محمد ہارون الرشید ایڈووکیٹ کی تحاریر
محمد ہارون الرشید ایڈووکیٹ
محمد ہارون الرشید ایڈووکیٹ
میں جو محسوس کرتا ہوں، وہی تحریر کرتا ہوں

لڑیں ضرور لیکن بے تیغ نہیں۔۔۔محمد ہارون الرشید ایڈووکیٹ

پوری قوم ڈاکٹرز، پیرا میڈکس اور ہیلتھ کیئر سٹاف کیلئے ہاتھ باندھے کھڑی ہے۔ ہسپتالوں میں نیم فوجی دستے باقاعدہ انہیں سلامیاں دے رہے ہیں، راہ چلتے ڈاکٹروں کو روک کر پولیس اور رینجرز کے جوان دائرے بنا کے سلیوٹ←  مزید پڑھیے

توکل اور اسباب ایک ساتھ۔۔محمد ہارون الرشید

ایک وائرس ہے جس نے  انسان کو اُس کی کُل اوقات یاد دلا دی ہے، اور اوقات بھی ایسے یاد دلائی ہے کہ  پوری دنیا کا کاروبار رک گیا ہے۔۔۔ دوڑتی زندگی جیسےٹھہر سی گئی ہے، ایک دوسرے کے پیچھے←  مزید پڑھیے

جھوٹے نگوں کی ریزہ کاری۔۔محمد ہارون الرشید ایڈووکیٹ

ہمارے سوشل میڈیا کے ایک دوست جو عرصہ دراز سے سویڈن میں مقیم ہیں، انہوں نے چند روز قبل “پاکستانی عورت بمقابلہ سویڈش عورت” کے عنوان سے دو حصوں میں ایک تحریر لکھی۔ اُس تحریر میں انہوں نے لکھا کہ←  مزید پڑھیے

اے اہل زمانہ قدر کرو نایاب نہ ہوں کم یاب ہیں ہم۔۔ہارون الرشید

وہ ایک بہت ہی سرد, اداس اور بوجھل شام تھی اگلے دن یونیورسٹی میں سمیسٹر کے فائنلز شروع ہو رہے تھے یونیورسٹی میں کمبائنڈ سٹڈی کے بعد شام کو گھر پہنچا تو اندھیرا چھا چکا تھا میں نے امی سے←  مزید پڑھیے

یہ وقت کس کی رعونت پہ خاک ڈال گیا۔۔۔۔۔۔۔ہارون الرشید

پرویز مشرف کے خلاف فیصلہ مکمل آئینی اور قانونی ہے۔۔پیرا 66 میں تجویز کردہ سزا کا ذکر فیصلے میں نہ ہوتا تو اچھا ہوتا۔ یاد رکھنا چاہیے کہ پیرا 66 ایک جج کی رائے ہے, بنچ کا فیصلہ نہیں, بالکل←  مزید پڑھیے

آزادی مارچ کے سماجی پہلو۔۔ہارون الرشید

مولانا فضل الرحمن کی طرزِسیاست سے میں اور آپ اختلاف کر سکتے ہیں لیکن اس میں کیا دورائے ہو سکتی ہے کہ پاکستانی سیاستدانوں میں مولانا کے پائے کا مقرر اس وقت موجود نہیں ہے۔ دلیل مولانا کے ہاتھ کی←  مزید پڑھیے

ہم کیوں خوش ہوں؟۔۔۔ہارون الرشید

چند روز قبل بھارت کا چاند پر بھیجا گیا خلائی مشن ناکام ہوا تو سوشل میڈیا دو حصوں میں تقسیم ہو گیا۔ ایک گروہ کا کہنا تھا کہ چونکہ بھارت ہمارا دشمن ملک ہے لہذا اس کی ہر ناکامی پر←  مزید پڑھیے

اُمت ۔۔۔ہارون الرشید

کیا ہم امت کا رونا روتے اچھے لگتے ہیں؟ ہمارا ایک اقتدار پر قابض سابق جرنیل صدر ہوتا تھا جو ڈرتا ورتا کسی سے نہیں تھا، وہ سب سے پہلے پاکستان کے نعرے مارا کرتا تھا۔۔اُس کے دور میں افغانستان←  مزید پڑھیے

کتب بینی اور سفرنامہ اسرائیل فلسطین۔۔۔۔ہارون الرشید

کہانیاں اور کتابیں پڑھنے کا شوق تو بچپن سے ہی تھا بلکہ گھر میں سب ہی کتابیں پڑھنے کے شوقین تھے۔ بچپن میں بنت الاسلام اور طالب ہاشمی کی بچوں کے لیے لکھی ہوئی بیسیوں کہانیاں اب بھی ذہن میں←  مزید پڑھیے

ہینڈسم، موریاں، تسبیح، چپیڑیں۔۔۔۔ہارون الرشید

ارادہ تو یہ تھا کہ اپنے یوتهی دوستو  کو مشورہ دوں کہ سمیع ابراہیم، جس کی دن رات کی گئی خان صاحب کی جھوٹی سچی تعریفوں سے متاثر ہو کے وہ خان صاحب کو ووٹ دے کر آئے تھے اور←  مزید پڑھیے

ایک غزل کی تشریح۔۔۔۔ہارون الرشید

ڈاکٹر راحت اندوری ہندوستان کے ایک مقبول شاعر ہیں اور اُن کا شاعری پڑھنے کا انداز بھی کمال کا ہے۔ اُن کی ایک غزل سنی تو خیال آیا کہ کیوں نہ اِس کی تشریح کی جائے جیسے کبھی سکول کے←  مزید پڑھیے

آسیہ کیس اور حرمتِ رسول ﷺ۔۔۔۔ہارون الرشید

آسیہ مسیح کیس پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد تقریبا ً پانچ روز تک ملک افراتفری کا شکار رہا۔ سڑکیں، سکول، کالجز، جامعات، ذرائع آمدورفت سب بند ہونے کی وجہ سے معمولاتِ زندگی بری طرح متاثر ہوئے اور عملا←  مزید پڑھیے

ڈاکٹر بھی تو آخر انسان ہیں۔۔۔ہارون الرشید

چند روز قبل راولپنڈی کے ایک بڑے سرکاری ہسپتال میں  ایک دوست جو ڈاکٹر ہیں اور اُس ہسپتال میں خدمات سرانجام دے رہے ہیں، اُن سے ملاقات کے لیے جانے کا اتفاق ہوا۔ ہسپتال میں داخل ہوتے ہی ایسا محسوس←  مزید پڑھیے

قادیانیت اور قومی حساسیت۔۔۔۔ہارون الرشید

عاطف میاں کی تقرری کو تو منسوخ ہونا ہی تھا اور وہ ہو گئی لیکن اِس سارے معاملے میں جہاں بہت سے “مذہب پسند” دانشور بےنقاب ہو گئے وہیں جن سے حسنِ ظن تھا کہ وہ اِس حساس معاملے پر←  مزید پڑھیے

گیارہ نکات، زمینی حقائق اور بھولی بھالی قوم۔۔۔ہارون الرشید

قوم ایک بار پھر پوری طرح بیوقوف بننے کے لیے تیار بیٹھی ہے۔ آنکھوں دیکھی مکھی نگل لینا چاہتی ہے۔ خان صاحب کا حالیہ جلسہ  30 اکتوبر 2011 کے جلسے کے مقابلے میں تعداد اور جنون دونوں کے لحاظ سے←  مزید پڑھیے

تاریخ بدلی نہیں جا سکتی۔ہارون الرشید

16 دسمبر، یومِ سقوطِ ڈھاکہ، ہماری تاریخ کا ایک سیاہ دن ہے اور 16 دسمبر 2014 اِس دن کو سیاہ تر کر گیا۔ وہ بدقسمت دن  کہ جس میں 150 کے لگ بھگ معصوم بچے خون میں نہلا دیے گئے،←  مزید پڑھیے

قدرِمشترک اور دردِمشترک۔ہارون الرشید

یہ عام مشاہدے کی بات ہے کہ  کسی زمانے میں پمفلٹس اور ہینڈ بلز کے ذریعے ایسا ہوتا تھا، پھر موبائل فونز پر پیغامات کے ذریعے ہونے لگا اور اب سوشل میڈیا کے ذریعے ہوتا ہے کہ ہر سال محرم الحرام←  مزید پڑھیے

سرسید، اسلامی یونیورسٹی اور جناب اظہارالحق۔ہارون الرشید

سرسید احمد خان اگر زندہ ہوتے تو رواں برس دو سو سال کے ہو جاتے۔ بڑے لوگ دنیا سے گزر بھی جائیں تو اپنے افکار اور نظریات کی بدولت تادیر زندہ رہتے ہیں۔ یہی معاملہ سرسید کا بھی ہے کہ←  مزید پڑھیے

مس دینا واڈیا اور قائدِاعظم کا سیکولرازم۔ہارون الرشید

قائدِاعظم کی اکلوتی صاحبزادی مس دینا واڈیا 2 نومبر کو تقریبا ایک صدی تک زندگی کی بہاریں دیکھنے کے بعد ابدی زندگی کی طرف لوٹ گئیں۔ موت کو سمجھا ہے غافل اختتامِ زندگی ہے یہ شامِ زندگی،  صبحِ دوامِ زندگی←  مزید پڑھیے

خالو جان۔ہارون الرشید

گزشتہ شب رات ابھی زیادہ گہری نہیں ہوئی تھی کہ برطانیہ میں مقیم بہن کی واٹس ایپ پر کال آئی لیکن بات نہیں ہو سکی، فوراً ہی موبائل کی رِنگ ٹون بجی لیکن اُس پر بھی بات نہیں ہو سکی،←  مزید پڑھیے