مکالمہ کی تحاریر
مکالمہ
مکالمہ
مباحثوں، الزامات و دشنام، نفرت اور دوری کے اس ماحول میں ضرورت ہے کہ ہم ایک دوسرے سے بات کریں، ایک دوسرے کی سنیں، سمجھنے کی کوشش کریں، اختلاف کریں مگر احترام سے۔ بس اسی خواہش کا نام ”مکالمہ“ ہے۔

اشبھ دنوں کی شبھ کامنا۔۔ربیعہ سلیم مرزا

یہاں تو چالیس سال بھی بہت ہیں ۔جینا ایسے لگنے لگا  ہے  جیسے طویل سفر  ہے  جو ختم ہی نہیں ہوتا ۔۔۔ اور گزشتہ پانچ سال تو ایسے گزرے کہ جی ہر دن سوچتا ہے “جنی ہوئی بتھیری نئیں “؟←  مزید پڑھیے

پچیس سال بعد۔۔رؤف کلاسرا

پچھلے دنوں تحریک انصاف کے قیام کے پچیس سال پورے ہونے کا جشن منایا گیا۔ 1996ء میں کس نے سوچا تھا ایک دن عمران خان وزیراعظم بن جائیں گے۔ لوگ اُس وقت نواز لیگ اور پیپلز پارٹی کی سیاست اور←  مزید پڑھیے

جاگا مورا موہن رے۔۔فاخرہ نورین

گھسا پٹا سہی مگر خاصا حقیقی لطیفہ ہے کہ ایک نے دوسری سے پوچھا یہ لڑکے کیا باتیں کرتے ہیں؟ دوسری نے کہا وہی جو ہم لوگ کرتی ہیں ۔ پہلی کے کان لال ہو گئے دھواں اس کے کانوں←  مزید پڑھیے

معاہدہ کراچی !تاریخ گلگت بلتستان کا ایک سیاہ باب(1)۔۔اشفاق احمد ایڈووکیٹ

گلگت بلتستان کی جغرافیائی حدود شمال میں چین کے صوبے Xinjiang , مشرق میں انڈیا کے زیر کنٹرول جموں اینڈ کشمیر اور جنوب میں پاکستان کے زیر انتظام آزاد کشمیر اور مغرب میں واخان کوریڈور کے زریعے افغانستان اور سنٹرل←  مزید پڑھیے

افضل خان کی غلطی نہ دہرائیے گا۔۔محمد اظہار الحق

بھارتی حکومت کی ذہنیت کو سمجھنے کے لیے شیوا جی کے مطالعہ سے بہتر کوئی سبق نہیں! 1627ء میں پیدا ہونے والا شیوا جی ان پڑھ تھا مگر بھیس بدلنے، جنگل میں چھپنے اور نشانہ بازی میں طاق تھا۔ عملی←  مزید پڑھیے

کورونا کی لہر: لے ڈوبی بھارت کو وشو گورو بننے کی چاہت(دوسرا،آخری حصّہ)۔۔افتخار گیلانی

بھارتی دارلحکومت نئی دہلی میں جس طرح کی نفسانفسی کا عالم ہے،دل خون کے آنسو رو رہا ہے۔ احباب کے فون آرہے ہیں، کسی کو شمشان گھاٹ میں سفارش چاہئے، تو کسی کو اپنے کسی قریبی مردہ رشتہ دارکو جلانے←  مزید پڑھیے

کورونا کی لہر: لے ڈوبی بھارت کو وشو گورو بننے کی چاہت(1)۔۔افتخار گیلانی

بھارتی دارلحکومت نئی دہلی میں جس طرح کی نفسانفسی کا عالم ہے،دل خون کے آنسو رو رہا ہے۔ احباب کے فون آرہے ہیں، کسی کو شمشان گھاٹ میں سفارش چاہئے، تو کسی کو اپنے کسی قریبی مردہ رشتہ دارکو جلانے←  مزید پڑھیے

کمبل۔۔رؤف کلاسرا

پاکستان میں عسکری قیادت کا صحافیوں کو لنچ یا ڈنر پر بلا کر مختلف ایشوز پر بریفنگ دینا ایک پرانی روایت ہے۔ یہ روایت جنرل ضیاکے دور میں زیادہ پروان چڑھی جب انہوں نے اپنے ہم خیال صحافیوں کو‘ خصوصاً←  مزید پڑھیے

انصار اللہ یمن شہر ماٰرب کے دروازے پر۔۔ثاقب اکبر

تازہ ترین اطلاعات کے مطابق یمن کی عوامی رضاکار فوج ماٰرب شہر سے تقریباً دو کلو میٹر کے فاصلے پر پہنچ چکی ہے۔ مرکز شہر سے یہ فاصلہ پانچ کلو میٹر رہ گیا ہے۔ عالمی سطح پر یہ توقع کی←  مزید پڑھیے

کیا بھارت میں مکافات عمل ہو رہا ہے؟۔۔علی بخاری

کرونا کی حالیہ لہر پر لکھنے کے لیے کئی دوستوں نے حکم دیا ،لیکن ہر ایک کو یہی کہا کہ کیا لکھیں، کیوں لکھیں اور کیسے لکھیں کہ جس سے کسی اربابِ اختیار کے کان پر جوں رینگ جائے، جب←  مزید پڑھیے

شیخ چلی اور جدید دنیا کے روبوٹ۔۔مجاہد خٹک

بچپن میں جب رات کو نیند نہیں آتی تھی تو چھت کو تکے رہنا ایک معمول تھا۔ وہاں بہت معمولی سے ابھار جگہ جگہ موجود تھے جو بہت غور سے دیکھنے پر ہی دکھائی دیتے تھے۔ روزانہ سونے سے پہلے←  مزید پڑھیے

مقدمہ گلگت بلتستان کا حل کیا ہے؟(2،آخری حصہ)۔۔اشفاق احمد ایڈووکیٹ

چائنہ  پاکستان اکنامک کوریڈور (سی پیک ) گلگت بلتستان سے گزر کر بلوچستان کی طرف جاتاہے جہاں گوادر پورٹ ہے  ، اور اس پورٹ سے چین اپنے برآمدات کو دنیا بھر کی منڈیوں تک پہنچائے گا گوادر پورٹ سے دنیا←  مزید پڑھیے

ملکی سلامتی اور قومی خودمختاری کا تحفظ۔۔محمد نوید عزیز

ملکی سلامتی سے مراد ملک کا امن و امان اور ملک کا صحیح سالم زندہ رہنا ہے اور قومی خودمختاری سے مراد ایک ایسی قوم ہے جو اپنی آزادی رائے کا اختیار رکھتی ہو اور وہ اپنی تجاویز اور مشوروں←  مزید پڑھیے

کئی چاند تھے سر ِ آسماں(2،آخری قسط)۔۔تبصرہ: پروفیسر ذوالفقار احمد ساحر

دراصل یہ اس زمانے کے فیشن ایبل رؤسا کی خواتین کالباس تھا۔طبقہ رؤسا کاتعلق چاہے کسی بھی ملک ہو،خواتین کے لباسوں کااہتمام ان کے نسوانی حسن اور بے انتہا کشش کو مزید انگیخت کرنے کے لیے کیا جاتا ہے۔ٹالسٹائی کے←  مزید پڑھیے

رمضان اور متزلزل ایمان۔۔شیخ خالد زاہد

ماہ مبارک رمضان کورونا کی احتیاطی تدابیر کیساتھ رواں دواں ہے اور پچھلے سال کی نسبت کہیں بہتر انتظامات کیساتھ مساجد میں عبادات کا اہتمام جاری ہے۔ تاحال موسم اتنا سخت نہیں کہ  روزہ داروں کیلئے کسی مشکل کا سبب←  مزید پڑھیے

راز حیات والے بابا جی۔۔عارف انیس

مولانا وحید الدین خان بھی رخصت ہوئے! انا للہ و انا الیہ راجعون۔ ذہین آنکھوں اور متجسس سراپے والی دھیمی اور باوقار شخصیت کے مالک وحید الدین خان کو دیکھ ارطغرل والے “ابن عربی” کا خیال آتا تھا۔ وہ ان←  مزید پڑھیے

کئی چاند تھے سر ِ آسماں(1)۔۔ تبصرہ:پروفیسر ذوالفقار احمد ساحر

20 دسمبر  2020  کو عزیزی جاوید (مصنف،کالم نگر،سفرنامہ نگار)نے اطلاع دی کہ شمس الرحمٰن فاروقی کاانتقال ہوگیا ہے۔کچھ دیر بعدکچھ اور جوانب سے بھی اطلاع یہی آئی۔فاروقی صاحب اپنے عہد کے اتنے بڑے عبقری تھے کہ ان کی تخلیقی جہتوں←  مزید پڑھیے

محمد خان صاحب کے نام ۔۔نویدہ کوثر

آج کا دن ،،میرے عزیز ترین  محمد خان کے نام ۔انہوں نے “بادبان” لکھی، میں نے منگوائی،پڑھی، مگر اس پہ تبصرہ کرنے سے پہلے بیمار   ہوگئی ۔ مجھے ان کی کتاب اتنی عزیز ہے کہ سب اَن پڑھ ملازمین اور←  مزید پڑھیے

ہزار بار بشوئم دہن ز مشک و گلاب۔۔ڈاکٹر اظہر وحید

ناموسِ رسالتؐ اور ختم ِ نبوتؐ ایسے اہم اور حساس موضوعات ‘ معاملاتِ ایمان میں سے ہیں۔ اِن پر کوئی کلمہ گو سمجھوتہ کرنے کا تصور بھی نہیں کر سکتا۔ ہمارے ایمان کی عمارت ہی رسولِ کریمﷺ سے غیر مشروط←  مزید پڑھیے

کھڑکی کے اس پار۔۔نعیم فاطمہ علوی

کرفیو کا عالم ہے ۔۔سڑک پریا تو مانگنے والے نظر آتے ہیں یا پھر گاڑیوں میں لوگ انجانی منزلوں پر بھاگتے دوڑتے نظر آتے ہیں۔ میں نے علوی صاحب سے کہا چلیں ہوا خوری کے لیے باہر نکلتے ہیں۔۔اپنے علاقے←  مزید پڑھیے