ۔۔اسلم اعوان

 ہمیں یہ سوال کرنے کی اجازت تو نہیں کہ ملک کو افغانیوں کی اس جنگ میں کس نے دھکیل کے وسیع پیمانے پہ موت کا خوف اور افلاس پھیلایا ۔ جس نے پاکستانیوں کی روح کو تاریک کر دیا،اس سے←  مزید پڑھیے

اقتدار کی تکون ٹو ٹ گئی ہے؟۔۔اسلم اعوان

ایل ڈی اے کے سربراہ احد چیمہ کی نیب کے ہاتھوں گرفتاری کے بعد اقتدار کی غلام گردشوں میں پروان چڑھنے والی اختیارات پہ تصرف کی جنگ جزویات تک اتر آئی اور سیاسی کشمکش کی اس آگ نے پارلیمنٹ اور←  مزید پڑھیے

انتظامی اتھارٹی کے ہاتھوں زرعی نظام کا استحصال۔۔اسلم اعوان

 اس وقت ملک بھر میں کماد کے کاشتکاروں کو جس اذیت ناک مراحل سے گزرنا پڑ  رہا ہے یہ زرعی معیشت کے حامل کسی بھی ملک کے پالیسی سازوں کی ناکامی اور انتظامی اتھارٹی کے زوال کا مظہر سمجھا جائے←  مزید پڑھیے