نگارشات    ( صفحہ نمبر 388 )

لڑکی کا نکاح،مذہبی اور سماجی پہلو۔۔ڈاکٹر طفیل ہاشمی

انعام رانا کی  وال پر ایک پوسٹ دیکھی۔جو کچھ یوں تھی۔۔  “جسٹس نواز چوہان کی عدالت میں تھا(کیا قابل جج تھے)، ایک وکیل صاحب نے اپنی بیٹی کی  مرضی کی شادی پر کیس لگایا ہوا تھا۔ چوہان صاحب نے باریش←  مزید پڑھیے

سانحہ باجوڑ سے سانحہ پشاور تک۔بلال شوکت آزاد

یہ بھی بچے تھے, معصوم تھے, طالبعلم تھے, بے گناہ اور اسی ملک کے شہری تھے۔ان کا گناہ بھی وہی کلمہ اور وہی شہریت تھی دشمن کی نظر میں جو آرمی پبلک سکول پشاور کے معصوم بچوں کا تھا۔ان کے←  مزید پڑھیے

منتشر نظریہ،منقسم سوچ اور گلگت بلتستان کا اصل مسئلہ۔شیر علی انجم

محترم قارئین کہتے ہیں کسی بھی معاشرے میں بسنے والے افراد کا اخلاقی اور معاشرتی رویہ اس قوم کی پہچان ہوتی ہے۔ بلکہ روزمرہ کے معمولات میں رونما ہونے والے تمام تر واقعات میں ہمارا مثبت یا منفی رویہ بھی←  مزید پڑھیے

تفسیر ابنِ کثیر۔علامہ عماد الدین ابنِ کثیر۔پارہ”الم”سورۃ بقرہ

بَلَى مَنْ أَسْلَمَ وَجْهَهُ لِلَّهِ وَهُوَ مُحْسِنٌ فَلَهُ أَجْرُهُ عِنْدَ رَبِّهِ وَلَا خَوْفٌ عَلَيْهِمْ وَلَا هُمْ يَحْزَنُونَ   وَقَالَتِ الْيَهُودُ لَيْسَتِ النَّصَارَى عَلَى شَيْءٍ وَقَالَتِ النَّصَارَى لَيْسَتِ الْيَهُودُ عَلَى شَيْءٍ وَهُمْ يَتْلُونَ الْكِتَابَ كَذَلِكَ قَالَ الَّذِينَ لَا يَعْلَمُونَ مِثْلَ قَوْلِهِمْ فَاللَّهُ←  مزید پڑھیے

نئے صوبوں کی ضرورت اور اس کا طریقہ کار۔عمیر فاروق

 زرداری نے سرائیکی صوبہ کی حمایت کا اعلان کیا تو نئے صوبوں پہ بحث پھر سے چھڑ گئی۔ نئے صوبے بننے چاہییں اور یہ وقت کی ضرورت بھی ہے۔ ہم کب تک انگریز کے بنائے ہوئے صوبوں پہ انحصار کرتے←  مزید پڑھیے

اسلامی اور طالبانی جہاد۔قمر نقیب خان

کہاوت مشہور ہے کہ محبت اور جنگ میں سب کچھ جائز ہے، Every thing is fair in love and war. لیکن رحمت للعالمین نے اس نظریہ کی یکسر نفی کر دی. رسول اللہﷺ  نے جنگ کے لیے نہ صرف اصول←  مزید پڑھیے

حامد میر کی مجرمانہ افتراطرازی۔ اسحاق محمدی

پچھلے دنوں کابل سےعاصمہ شیرازی کے ایک پروگرام جس کے اہم موضوعات میں پاکستان اور افغانستان کے درمیان اعتماد سازی اور دہشت گرد تنظیم داعش کے بڑھتے ہوئے خطرات شامل تھے’ میں حسب عادت حامد میر نے موضوع سے ہٹ←  مزید پڑھیے

کیا غیر مسلم جنت میں جا سکتا ہے؟ عظیم عثمانی

بحیثیت قرآن حکیم کے طالبعلم جس بات کے ہم قائل ہیں وہ یہ ہے کہ کم از کم تین چنیدہ اور بنیادی حقائق ایسے ہیں جن کا شعور ہماری فطرت میں پیوست یعنی ودیعت کردیا گیا ہے. ان حقائق کے←  مزید پڑھیے

شام کا بحران۔ذوالقرنین ہندل

شام میں خانہ جنگی شروع ہوئے چھ سال سے زیادہ  عرصہ گزر چکا ہے ۔لاکھوں لوگ جان کی بازی ہار چکے۔ انسانیت کی دھجیاں اڑائی گئیں۔مگر شام کا داخلی بحران ابھی بھی ختم نہیں ہوا۔شاید اسے ختم ہونے نہیں دیا←  مزید پڑھیے

سو لفظوں کی کہانی ۔ منافع بخش۔مدثر ظفر

میرا دوست “جوجو” ، حلوائی ہے۔ پچھلے دنوں کاروبار مندا تھا۔ جگہ بدل کر دیکھا لیکن سب بے سود۔ کبھی ریلوے اسٹیشن پر, کبھی بس اسٹاپ پر، کبھی مین بازار میں، لیکن مٹھائی خریدنے والے دن بہ دن کم ہوتے←  مزید پڑھیے

تفسیر ابنِ کثیر۔علامہ عماد الدین ابنِ کثیر۔پارہ”الم”سورۃ بقرہ

 وَدَّ كَثِيرٌ مِنْ أَهْلِ الْكِتَابِ لَوْ يَرُدُّونَكُمْ مِنْ بَعْدِ إِيمَانِكُمْ كُفَّارًا حَسَدًا مِنْ عِنْدِ أَنْفُسِهِمْ مِنْ بَعْدِ مَا تَبَيَّنَ لَهُمُ الْحَقُّ فَاعْفُوا وَاصْفَحُوا حَتَّى يَأْتِيَ اللَّهُ بِأَمْرِهِ إِنَّ اللَّهَ عَلَى كُلِّ شَيْءٍ قَدِيرٌ ترجمہ: قومی عصبیت باعث شقاوت ہے ابن←  مزید پڑھیے

قتل یا شہادت؟۔رابعہ احسن

16 دسمبر2014  کی صبح پاکستانیوں  کے لئے    دکھ کی تاریخ رقم کرگئی۔  اسی تاریخ کو  سقوط ڈھاکہ  سے  پاکستان  دو لخت ہوا تھا،تین سال پہلے اسی صبح   درجنوں ماؤں کی گود اجڑ گئی۔ماں کی گود اور  سردی کے خوف←  مزید پڑھیے

اساتذہ سے بدسلوکی،تربیت میں کمی کہاں؟۔اشفاق پرویز

استاد قوم کا معمار ہوتا ہے۔ قوم جو کچھ ہے اُسی کی بدولت ہے۔ بچے استاد کی ہی تقلید کرتے ہیں۔ استاد کا ہر معاشرے میں ایک مقام ہوتا ہے جس سے کسی کوانکار نہیں۔ استاد چاہے تو غلام قوم←  مزید پڑھیے

بھوک کے خلاف جہاد، رابن ہڈ آرمی۔منصور ندیم

چند  رو ز  قبل محترم ابن فاضل کا مضمون دیکھا جو کھانا یا  غذائی ضرورت پر تھا۔ مضمون فکاہیہ انداز میں تھا ، انہوں نے پوری دنیا کی مختلف تہذیبوں کے حوالے سے غذائی ضروریات  کا تذکرہ کیا تھا،بہت اچھا←  مزید پڑھیے

انسانیت کی عظیم چھلانگ۔محمد شاہزیب صدیقی/حصہ اول

بلاشبہ انسان کا چاند پر پہنچ جانا ایسا عظیم کارنامہ  ہے جسے بہت سے لوگ آج بھی تسلیم کرنے سے انکاری نظر آتے ہیں۔ امریکہ ، یورپ، آسٹریلیا الغرض ہر براعظم میں ایسے لوگ  اچھی خاصی تعداد میں موجود ہیں←  مزید پڑھیے

مستقبل کی دنیا اور بچوں کی تربیت۔سید عبدالوہاب شیرازی

بچوں کی تربیت مشکل ترین اور صبر آزما کاموں میں سے ایک کام ہے۔ ہمارے ہاں جیسا کہ ہر شعبہ تنزلی کا شکار ہے وہی معاشرتی اقدار بھی تباہی کے دہانے پر کھڑی ہیں۔ چند سال پہلے تک ہر کام←  مزید پڑھیے

سولہ دسمبر۔۔ شاہانہ جاوید

 16 دسمبر ہم پاکستانیوں کے دلوں میں ایک ناسور کی طرح پل رہا ہے اس دن ہم نے اپنا ایک بازو مشرقی پاکستان کھویا، اور  کوئی سبق نہ سیکھا. پے در پے غلطیاں کرکے ملک کو اس نہج پر پہنچادیا←  مزید پڑھیے

کیلا ریپبلک۔معاذ بن محمود

پہلا منظر: جی یہ سانڈے کا تیل۔ اصلی ہے جی۔ سو فیصد اصلی۔ جی؟ کیا کہا؟ ثبوت دوں؟ آئیں آئیں جی آپ یہاں آئیں۔ یہاں جی یہاں۔ یہ دیکھیں میری تصویر تین ہفتے پرانی۔ دیکھیں ناں جی۔ نہ جی شرم←  مزید پڑھیے

ذرا تم دام تو بدلو۔فاروق بلوچ

 “اگر یہ فیصلہ  مشہور  ہو  جائے کہ کل بڑے پیمانے پہ سرمایہ داروں کو پھانسی دی جائے گی تو آج یہ سرمایہ دار رسیاں بنانا شروع کر دیں گے”. کارل مارکس پانامہ پیپرز کا ہنگامہ ابھی تک پوری شد و←  مزید پڑھیے

بے حس اور غدار قوم۔۔بلال شوکت آزاد

جب قومیں بے حس اور خود غرض ہوں, جب اپنا تشخص قوم کو بے معنی لگے, جب غیر اقوام اور غیر ممالک کی محبتوں کے چراغ دلوں میں منور ہوں, جب ثقافتی یلغار کا جادو سر چڑھ کر بولے تو←  مزید پڑھیے