Aslam Awan کی تحاریر
Aslam Awan
اس وقت یبوروچیف دنیا نیوز ہوں قبل ازیں پندرہ سال تک مشرق کا بیوروچیف اور آرٹیکل رائٹر رہاں ہوں،سترہ سال سے تکبیر میں مستقل رپوٹ لکھتا ہوں اور07 اکتوبر 2001 سے بالعموم اور 16مارچ 2003 سے بالخصوص جنگ دہشتگردی کو براہ راست کور کر رہاں ہوں،تہذیب و ثقافت اور تاریخ و فلسفہ دلچسپی کے موضوعات ہیں،

افغانستان سنبھل رہا ہے؟۔۔اسلم اعوان

افغانستان تاریخی اعتبار سے سیاسی،اقتصادی اور سفارتی طور پہ کبھی خود مختیار مملکت یا منظم قوم کی حیثیت سے شناخت حاصل نہیں کر سکا،یہاں صدیوں تک ایسی متنوع قبائیلیت پروان چڑھتی رہی جس کی مہیب عصبیتوں نے انہیں کبھی بھی←  مزید پڑھیے

کیا واقعی کچھ ہونے والا ہے؟۔۔اسلم اعوان

پشاور میں پی ڈی ایم کے صوبائی چیپٹر کے ہنگامی اجلاس کے بعد مولانا فضل الرحمن کی پریس سے گفتگو میں”پارلیمنٹ کے اندر اپنی قوت کے اظہار“کے بیان کو لیکر الیکٹرانک میڈیا میں اِس کی کئی زاویوں سے تشریح کی←  مزید پڑھیے

گورننس اور نوکر شاہی کا رویہ۔۔اسلم اعوان

خیبرپختون خوا میں گورننس کے مسائل اسقدرگھمبیر ہیں جنہیں مینیج کرنا روزبروز ناممکنات سے قریب تر ہوتا جا رہا ہے،بلا سوچے سمجھے نت نئے قوانین متعارف کرانے کے نتیجہ میں چین آف کمانڈ مفقود ہوگئی،اس لئے اب یہاں مربوط حکومتی←  مزید پڑھیے

اعلیٰ تعلیمی اداروں کا ارتقائی ماحول۔۔اسلم اعوان

چند دن قبل اسلامیہ یونیورسٹی آف بہاولپور کی انتظامیہ نے پنجاب اور ملحقہ علاقوں سے تعلق رکھنے والے چند کالم نویسوں کو جنوبی پنجاب کی اُس ابھرتی ہوئی جامعہ کا مطالعاتی وزٹ کرایا،جہاں ہمیں علم و آگاہی کی متضاد جہتوں←  مزید پڑھیے

سیاسی تناظر بدل رہا ہے؟۔۔اسلم اعوان

خیبر پختون خوا کے چونتیس میں سے سترہ اضلاع میں منعقد کرائے جانے والے بلدیاتی انتخابات میں جے یو آئی کی غیر معمولی برتری بادی النظری میں اُس مزاحمتی سیاست کی پذیرائی کا پیغام دیتی ہے جو ملکی نظام کی←  مزید پڑھیے

چاندنی راتوں کا پُرفسوں منظر۔۔اسلم اعوان

معروف ماہرنفیسات ڈاکٹر شاہد مسعود خٹک کا شمار خیبر پختون خوا کے اُن نمایاں ترین ماہرین طب میں ہوتا ہے جو پیشہ وارانہ فرائض کے علاوہ اپنی قوت مشاہدہ کی بدولت مشرق کے پیچیدہ معاشرتی نظام اورثقافتی پس منظر کے←  مزید پڑھیے

امریکہ راستہ نہیں بدلے گا ؟۔۔اسلم اعوان

افغان جنگ میں شکست نے اگرچہ دنیا بھر میں امریکی اتھارٹی کو کمزور اور ٹرانس اٹلانٹک اتحاد میں گہری دراڑیں ڈالیں لیکن اس کے باوجود فی الحال امریکہ اپنا راستہ بدلنے کو تیار نظر نہیں آتا،بلاشبہ،اُسے واحد سپرپاور بن جانے←  مزید پڑھیے

ادب اور معاشرہ۔۔اسلم اعوان

عالمی سیاست میں دہشتگردی کو بطور ٹول استعمال کرنے کی حکمت عملی نے جہاں پورے روئے زمین پہ انسانی رویّوں کو متاثر کیا وہاں اِسی سرگرانی نے ہماری تہذیب و ثقافت،تاریخ و ادب اور معاشرتی شعور پر بھی گہرے اثرات←  مزید پڑھیے

ہماری تقدیر کے تاریک پہلو۔۔اسلم اعوان

افغانستان میں امریکی شکست کے بعد پوری دنیا میں طاقت کا توازن تبدیل ہونے لگا،خاص طور پہ یوروپ کو مایوسی کی ایسی تاریکی نے گھیر لیا،اہل مغرب جن افسردہ کن اندھیروں سے ٹٹول ٹٹول کے باہر نکلنے کی کوشش میں←  مزید پڑھیے

جنوبی ایشیاء کا نیا ظہور۔۔اسلم اعوان

جنوبی ایشیا میں چین کے اقتصادی ظہور نے دنیا بھر میں سفارتی تعلقات کی ہیت کو تبدیل کیا تو کم و بیش ستّر سالوں پہ محیط پاکستان اور امریکہ کے تعلقات میں بھی گہری تبدیلیاں واقع ہونے لگیں،ہماری فوجی اورسویلین←  مزید پڑھیے

حکومتی کارکردگی اور انتخابی آزمائش۔۔اسلم اعوان

خیبر پختون خوا میں بلدیاتی انتخابات کے ہنگام نے حکمراں جماعت کی سیاسی بقاءاور اخلاقی ساکھ کے لئے کڑی آزمائش کے اسباب مہیا کر دیئے، ابتداءمیں گورنمنٹ نے عدالتی حکم کی تعمیل میں خود الیکشن کمشن کو خط لکھ کے←  مزید پڑھیے

افغانستان، داخلی تضادات یا عالمی سازشیں؟۔۔اسلم اعوان

طالبان کے انتہائی اہم کمانڈرحمداللہ مخلص کو اُس وقت شہید کر دیاگیا جب اس کے سکواڈ نے سردار داؤ د ملٹری ہسپتال پر داعش خراسان کے حملہ کو روکنے کی کوشش کی،اسی خودکش مشن میں 19 شہری بھی جان کی←  مزید پڑھیے

قومی سیاست اور اسلامی اقدار۔۔اسلم اعوان

سنہ 2015 میں وجود پانے والی خادم حسین رضوی کی تحریک لبیک کی بنیاد اگرچہ توھین رسالت کے قوانین کے تحفظ پہ رکھی گئی اور اسے پہلی بار عالمی سطح پر شہرت بھی نومبر دوہزار اٹھارہ میں آسیہ مسیحی کی←  مزید پڑھیے

افغانوں کی دستگیری کون کرے گا؟۔۔اسلم اعوان

چالیس سالوں تک بے مقصد جنگووں کی آگ میں سلگنے والا افغان معاشرہ بتدریج ایسے نظم و ضبط میں ڈھل رہا ہے،جس کی اساس مقامی لوگوں کی مذہبی اقدار اور تہذیبی شناخت پہ استوار ہو گی،عالمی برادری نے اگر انسانی←  مزید پڑھیے

زندہ رود کے ساحل۔۔اسلم اعوان

استاد ریاض انجم کا سفر نامۂ ایران” زندہ رود کے ساحلوں پر‘‘ پڑھنے کا اتفاق ہوا، مصنف نے نہایت دلنشیں تمثیلات کے ذریعے زندگی کے بہتے دھارے کی تفہیم کرکے عہدِ حاضر کو ماضی بعیدکے تاریخی حوادث اور نامور شخصیات←  مزید پڑھیے

سویلین بالادستی کی تحریک۔۔اسلم اعوان

حساس عہدوں پہ تعیناتیوں کے ایشو نے موجودہ صورتِ حال کو اُس مقام تک پہنچا دیا جہاں سے فریقین کے لئے واپس پلٹنا دشوار ہو گیا۔ یہ شاید غلط وقت پہ کیا جانے والا فیصلہ تھا جس نے حکومت کو←  مزید پڑھیے

نئی دنیا کی تخلیق مشرق کرے گا؟۔۔اسلم اعوان

دوحہ میں امریکی نمائندوں کے طالبان کے ساتھ جاری مذاکرات کا محور نیولبرل ازم کے اُن اساسی تصورات سے مملو ہے جنہیں مغربی طاقتیں ہمیشہ کمزور ممالک میں مداخلت کے آلہ کار کے طور پہ استعمال کرتی رہی ہیں؛ یعنی←  مزید پڑھیے

قومی سیاست نیا موڑ مڑنے والی ہے؟۔۔اسلم اعوان

افغانستان سے امریکی فوج کی پسپائی کے نتیجہ میں جس طرح عالمی سطح پر کئی دور رس تبدیلیوں کی راہ ہموار ہوئی‘تغیرات کی اسی لہر میں پاکستان کی قومی سیاست بھی جمود کی اُس یبوست سے نکل کر سفرِ حیات←  مزید پڑھیے

تعلیمی نظام میں سیاسی مداخلت کے مضمرات۔۔اسلم اعوان

وزیراعظم عمران خان نے بلآخر 23ستمبر کو اُس دامان زرعی یونیورسٹی کا سنگ بنیاد رکھ دیا جس کے خلاف جامعہ گومل کے متعوب وی سی ڈاکٹر افتخاراحمد طویل عدالتی جنگ لڑ رہے ہیں تاہم وزیراعظم کی افتتاحی تقریب کے انعقاد←  مزید پڑھیے

مغرب کی نئی سرد جنگ ؟۔۔اسلم اعوان

افغانستان میں امریکی شکست کے بعد مغربی دنیا کے فطری زوال بارے پھیلنے والے تاثر کی بدولت یہاں چین سمیت علاقائی طاقتوں کے ساتھ معاشی،سیاسی اور ثقافتی رشتے بڑھانے کے بیانیہ کو بے پناہ مقبولیت ملی،جس نے رائے عامہ کی←  مزید پڑھیے