عامر کاکازئی کی تحاریر
عامر کاکازئی
پشاور پختونخواہ سے تعلق ۔ پڑھنے کا جنون کی حد تک شوق اور تحقیق کی بنیاد پر متنازعہ موضوعات پر تحاریر لکھنی پسند ہیں۔

مذہب ، پھونکیں اور بیماری کا علاج۔۔عامر کاکازئی

ایک فلم دیکھی تھی امر اکبر انتھونی۔ ایک عورت تیس سال بعد “بابا سائیں” کے بُت کے آگے ماتھا ٹیکتی ہے اور اس کی انکھوں کی بینائی واپس  آجاتی ہے۔ ابھی جی ٹی وی پر ایک پروگرام میں مولانا صاحب←  مزید پڑھیے

پاکستان کی ڈوبتی معیشت۔۔عامر کاکازئی

دنیا کے ہر ملک کے پاس ایک مرکزی جو  قانونی اور آئینی طور پر اس ملک کا اپنا سرکاری بینک ہوتا ہے، جس کی مدد سے ملک چلایا جاتا ہے ۔ پاکستان اس وقت دنیا کا واحد ملک ہے جس←  مزید پڑھیے

پاکستان اور امریکہ کی دوستی – حقیقت یا سراب؟۔۔عامر کاکازئی

ہنری کسنجر نے ایک بار کہا تھا کہ ” امریکہ کا دشمن ہونا خطرناک ہوسکتا ہے ، لیکن دوست بننا مہلک ہے۔” اندرا گاندھی نے اوریانہ فلاشی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ ” امریکہ ہمیشہ سوچتا ہے کہ وہ←  مزید پڑھیے

پشاور جنگلہ بس – منافع بخش پراجیکٹ – ایک مغالطہ۔۔عامر کاکازئی

جب لاہور، اسلام آباد اور ملتان میں جنگلہ بس بنی تو تحریک انصاف کا سب سے زیادہ زور اس پر تھا کہ ایک مہنگی بس سروس بنائی گئی ہے جو کہ ہر وقت نقصان میں رہے گی۔ جب پنجاب میں←  مزید پڑھیے

کیا ماں کے ہاتھ کا پکا کھانا واقعی لذیز ہوتاہے؟ حقیقت یا ناسٹلجیا ،یا مغالطہ؟۔۔عامر کاکازئی

ایک جگہ کسی صاحبہ کی ایک تحریر پڑھی کہ دنیا کے ہر بچے کے پاس دنیا کا سب سے بہترین کھانا پکانے والی ماں ہے۔ اب کیا واقعی یہ بات درست ہے یا پھر یہ ایک ناسٹلجیا ہے؟ ہمارے ایک←  مزید پڑھیے

کرونا ویکسین اور بل گیٹس کی طلاق۔۔عامر کاکازئی

ستائیس سال اکھٹے رہ کر تین بچے پیدا کرنے کے بعد بل گیٹس اور امینڈا گیٹس نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ اب مزید ساتھ نہیں رہ سکتے۔ کرونا  کے لاک ڈاؤن کے دوران جب ان دونوں کو اکھٹا چوبیس←  مزید پڑھیے

کاکولی نظام یا جمہوریت۔۔عامر کاکازئی

جوبائیڈن، جو کہ امریکہ کے حالیہ صدر منتخب ہوۓ ہیں، ان کی کابینہ میں 19 امریکن انڈین اوریجن لوگ ہیں ان میں نائب صدر کملہ دیوی بھی شامل ہے۔ اب سوچنے کی بات ہے کہ آخر کیا یہ کسی پیر←  مزید پڑھیے

موشگافیاں/کتاب کا ریویو۔۔عامر کاکازئی

مصنف : احمد نعیم ہاشمی صنف : طنز و مزاح /خاکہ نگاری قیمت: 450 پبلشر: جہاں بخت پبلی کیشنز ، ملتان رابطہ نمبر: 374-5346-0312 محترم احمد نعیم ہاشمی صاحب، جن کا تعلق ملتان کے ایک روحانی علمی ادبی اور سیاسی←  مزید پڑھیے

کرونا کی تلخ یادیں۔ پہلی قسط/عامر کاکازئی

ویکسین اور اپنی احتیاط۔ حکومت ِ پاکستان نے چین کی ویکسین “سینوفارم ” منگوانے کی اجازت دے دی ہے۔ پہلا فیز : کن کو لگے گی؟ تقریباً  پانچ لاکھ ویکسین پیرا میڈیکل سٹاف کے لیے جو کرونا کے مریضوں کو←  مزید پڑھیے

ریاستوں کی ترجیحات – پاکستان اور انڈیا کا تقابل۔۔عامر کاکازئی

ہمارے آج کے نوجوان سیاست دانوں کو کوستے ہیں کہ انہوں نے صرف کرپشن کی اور قوم کو کوئی سمت نہیں دی,ترقی نہیں دی۔ مگر بدقسمتی سے تاریخ کو پڑھنے کی بجاۓ یا کسی بزرگ سے سمجھنے یا سیکھنے کی←  مزید پڑھیے

لینکس آپریٹنگ سسٹم/ ریویو۔۔۔عامر کاکازئی

کتاب کا نام: لینکس آپریٹنگ سسٹم -ایک تعارف مصنف: محمد اسفند یار- ارسلان طارق قیمت : پانچ سو روپے پبلشر : گفتگو پبلی کیشینز اسلام آباد۔ 03143696517 کمپیوٹر دو حصوں پر مشتمل ہوتا ہے، ایک ہارڈ وئیر اور دوسرا سافٹ←  مزید پڑھیے

ہائی بلڈ پریشر کیا ہے؟۔۔عامر کاکازئی

ہائی بلڈ پریشر کا مطلب دل کی شریانوں میں جب کولیسٹرول جمع ہونا شروع ہوتا ہے، تو خون کی روانی میں دشواری ہوتی ہے۔ اور خون درست طریقے سے گزر نہیں سکتا، جس کی وجہ سے خون کا دباؤ زیادہ←  مزید پڑھیے

پاکستان کے ستر سال بمقابلہ دو سال۔۔عامر کاکازئی

ولیم  آف آکھام، جو کہ تیرہویں صدی میں انگلینڈ کے ایک مشہور فلاسفر تھے۔ ان کی ایک تھیوری ، جو کہ آکھام ریزر کے نام سے مشہور ہے۔ یہ تھیوری آف پریسمونی بھی کہلاتی ہے۔ یہ تھیوری اُس زمانے میں←  مزید پڑھیے

پاکستانی تعلیمی نظام اور زبانیں۔۔عامر کاکازئی

ہمارے دوست کا ایک بیٹا حال ہی میں چین سےڈاکٹری کر کے  آیا ہے۔ اُس نے اُدھر چینی زبان بھی سیکھی۔ اُس سے پوچھا سیکھنے میں کیسی زبان ہے؟ بولا کہ اردو چینی زبان سے زیادہ مشکل زبان ہے۔ چینی←  مزید پڑھیے

جعلی داعی اور فتویٰ فیکٹری۔۔عامر کاکازئی

جب اسلام کی دعوت عام کرنے کا حکم ہوا تو ہمارے رسول پاک صلی اللہ علیہ و آلہ وسلّم ہر جگہ گئے ، مختلف لوگوں سے ملے، سب سے انہوں نے خوش اخلاقی سے بات کی، جواب میں ان کو←  مزید پڑھیے

کرپشن یا نااہلی کون سی چیز زیادہ خطرناک ہے؟۔۔عامر کاکازئی

پاکستان کی موجودہ نااہل، نالائق اور نکمی حکومت کی کارکردگی کے بعد پوری دنیا کے اکانومسٹ اور سوشیالوجسٹ اب یہ سوچنے پر مجبور ہو گئے  ہیں کہ کرپشن یا نااہلی میں سے کون سی چیز زیادہ خطرناک ہے، آپ کس←  مزید پڑھیے

مسئلہ کشمیر اور پاکستان کے بلنڈرز ( حصہ سوم)۔۔عامر کاکازئی

کشمیر کے لیے سیاسی ، سفارتی کوششیں اور حماقتیں چودھری محمد علی صاحب اپنی کتاب میں لکھتے ہیں کہ دہلی میں ایک میٹنگ ہوئی جس میں انڈیا کی طرف سے نہرو اور سردار پٹیل، جبکہ پاکستان کی طرف سے وزیر←  مزید پڑھیے

مسئلہ کشمیر اور پاکستان کے بلنڈرز (حصّہ دوم)۔۔۔عامر کاکازئی

نان سٹیٹ ایکٹرز (دہشتگرد) کا کشمیر میں رول جب کشمیر کے حالات خراب ہونے لگے تو کشمیری مسلمان مردوں اورعورتوں کے خون  آلود کپڑے صوبہ سرحد کے قبائلی علاقوں میں پشتونوں کو دکھا کر ان کو کشمیر کے جہاد کے←  مزید پڑھیے

مسئلہ کشمیر اور پاکستان کے بلنڈرز (حصہ اوّل)۔۔عامر کاکازئی

مسئلہ  کشمیر کا آغاز جب برٹش گورنمٹ، کانگریس اور مسلم لیگ کے درمیان تقسیم کا فارمولہ بن رہا تھا تو پرنسی سٹیٹس کے بارے میں مسلم لیگ نے اپنا فارمولہ دیا، جس کے مطابق جس علاقے کا کنٹرول راجہ مہاراجہ←  مزید پڑھیے

لداخ اور مسئلہ کشمیر۔۔کاکازئی عامر

لداخ موجودہ کشمیر کا حصہ ہے۔ یہ علاقہ 1834 سے پہلے تبت کے کنٹرول میں تھا۔ 1834 میں سکھ فوجی زوار اور سنگھ نے قبضہ کر کے مہاراجہ گلاب سنگھ کے کشمیر کا حصہ بنا دیا۔ یاد رہے کہ 1947←  مزید پڑھیے