اقتدار جاوید کی تحاریر
Avatar
اقتدار جاوید
کتب- ناموجود نظمیں غزلیں 2007 میں سانس توڑتا هوا 2010. متن در متن موت. عربی نظمیں ترجمه 2013. ایک اور دنیا. نظمیں 2014

سرگودھا۔۔اقتدار جاوید

آج کے کالمز تختہ سیاہ اقتدار جاوید feedback: iqtidar.javed@dunya.com.pk تاریخ اشاعت 2020-10-22 الیکٹرانک کاپی سرگودھا ‘سنا ہے اٹھاون سول لائنز والی کوٹھی بک گئی ہے‘۔ اس سوال کے جواب میں وہاں پر موجود ہر ایک نے اس بات کی تصدیق←  مزید پڑھیے

مفکّر۔۔اقتدار جاوید

”ملک کسی کاغذ پر بنا کمرہ نہیں ہوتا‘‘ ایسا تاریخی جملہ لکھنا آسان بات نہیں‘ یہ جملہ وہی لکھ سکتا ہے جو اپنی ایک فکری تاریخ رکھتا ہو، جس نے اپنی فکری نہج بھی متعین کر لی ہو اور جسے←  مزید پڑھیے

ٹیچر تجھے سلام۔۔اقتدار جاوید

یوں تو دنیا میں ٹیچر ڈے منانے کے لیے مختلف دن مقرر ہیں‘ ہمسایہ ملک میں یہ پانچ ستمبر‘ ایران، بنگلہ دیش اور ہمارے ہاں پانچ اکتوبر کو منایا جاتا ہے مگر دن کے فرق سے کیا ہوتا ہے؟ اصل←  مزید پڑھیے

بائی پاس۔۔اقتدار جاوید

عمر مبین نے تو کچھ نہیں کہا، اس نے بائی پاس آپریشن کے بعد ایک خطیر رقم کی ادائیگی کی اور آپریشن کے چند دن بعد ہسپتال سے ڈسچارج ہو گیا، یہ تو میں کہہ رہا ہوں۔ اِسی شہر کی←  مزید پڑھیے

ہیرو ہونا شرط ہے‘ المیے بہت۔۔اقتدار جاوید

انگریزی میں کہتے ہیں:Show me a hero and I’ll write you a tragedy۔بعینہٖ معاملہ ہمارے ممدوح محمد پکتھال کا ہے جنہوں نے قرآن مجید کا ایسا ترجمہ کیا جس کی ایک صدی گزرنے کے بعد بھی کوئی مثال موجود نہیں۔←  مزید پڑھیے

ثقیفہ بنی ساعدہ۔۔اقتدار جاوید

دیارِ نبی پاکﷺ میں جس ہوٹل کے کمرے میں ہمارا قیام تھا‘ وہ تیسری منزل پر واقع تھا اور تھا بھی فلور کی ایک جانب، آخر میں راہداری سے الگ بالکل ایک کونے میں‘ ایسے لگتا تھا کہ یہ رہنے←  مزید پڑھیے

قطرہ۔۔اقتدار جاوید

یہ شہر ہے کہ شہرزاد کی کہانی‘ ہر رات ایک ایک نیا تجسس‘ ایک الگ طلسم۔ نہ شہرزاد کی کہانی ختم ہوتی ہے نہ اس شہر کا حسن ماند پڑتا ہے۔ کوئی نشہ ہے کہ یہاں شمال اور جنوب سے←  مزید پڑھیے

کارڈیلیا ۔۔اقتدار جاوید

کیا ہمارے ملک کی سیاست ”کنگ لیر‘‘ ڈرامہ ہے اور کیا ہمارے تمام سیاسی رہنما شیکسپیئر کے اس ڈرامے کے ہی کردار ہیں بلکہ کیا ہمارے ملک کی سیاست کے کردار کنگ لیر کے کرداروں سے زیادہ شاطر ہیں؟ ان←  مزید پڑھیے

قیمت۔۔اقتدار جاوید

ساجد کہتا ہے ”گھر ویران ہو جاتے ہیں،کاش مڈل کلاس نہ ہوتی‘‘ اور پھر اپنا فلسفہ بیان کرنا شروع کر دیتا ہے۔ ساجد کی ماں کا تنور تھا وہ تنور پر روٹیاں لگا کر ساجد اور اس کے چھوٹے بہن‘←  مزید پڑھیے

آبنائے۔۔اقتدار جاوید

آنکھ کے آبنائے میں ڈوبا مچھیرا نہ جانے فلک تاز دھارے میں گاتی ‘ نہاتی ہوئی سرخ لڑکی کی جاں اس مچھیرے میں ہے لڑکی کے گیتوں میں لنگر انداز کشتی ہے ‘ لہروں کی کروٹ ہے ‘ ساحل کا←  مزید پڑھیے

اٹلس میرے سامنے ہے۔۔اقتدار جاوید

اٹلس میرے سامنے ہے جس پر سات بّرِاعظموں کے ممالک جال در جال پھیلے ہوئے ہیں یہ بّرِ اعظم منجمد شمالی ہے یہ بّرِ اعظم جنوبی ہے یہ بّرِ اعظم یورپ ہے ۔یہ سات سمندر ہیں یہ بحر الکاہل ہے←  مزید پڑھیے

غزل۔۔اقتدار جاوید

یہ دریا ہے کوئی کہ پانی پانی گفتگو ہے ہوا کی ساحلوں سے بادبانی گفتگو ہے سمندر تیری لہریں ہیں کہ زیریں اور زبریں سمندر تیری ساری بے کرانی گفتگو ہے اکٹھے کر رہی ہے مامتا کومل سے تنکے شجر←  مزید پڑھیے

لاہور میں پانی کی حفاظت کی کہانی۔۔اقتدار جاوید

لاہور میں پانی کی کمیابی اور زیر زمین پانی کی سطح آٹھ سو فٹ تک جانے کی کہانی کا آغاز آج سے دو عشرے قبل دریائے راوی پر انڈیا کے دو ڈیمز مادھو پور اور تھین ڈیم بنانے سے آغاز←  مزید پڑھیے

غزل۔۔اقتدار جاوید

ہمارے کام رفتہ رفتہ سارے بن رہے تھے کہ دریا چل پڑا تھا اور کنارے بن رہے تھے کسی سے گفتگو آغاز ہونا چاہتی تھی خدا نے بولنا تھا ،تیس پارے بن رہے تھے بچھایا جا چکا تھا اک بچھونا←  مزید پڑھیے

سیاہ فامیت نہیں نسل پرستی خطرناک ہوتی ہے۔۔ اقتدار جاوید

کلائیو لایڈ کی ٹیم نے ستر کے عشرے میں دنیائے کرکٹ میں حکمرانی کی، ہمارا تو وہ بچپن کا زمانہ تھا، اب پچپن کا زمانہ بھی گزر گیا، اس وقت اسی ٹیم کا شہرہ تھا اور کالی آندھی کی کوئی←  مزید پڑھیے

قلمی جنگ ِ صفیّن۔۔اقتدار جاوید

قلمی جنگ ِ صفّین نامی کتاب دو صحافیوں، دو عالموں اور دو نابغوں یعنی مولانا محمد علی جوہر اور خواجہ حسن نظامی کے درمیان بحث پر مشتمل ہے ۔نام اس کا خاصہ معنی خیز ہے ویسے تو جنگ ِ صفین←  مزید پڑھیے

جو ہوا حال ہمارا سو تمہارا ہو گا۔۔اقتدار جاوید

جان بولٹن پچھلی نصف صدی سے امریکی سیاست میں اہمیت کی حامل شخصیت ہیں مگر شہرت انہیں ٹرمپ کے سلامتی کے مشیر بننے، اس مشاورت سے استعفٰی اور کتاب لکھنے اور اس کے مبنی بر حقائق مندرجات سے حاصل ہوئی←  مزید پڑھیے

غزل۔۔اقتدار جاوید

خاموش گلی کی نکڑّ پر کوئی وقت رکا ہے قہروں کا اک نیند کشیدہ کاروں کی اک خواب ثواب دوپہروں کا یہ حرف جو تھوڑا تازہ ہے یہ انت انداز اندازہ ہے صحرا کی قدیم چٹانوں کا پانی میں غائب←  مزید پڑھیے

جب ایوب خان مشرقی پاکستان کے جی او سی تھے۔۔اقتدار جاوید

یہی شنگشد بھبن Sangsad Bhabhan تھا جو تیج گاؤں ڈھاکہ میں واقع ہے ،یہی وہ اسمبلی کی تاریخی عمارت تھی جہاں آج کل   وزیراعظم بنگلہ دیش کا دفتر ہے ،وہیں باورچی خانے سے اٹھتی مچھلی کی خوشبو نے پوری←  مزید پڑھیے

دیو مالا(یومِ پدر کے موقع پر)۔۔اقتدار جاوید

باپ کی آنکھ چشمہ ہے جو جاری رہنا ہے زمزم کے چشمے کی صورت! باپ سچ۔۔ رات کی سرد بے مہر بے نام بیزار چپ چاپ عمروں کے نادیدہ  زینے سے نیچے اُترتی گھڑی اور اس کو جیسے پکڑنے جکڑنے←  مزید پڑھیے