Aslam Awan کی تحاریر
Aslam Awan
Aslam Awan
اس وقت یبوروچیف دنیا نیوز ہوں قبل ازیں پندرہ سال تک مشرق کا بیوروچیف اور آرٹیکل رائٹر رہاں ہوں،سترہ سال سے تکبیر میں مستقل رپوٹ لکھتا ہوں اور07 اکتوبر 2001 سے بالعموم اور 16مارچ 2003 سے بالخصوص جنگ دہشتگردی کو براہ راست کور کر رہاں ہوں،تہذیب و ثقافت اور تاریخ و فلسفہ دلچسپی کے موضوعات ہیں،

بحران سنگین ہوتا جائے گا۔۔۔اسلم اعوان

تاریخی اعتبار سے خیبر پختون خوا کا دوسرا بڑا ڈسٹرک ڈیرہ اسماعیل خان اپنے سماجی روّیوں اور سیاسی فعالیت کی بدولت ہمیشہ برصغیر پاک و ہند کی سیاست کے مرکزی دھارے پہ اثر انداز ہوتا رہا اور یہاں کے عظیم←  مزید پڑھیے

بحران سنگین ہوتا جائے گا۔۔۔اسلم اعوان

وزیراعظم سے استعفی طلب کرنے کی دو روزہ ڈیڈ لائن ختم ہونے کے بعد اتوار کی شب دھرنا کے شرکاءسے مولانا فضل الرحمٰن کا جذباتی خطاب بیم و رجا کے دومیان لڑکھڑاتی سوچ کی غماضی کر رہا تھا،کچھ تجزیہ نگاروں←  مزید پڑھیے

تشدد کی نئی لہراورشہریوں کی مشکلات۔۔۔اسلم اعوان

مختصر وقفے کے بعد شہر بے نوا میں اُٹھنے والی تشدد کی نئی لہر نے پولیس افسرسمیت دوشہریوں کی جان لے لی،سرکاری اعداد و شمار کے مطابق پچھلے دس مہینوں میں دہشتگردوں نے ٹیچنگ ہسپتال کے ٹراما سنٹر پہ خودکش←  مزید پڑھیے

جنگ بھڑک اُٹھی ہے۔۔۔اسلم اعوان

مولانا فضل الرحمٰن کے آزادی مارچ کے دوران مسلم لیگ کے سپریم لیڈر نواز شریف کی نیب تحویل میں گرتی ہوئی صحت سے منسوب خبروں نے پورے سیاسی ماحول کو گرفت میں لے لیا،سوشل میڈیا کے علاوہ قومی دھارے کا←  مزید پڑھیے

نئی طالبان آئزیشن۔۔۔اسلم اعوان

مولانا فضل الرحمٰن کے دھرنا و آزادی مارچ کے سدباب کی خاطر اٹھائے جانے والے انتظامی اقدامات سے پتہ چلتا ہے کہ حکومت کو اب یقین ہو گیا ہے کہ یہ افتاد ٹلنے والی نہیں،چنانچہ سیاسی طور طریقوں سے معاملات←  مزید پڑھیے

بعدازخرابی بسیار۔۔۔اسلم اعوان

طویل ردّ و کد کے بعد بلآخر حکومت نے مولانا فضل الرحمٰن سے بات چیت کےلئے وزیر دفاع،پرویز خٹک،کی سربراہی میں مذاکراتی کمیٹی بنا دی،مگر اس مرحلہ پہ مولانا کےلئے حکومت کے ساتھ مذاکرات کی میز پہ بیٹھنا ممکن نہیں←  مزید پڑھیے

اصلاحات کے خلاف مزاحمت کیوں؟۔۔۔اسلم اعوان

وزیراعطم عمران خان نے سول سروس سٹرکچر کی تشکیل نو اور پولیس میں اصلاحات کےلئے ڈاکٹر عشرت حسین کی سربراہی میں جو اعلی سطحی ریفارمز کمیٹی بنائی تھی اس نے چودہ ماہ کی عرق ریزی کے بعد مجاز اتھارٹی کوتجاویز←  مزید پڑھیے

قومی وسائل کا تحفظ کیسے ممکن ہو گا؟۔۔۔اسلم اعوان

پچھلی دو دہائیوں میں دہشتگردی کے آشوب کے باعث خیبرپختون خوا کے سرکاری اداروں کی قوت کار میں کمی آئی اور صاحب اختیار افسران نے قومی امانتوں کے تحفظ کی ذمہ داری کو پس پشت ڈال کے مصلحت اوربزدلی کو←  مزید پڑھیے

جمہوریت اور ہمارا اضطراب۔۔اسلم اعوان

یوم جمہوریت کے موقع  پہ جمہوریت کے متلاشی اس ملک میں کوئی تقریب منعقد ہوئی ،نہ کسی کو ڈیموکریسی کی برکات زیربحث لانے کا خیال آیا،بلاشبہ عام انسانوں کےلئے جمہوریت ہمیشہ ایک پُرکشش چیز رہی کیونکہ اس نظام میں دانا←  مزید پڑھیے

خطّے کو جنگ سے بچا سکتے ہیں؟۔۔۔اسلم اعوان

امریکہ اور طالبان کے درمیان کم و بیش سات ماہ تک جاری رہنے والے امن مذاکرات فی الوقت اس پیچیدہ جنگ کی حرکیات میں ڈوب گئے ہیں،مذاکرات کے دوران سال رواں کی پہلی شش ماہی میں جنگ سے منسلک واقعات←  مزید پڑھیے

جمہوریت اور ہمارا اضطراب۔۔۔اسلم اعوان

یوم جمہوریت کے موقع  پہ جمہوریت کے متلاشی اس ملک میں کوئی تقریب منعقد ہوئی ،نہ کسی کو ڈیموکریسی کی برکات زیربحث لانے کا خیال آیا،بلاشبہ عام انسانوں کےلئے جمہوریت ہمیشہ ایک پُرکشش چیز رہی کیونکہ اس نظام میں دانا←  مزید پڑھیے

دنیاکا محافظ ہار گیا؟۔۔۔۔اسلم اعوان

امریکہ اور طالبان کے درمیان اصولی طور پہ امن معاہدہ طے پا جانے کے باوجودپانچ ستمبر کی صبح کابل کے محفوظ ترین علاقہ میں کاربم دھماکہ میں چار غیر ملکیوں سمیت دس افراد کی ہلاکت کے بعد امریکی صدر کی←  مزید پڑھیے

سیاسی مزاحمت ناکام ہوجائے گی؟۔۔۔اسلم اعوان

کوٹ لکھپت جیل میں قید سابق وزیراعظم نوازشریف کی مقتدرہ کے ساتھ ڈیل کی خبروں کی اشاعت کے باوجود فریقین کی خاموشی سے تو یہی لگتا ہے کہ بالادست قوتیں معتوب سیاستدانوں کو بریک کرنے میں ناکامی کے بعد انہیں←  مزید پڑھیے

جنگ کی طرف بڑھتے قدم۔۔۔اسلم اعوان

یہ سوئے اتفاق ہے یا تقدیر کا جبر کہ سنہ 1971 کی طرح آج بھی روایتی دشمن بھارت کے ساتھ عین اس وقت کشیدگی انتہاؤں کو چھونے لگی ہے جب قوم کی اجتماعی قوت منتشر اور ریاستی نظام بتدریج ڈھلوان←  مزید پڑھیے

داخلی سیاست کا آشوب۔۔۔اسلم اعوان

مقبوضہ کشمیر پہ بھارتی جارحیت کی گونج نے ملک کی داخلی سیاسی کشمکش کو پس منظر میں دھکیل کے اپوزیشن کو چیئرمین سینٹ کے خلاف تحریک عدم اعتمادکی ناکامی کے نفسیاتی آشوب سے نکلنے میں مدد دی ہے اور مولانا←  مزید پڑھیے

کشمیر کی نظریاتی تقسیم۔۔اسلم اعوان

مودی گورنمنٹ نے کشمیر کی آئینی حیثیت  تبدیل کرکے 70 سالوں پہ محیط اُس مہیب جمود کو توڑ ڈالا جو اس اہم مسئلے  کے حل کی راہ میں حائل تھا،دو ایٹمی طاقتوں کے مابین جنگ کے خطرے سے پھوٹنے والے←  مزید پڑھیے

کشمیر کا مستقبل ثالثی سے جڑ گیا ہے؟۔۔۔۔۔اسلم اعوان

اس وقت مملکت کی مشرقی و مغربی سرحدوں پہ کئی دہائیوں سے پنپنے والے جنوبی ایشیا کے دو دائمی تنازعات،کشمیر ایشو اورافغان تنازعہ،بظاہر تحلیل ہوتے نظر آ رہے ہیں اورہمارے خیال میں فریقین اب ان دونوں تنازعات کو بنیادی وجوہ←  مزید پڑھیے

عالمی سیاست کے بدلتے افق اور ہمارا قومی رویہ۔۔۔اسلم اعوان

انڈین پارلیمنٹ کی طرف سے کشمیر کی خصوصی حیثیت کا تحفظ کرنے والے آئین کے آرٹیکل 370 اور35A کو ختم کر کے لداخ کو یونین کے تابع اور وادی کی خود مختیار پوزیشن ختم کرنے کا معاملہ اس خطہ میں←  مزید پڑھیے

افغان تنازعہ اور پاکستان کا مستقبل۔۔۔۔اسلم اعوان

وزیراعظم عمران خان کے امریکی انتظامیہ کے ساتھ اپنے تلخ تعلقات کی بحالی کےلئے مذاکرات اوردونوں مملکتوں کے مابین نیٹو فورسز کی افغانستان سے محفوظ واپسی پہ اتفاق رائے کے باوجود امر واقعہ میں کسی جوہری تبدیلی کے امکانات معدوم←  مزید پڑھیے

دو ٹوک۔۔۔اسلم اعوان

اس وقت،سابق آئی جی موٹروے پولیس ذوالفقار چیمہ کے کالموں پہ مشتمل کتاب”دوٹوک“میرے سامنے ہے،جس میں شامل،قومی اورسماجی مسائل پہ بے لاگ تبصروں اورسیاسی ایشوز پر ان کے بیباک خیالات کو پڑھ کے میرے احساسات کو نئی تازگی ملی ہے،انکی←  مزید پڑھیے