ہمایوں احتشام کی تحاریر
ہمایوں احتشام
مارکسزم کی آفاقیت پہ یقین رکھنے والا، مارکسزم لینن ازم کا طالب علم، اور گلی محلوں کی درسگاہوں سے حصولِ علم کا متلاشی

افتادگان خاک (The wretched of the Earth) -ریویو: ہمایوں احتشام

مصنف: فرانز فینن ترجمہ: سید سجاد باقر رضوی ریویو: ہمایوں احتشام یہ کتاب میری پسندیدہ ترین کتابوں میں سے ایک ہے اور فرانز فینن پسندیدہ مصنفین میں سے ایک۔ فینن کا شاندار کام نوآبادیاتی نظام (Colonialism) اور استعمار (Imperialism) پر←  مزید پڑھیے

سلطان فتح علی ٹیپو۔۔تحریر و تحقیق: ہمایوں احتشام

سلطان فتح علی 20 نومبر 1750 کو دیوان حویلی، بنگلورو کرناٹک میں پیدا ہوئے۔ سلطان کے والد کا نام حیدر علی اور والدہ کا نام فاطمہ فخر النساء تھا۔ سلطان کے ٹیپو نام کی وجہ تسمیہ یہ بتائی جاتی ہے کہ میسور کے ایک مشہور صوفی بزرگ ٹیپو مستان اولیا گزرے ہیں۔←  مزید پڑھیے

ایک شخص کی آپ بیتی۔۔ہمایوں احتشام

ایک شخص کی آپ بیتی ہمایوں احتشام میں جب گاوں کے کالج سے یونیورسٹی میں پہنچا تو میرے لئے یہ ایک نیا جہان تھا۔ میں نے ایسے مناظر کبھی نہیں دیکھے تھے، کچھ دیکھے بھالے بھی تھے، جیسے میرے علاقے←  مزید پڑھیے

پرتگیزی – مرہٹہ تنازعات (1737-1739)حصّہ دوم۔۔ہمایوں احتشام

بسلسلہ مرہٹہ سلطنت    جنگوں کے اس سلسلے کی فیصلہ کن جنگ مرہٹہ سلطنت اور پرتگیزی ہندوستان کی افواج کے درمیان وسائی(بیسن) کے مقام پر لڑی گئی۔ اس جنگ کی فتح کی وجہ سے پرتگیزی ہندوستان کے تمام شمالی صوبوں←  مزید پڑھیے

مرہٹہ سلطنت (Maratha Empire) حصہ اوّل۔۔ہمایوں احتشام

مرہٹہ سلطنت برصغیر کی عظیم ترین سلطنتوں میں شمار کی جاتی ہے۔ اشوک، اورنگزیب کے بعد اگر کسی سلطنت نے برصغیر کے وسیع ترین علاقے پر قبضہ کیا تو بیشک وہ مرہٹہ سلطنت ہی تھی۔ جنوب میں تامل ناڈو سے←  مزید پڑھیے

سیمون بولیوار (1830-1783)۔۔ہمایوں احتشام

جنوبی امریکہ انقلابوں اور مزاحمت و مزاحمتی قائدین کی پیدائش کے لئے ہمیشہ سے ایک زرخیز خطہ زمین رہا ہے۔ ہسپانوی و پرتگیزی نوآبادیاتی نظام کے خلاف قبائلی جدوجہد سے لے کر انکائی، مایائی اور ازٹک اقوام کی جدوجہد تک،←  مزید پڑھیے

ہجومی تشدد- نفسیات،وجوہات اور عوامل:ہمایوں احتشام

ہجومی تشدد (موب لنچنگ) نفسیات، وجوہات، عوامل تحریر: ہمایوں احتشام انسانی سماج بیشمار طبقات پر مشتمل ہوتا ہے۔ مارکسی اسے فقط دو میں تقسیم کردیتے ہیں، جبکہ تیسرے طبقے کو عبوری قرار دے کر جھٹلا دیتے ہیں۔ لیکن بہرحال سماج←  مزید پڑھیے

تیلنگانہ۔۔ہمایوں احتشام

تیلنگانہ بھارت کے جنوب میں واقع سطح مرتفع دکن کے علاقوں پر مشتمل ایک ساحل سمندر سے محروم ریاست ہے۔ رقبے کے لحاظ سے بھارت کی گیارہویں اور آبادی کے لحاظ سے بارہویں بڑی ریاست ہے۔ ریاست کے شمال مشرق←  مزید پڑھیے

ہریانہ۔۔ہمایوں احتشام

ہریانہ، بھارت کی ایک ریاست ہے۔ جس کے شمال مغرب میں پنجاب، شمال مشرق میں ہماچل پردیش اور اتراکھنڈ، جنوب اور جنوب مغرب میں راجستھان، مشرق میں دہلی اور اتر پردیش ہیں۔ ریاست کا صدر مقام چندی گڑھ ہے، جو←  مزید پڑھیے

سلطان فتح علی ٹیپو۔۔ہمایوں احتشام

استعمار کے خلاف کسی بھی قوم کی فتح ہماری فتح ہے، استعمار سے کسی بھی قوم کی شکست ہماری شکست ہے۔ چے گیویرا سلطان فتح علی 20 نومبر 1750 کو دیوان حویلی، بنگلورو کرناٹک میں پیدا ہوئے۔ سلطان کے والد←  مزید پڑھیے

بوکو حرام۔۔تحریر و تحقیق: ہمایوں احتشام

اس تشدد پسند گروپ کا پورا نام جماعت اہل سنت و الدعوہ وللجہاد ہے۔ یہ گروپ مغربی اور وسطی افریقہ کے ممالک نائیجریا، نائیجر، چاڈ، بینن، برکینا فاسو اور کیمرون میں متحرک ہے۔ اس گروپ کی نظریاتی اساس سلفی ازم←  مزید پڑھیے

جوما سیسون، فلپائنی انقلاب کا مصور۔۔۔ ہمایوں احتشام

کامریڈ جوما سیسون کو فلپائن کی انقلابی تاریخ میں انتہائی اہمیت حاصل ہے کیونکہ انھوں نے فلپائن کو تیسری دنیا کا معروض سمجھتے ہوئے اور استعمار کا استحصال زدہ خطہ قرار دیتے ہوئے یہاں مارکسزم لینن ازم کی فکرِ ماو زے تنگ کو نافذ العمل کرنا درست سمجھا۔ بلاشبہ یہ ایک بڑا کارنامہ ہے۔←  مزید پڑھیے

ایملکار کیبرال۔۔۔ ہمایوں احتشام

ایملکار کیبرال پاولو فیریرے سے خاصے متاثر تھے۔ اسی لئے فیریرے کی تعلیمات کا اثر ان کی جدوجہد کے انداز پر با آسانی دیکھا جاسکتا ہے۔ کیبرال ایک جانب جابر کو سمجھاتے بھی نظر آتے ہیں تو دوسری جانب اپنی قوم کو انسانی سطح پر لانے کی جدوجہد میں مگن بھی نظر آتے ہیں۔ کیبرال بارہا کہتے تھے کہ کسی گورے سے جو افریقیوں کے قتل عام میں ملوث نہیں، ہمارا کوئی جھگڑا نہیں۔←  مزید پڑھیے

دولت اسلامیہ اور اسٹوڈنٹس کی وجہِ نزع۔۔ہمایوں احتشام

دولت اسلامیہ بنیادی طور پر اہلحدیث نظریات یا سلفی ازم کی پرچارک تنظیم ہے۔ اس تنظیم کا ظہور شام میں ہوا اور اس کی اصل طاقت 2013 کے بعد قائم ہوئی۔ یہ تنظیم ہر قسم کی بدعات کی مخالف ہے،←  مزید پڑھیے

پرتگیزی ہندوستان۔۔ہمایوں احتشام

عموماً یہ سنا جاتا ہے کہ پورا ہندوستان برطانیہ کی نوآبادی تھا۔ راس کماری سے پشاور تک کا مالک و مختار انگریز بہادر یا برطانوی راج ہوتا تھا۔ یہ باتیں معروضی طور پر تو ٹھیک ہیں، لیکن موضوعی طور پر←  مزید پڑھیے

ٹوپک امارو دوئم (۱۷۳۸۔۱۷۸۱)۔۔۔ ہمایوں احتشام

جنوبی امریکہ میں استعمار کے خلاف عوامی جدوجہد کی جڑیں خاصی گہری ہیں۔ جن کی ابتدا اتاوالپا کی 1533 میں ہسپانوی استعمار کے خلاف فیصلہ کن جنگ سے ہوتی ہے۔ اس جنگ میں مقامیوں کو شکست ہوئی، لیکن یہ استعمار مخالفت کی آگ کی فقط پہلی چنگاری تھی۔ اس کے بعد انکائی جدید ریاست میں استعمار اور محکوم کی کشمکش چلتی رہی اور 1572 میں ٹوپک امارو اول ستائیس سال کی عمر میں اپنی دھرتی کا دفاع کرتے ہوئے جان سے گزر جاتے ہیں۔←  مزید پڑھیے

ٹوپک امارو اول (۱۵۴۵۔۱۵۷۲)۔۔۔ ہمایوں احتشام

ٹوپک امارو کیوچوا زبان کا لفظ ہے، جس کے معنی شاہی اژدھا یا سانپ کے ہیں۔ ٹوپک امارو اول 1545 میں پیدا ہوئے۔ ان کے والد کا نام مانکو انکا یوپانکی تھا۔ دور زوال میں پیدا ہونے والے ٹوپک امارو کے ساتھ زبردست ظلم و ستم کا مظاہرہ کیا گیا۔ ٹوپک امارو کو زبردستی عیسائی کیا گیا۔ ٹوپک امارو کے والد نے ہسپانویوں کے خلاف علم جنگ بلند کی تو 1544 میں ایک جھڑپ میں ان کی وفات ہوگئی۔←  مزید پڑھیے

ہنسی کو بھی ترستے لوگ۔۔۔۔ہمایوں احتشام

جب آپ مسکراتی ہیں تو چمن میں بہار کا سماں بند جاتا ہے، حالانکہ یہ بہار اس علاقے سے مشروط ہے جس میں ہم براجمان ہیں۔ اگر آپ کچی آبادی میں مسکراتیں تو شاید بہار کی آمد کے بجائے آپ←  مزید پڑھیے

مکالمہ اور میں۔۔۔ہمایوں احتشام/مکالمہ سالگرہ

“مکالمہ” آن لائن میگزین حقیقی معنوں میں غیر جانبدار میگزین ہے۔ ورنہ ناچیز نے خود مشاہدہ کیا ہے کہ کچھ میگزینز اپنے ہم مسلک لوگوں کے مضامین شائع کرتے ہیں، تو کچھ اس وجہ سے ہم لوگوں کی تحریریں ہمیں←  مزید پڑھیے

اردو کے مزاحمتی ادب میں شیردل غیب کا کردار۔۔۔۔ہمایوں احتشام

شیر دل غیب پر اس نے مجھ سے رائے مانگی، میں کچھ دیر خاموش بیٹھا رہا۔ دل میں سوچا زیادہ کچھ کہا تو حکام نگینوں کو خاک میں ملانے کا ڈھنگ خوب سے جانتے ہیں، یہی تو وہ فن ہے←  مزید پڑھیے