حافظ صفوان محمد کی تحاریر
حافظ صفوان محمد
حافظ صفوان محمد
مصنف، ادیب، لغت نویس

سوشل میڈیا پر ٹرینڈ کیسے چلتے ہیں؟

یہ ایک سنجیدہ اور تکنیکی بلکہ صاف الفاظ میں کہیے تو ایک کاروباری مسئلہ ہے جس کی سوشل میڈیا پر گھنٹوں بیٹھنے والے حقیقی لوگوں میں سے غالبًا اٹھانوے فیصد کو بالکل بھی سمجھ نہیں ہے۔ اس موضوع پر لکھنے←  مزید پڑھیے

اسلام اسلام ہے اور صرف اسلام ہے۔

اسلام اسلام ہے اور صرف اسلام ہے۔ حافظ صٖوان محمد جتنے بھی ازم پچھلے دو سو سال میں ابھرے ہیں جیسے کیپیٹل ازم، سوشل ازم، کمیونزم، حتیٰ کہ آف شور ازم اور مفتیاتی مضاربہ ازم، ان سب کی بنیاد میں←  مزید پڑھیے

مرد و عورت کا مصافحہ کب جائز نہیں؟

میری نئی نئی نوکری لگی تو رائے ونڈ میں ایک یونیورسٹی کے نہایت قابل اور نہایت دین دار استاد نے مجھے کہا کہ فوراً اپنا وزٹنگ کارڈ بنوا لیجیے۔ اپنا واقعہ بتایا کہ یونیورسٹی میں یا دنیا بھر میں کسی←  مزید پڑھیے

موجودہ سیاسی حالات اور مسلم ممالک کا مخمصہ

موجودہ عالمی سیاسی تناظر کو اور عالمی دنیا کے موثر معاشی سٹیک ہولڈرز کی ہالیسیوں کو ذرا گہری نظر سے دیکھا جائے تو یہ بات سمجھنا زیادہ مشکل نہیں ہے دنیا کو دو حصوں میں بانٹا جا چکا ہے، یا←  مزید پڑھیے

قضیہ خدا کا۔۔۔

قرآن اناٹومی یا تاریخ کی یا مثلاً علوم البشریات یا فلکیات کی کتاب نہیں ہے۔ قرآن میں جو کچھ ہے وہ خدا کی جانب سے انسان کی ہدایت کا ابدی اور حتمی غیر محرف سامان ہے۔ ہر دور میں ہر←  مزید پڑھیے

جہاد فی سبیل اللہ اور رد الفساد

مجھ سمیت ہر مسلمان نبی کریمﷺ کے اس فرمان پر ایمان رکھتا ہے کہ جہاد قیامت تک جاری رہے گا۔ اس فرمان عالی شان کی شرح امام غزالی کے نزدیک یوں ہے کہ امت کو کبھی جہادِ اصغر کی مشغولی←  مزید پڑھیے

اِحیائے ثقافتِ اسلامی کی تحریک

دعوت و تبلیغ کا کام اپنے حقیقی معنوں میں حضرت آدم علیہ السلام کے دنیا میں تشریف لانے سے شروع ہوتا ہے۔ جتنی انسانی آبادی اُن کی حیات تک موجود رہی وہ اُس سب کے باپ اور مربی تو تھے←  مزید پڑھیے

ایک درویشِ بے گلیم، جو بطحا کی وادیوں کے ترانے سنا گیا۔۔۔

علمائے عصر میں بامقصد تعمیری زندگی کا استعارہ، وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے صدر، استادِ محترم شیخ الحدیث مولانا سلیم اللہ خان صاحب کی مہلتِ عمل بھی ختم ہوگئی۔ 15 جنوری 2017 کی رات آپ خدا کے حضور حاضر ہوگئے۔←  مزید پڑھیے

روٹھوں کو ملانا… اصلحوا ذات بینکم

دین کے ہر شعبہ میں اپنی طبیعت کے میلان کے مطابق حسب استعداد اپنی صلاحیت لگانا باعث سعادت ہے، مگر ایک شعبہ تقریبا امت سے ختم ہوچکا ہے جس کے احیا کے لیے سخت محنت کی ضرورت ہے. اس شعبہ←  مزید پڑھیے

سوشل میڈیا پر متحرک لاپتہ افراد

سوشل میڈیا کے کچھ متحرک لوگوں کے اٹھا لیے جانے کی خبریں میڈیا پر گردش کر رہی ہیں۔ یہ لوگ کیا کر رہے تھے یا بھینسا، موچی اور روشنی میں سے کون کون سے پیجز چلا رہے تھے، اس سے←  مزید پڑھیے

شہری دفاع اور لازمی جنگی تربیت ضروری ہے

شہری دفاع اور ضروری جنگی تربیت ہر شہری پر لازم ہونی چاہیے۔ اس سے صحت مند معاشرہ تشکیل پاتا ہے۔ تعلیمی اداروں میں طلبہ و طالبات کو جب تک تعلیم کے ساتھ ساتھ شہری دفاع کی تربیت اور نیشنل کیڈٹ←  مزید پڑھیے

شہد کی مکھی، مصری کی مکھی

ابا جان پروفیسر عابد صدیق صاحب سے ایف ایس سی میں اردو پڑھی۔ کسی سبق میں انھوں نے اقبال کی ایک مکڑا اور مکھی کا ذکر کیا تو فرمایا کہ آدمی کو شہد کی مکھی بننا چاہیے نہ کہ مصری←  مزید پڑھیے

زنا شوئی کا تعلق (Conjugal Relation)

خاندان معاشرے کی اساس ہے، اور میاں بیوی خاندان کی اساس۔ محبت، پیار، احساس، تربیت اور ذہنی ہم آہنگی سے ایک صحت مند گھرانہ اور ایسے گھرانوں کی بنیاد پر ایک اچھا معاشرہ جنم لیتا ہے۔ کیا مرد و زن←  مزید پڑھیے

مدارس کے بچوں کو لبرل ہوکر سوچیے

ٹامس ایڈیسن نے ایک دن سکول سے واپسی پر اپنی ماں کو ایک بند لفافہ تھمایا اور بتایا کہ اس کے استاد نے ہدایت کی ہے کہ یہ اپنی ماں کو دے دینا۔ ماں نے لفافہ کھول کر چٹھی پڑھی←  مزید پڑھیے

روحانی رشتے۔۔۔

خدا نے مرد و عورت بنائے، رشتے انسان نے خود بنائے۔ میاں بیوی پہلا رشتہ ہے جو انسانوں میں قائم ہوا۔ اگلا رشتہ ماں باپ کا تھا۔ پھر بھائی بہن بن گئے۔ پھر رشتوں کی جلیبیاں بنتی گئیں۔ زمانے نے←  مزید پڑھیے

طلبۂ علی گڑھ سے حضرت شیخ الہند کا خطاب

شیخ الہند مولانا محمود حسن دیوبندی علیہ الرحمہ 1851 میں بریلی اتر پردیش میں پیدا ہوئے۔ آپ کے والد مولانا محمد ذوالفقار علی ایسٹ انڈیا کمپنی کے محکمہ تعلیم میں بطور استادِ زبانِ عربی ملازم تھے۔ 1857 کے غدر کے←  مزید پڑھیے

باپ کب بدلا جاتا ہے؟

مدت ہوئی ایک مضمون میں لکھا تھا کہ پہلے زمانوں میں سالک پیشہ لوگ پینڈے کاٹ کر اپنے پیروں کی خانقاہوں میں پہنچتے تھے اور ان کی کڑوی کسیلی سن کر، مشتقیں جھیل کر نیز جوتیاں سیدھی کرکے اللہ اللہ←  مزید پڑھیے

مسلمانوں میں آخرت کا غیر اسلامی تصور

کچھ دن ہوئے، ایک صاحب سے ملاقات ہوئی، دنیا کی بے ثباتی اور آخرت کے ثبات و ہوئیت کے بارے میں ان کے ارشادات سنے۔ جس کے پاس چار پیسے یا گھر در ہے یا دنیا میں کوئی حیثیت ہے←  مزید پڑھیے