عامر حسینی کی تحاریر
عامر حسینی
عامر حسینی قلم کو علم بنا کر قافلہ حسینیت کا حصہ ہیں۔

خانیوال کے ضمنی الیکشن اور پی پی پی۔۔عامر حسینی

قومی حلقہ این 133 لاہور کے بعد اب لوگ سوال کررہے ہیں کہ صوبائی حلقہ پی پی 206 خانیوال میں پی پی پی کی کارکردگی کیا ہوگی؟ یہ سوال اس لیے بھی اہمیت کا حامل ہے کہ این اے 133←  مزید پڑھیے

سی پیک گوادر کی ترقی کی ضمانت کیوں نہیں بن پارہا؟ ۔۔عامر حسینی

سی پیک گوادر کی ترقی کی ضمانت کیوں نہیں بن پارہا جبکہ یہی سی پیک پاکستان اور چین کی کمپنیوں، جرنیل، بیوروکریٹس ، سیاست دانوں کو کھرب پتی بنا چکا ہے اور اُن کے سرمائے کو چار گنا کرچکا ہے←  مزید پڑھیے

اسٹبلشمنٹ بمقابلہ اسٹبلشمنٹ ۔۔عامر حسینی

میں بندوبستِ پنجاب کے اُس چھوٹی سی اقلیتی تجزیہ نگاروں کی ٹیم میں شُمار ہوتا ہوں جو نوے کی دہائی سے پاکستان کی “سول سوسائٹی ( لبرل پروفیشنل مڈل کلاس سیکشن) کی اکثریت کے اینٹی پی پی پی رجحان کو←  مزید پڑھیے

مفاد عاجلہ کا اسیر اعتزاز احسن اور پیدل سپاہی علی احمد کُرد۔۔عامر حسینی

علی احمد کُرد “ایجنٹ” نہیں “پیدل سپاہی” ہے۔ پیدل سپاہی کسی “اسپانسرڈ تحریک” کے ظاہری بیانیے کو سچ سمجھ کر دل و جان سے ساتھ دیتے ہیں اور بعد ازاں جب اصل “بیانیہ” سامنے آتا ہے تو پھر یہ قیادت←  مزید پڑھیے

پی پی پی کی بنیاد اور دیہی پنجاب۔۔عامر حسینی

قائدِ عوام ذوالفقار علی بھٹو نے ابتداء میں جن گروپوں کی مشاورت سے نئی پارٹی کی تشکیل کا فیصلہ کیا تھا اُن میں سب سے نمایاں شیخ رشید احمد کا گروپ تھا جو نیشنل عوامی پارٹی بھاشانی گروپ سے ذوالفقار←  مزید پڑھیے

روز کہیں دی تانگھاں اچ کھول رکھیساں بوہا ۔۔عامر حسینی

وہ تمہیں طلسم کے دروازے تک لے گیا وہاں لٹکے صدیوں پرانے قفل کی چابی بھی دے گیا اور جاتے جاتے کچھ منتر بھی بتاگیا تم نے منتر سن لیے چابی کہیں ٹانگ دی استاد محمود نظامی کا ایک انداز←  مزید پڑھیے

بلوائی ہجوم اور پاکستان۔۔عامر حسینی

آج کل ذہنی انتشار اس قدر ہے کہ سدھ بدھ بھولے بیٹھا ہوں ۔ ایک طرف مہنگائی کا سیلاب ہے جو مجھ جیسے مزدور کو خس و خاشاک بنائے ہوئے ہے تو دوسری طرف روزمرہ خرچ سے ہٹ کر علاج←  مزید پڑھیے

جب اینکر “مفتی” بنا۔۔عامر حسینی

ہر سخن سنجے کہ خواہد صی معنی ہا کند چوں زباں می باید اول خلوتے پیدا کند ہر سخن شناس کو معانی ہائے تازہ کی خواہش کے شکار کی خواہش ہوتی ہے لیکن اسے پہلے زبان کی طرح خلوت اختیار←  مزید پڑھیے

مذہبی بنیاد پرست طبقہ اور ریاست پاکستان ۔۔عامر حسینی

ریاست پاکستان کی اسٹبلشمنٹ اور اُس کے بغل بچہ سابق اور حاضر سلیکٹڈ کی یہ روش رہی ہے کہ وہ مذہبی بنیاد پرست طبقے سے ایک یا ایک سے زیادہ گروہوں اور اُن کے رہنماؤں کی سرپرستی کرتے رہے ہیں←  مزید پڑھیے

مرتضیٰ بھٹو کا قاتل کون؟۔۔عامر حسینی

مرتضٰی بھٹو کے قریبی ساتھی خواجہ آصف جاوید بٹ نے اپنی کتاب “کئی سولیاں سر راہ تھیں” میں لکھا ہے کہ فاطمہ بھٹو نے اپنی کتاب میں میر مرتضیٰ بھٹو کی زندگی سے وابستہ کئی واقعات بارے جو باتیں لکھی←  مزید پڑھیے

خوابوں سے بھرا کوڑا دان : دھندلا دی گئی شناختوں کے دور کی شاعری – عامر حسینی

ایک محمود درویش تھے، جب صہیونی سامراجیت ان کی شناخت کو مٹانے کے درپے تھی تو انہوں نے “سجل انی عربي۔۔۔۔” جیسی شہرہ آفاق نظم لکھ کر اپنی شناخت امر کردی تھی اور کیا مصرعے کہے تھے جن میں شناختی←  مزید پڑھیے

پنجاب حکومت کا امیج اور ضلعی افسران کی من مانیاں ۔۔عامر حسینی

مجھے کچھ دنوں پہلے لاہور کینٹ میں رہنے والے ایک نوجوان کی طرف سے وٹس ایپ میسج ملا- اس نے مجھ سے درخواست کی کہ میں اسے انگریزی سے اردو ٹرانسلیشن کا کوئی کام لیکر دوں- اتفاق تھا کہ برطانیہ←  مزید پڑھیے

دھندے والی( تیسری,آخری قسط) ۔۔عامر حسینی

تمہارے گھر کے سامنے گاڑی میں۔۔۔ میں نے جلدی جلدی کپڑے بدلے اور نیچے پہنچا تو سلیٹی کلر کی نئی ہنڈا گاڑی میں سلیم اوڈھ بیٹھا ہوا تھا۔وہ مجھے دیکھ کر گاڑی سے اتر آیا۔بہت دبلا پتلا نظر آرہا تھا۔میں←  مزید پڑھیے

دھندے والی(قسط 2)۔۔عامر حسینی

ایک نہایت ہی دلکش آواز کے ساتھ اندر سے جواب آیا میں نے دروازے کو آہستہ سے دھکا دیا تو دروازہ کھل گیا یہ سجا سجایا کمرہ تھا – دروازے کے دائیں جانب سامنے ایک بڑی سی مسہری پڑی تھی←  مزید پڑھیے

دھندے والی(قسط 1)۔۔عامر حسینی

وہ مری اس وقت سے دوست ہے جب میں ایک ایسے رسالے کے لئے کام کرتا تھا جس کے سرورق پہ بڑی حد تک برہنہ دو عورتوں کی تصویریں ضرور شائع کی جاتی تھیں اگرچہ رسالے میں بہت سے سنجیدہ←  مزید پڑھیے

عراق: امریکی سامراجیت اور ایرانی پولیٹکل اسلام باہم دست و گریباں ۔۔عامر حسینی

عراق کے دارالحکومت بغداد کے بین الاقوامی ہوائی اڈے کے قریب ایران نواز شیعہ ملیشیا پی ایم ایف کے کانوائے پر امریکی حملے میں ایران کے اسلامی انقلابی گارڈ کور القدس یونٹ کے سربراہ میجر جنرل قاسم سلیمانی، پی ایم←  مزید پڑھیے

نوآبادیاتی تاریخ کا ایک پنّا: کولکتہ شہر سے طوائفوں کی بڑی ہجرت کیوں ہوئی؟ – دیورسی گوش/مترجم ۔عامر حسینی

نوٹ: ہندوستان میں سیکس ورکروں نے اپنے آپ کو بڑی حد تک منظم کرلیا ہے- وہ اس دھندے کے بیوپاریوں، گاہگ،ریاستی اداروں اور سماج میں اخلاقیات کے کوڑے اٹھائے پھرنے والی ‘پڑھے لکھے’ متوسط طبقے کی منافقت کا مقابلہ کررہے←  مزید پڑھیے

کالی چادر – عامر حسینی

وہ صبح سویرے پانچ بجے اپنے شہر کے بس  اسٹینڈ سے راوی بس سروس کی بس میں سوار ہوا تھا اور ڈہائی گھنٹے میں ڈھائی سو روپے دیکر بہاولپور بس اسٹینڈ پہ اترگیا تھا۔ وہاں سے اس نے کوٹ مٹھن←  مزید پڑھیے

میں ہمہ وقت فکشن سے گھری رہتی ہوں- انٹرویو فاطمہ بھٹو/محمد عامر حسینی

 ایڈیٹر کا نوٹ: فاطمہ بھٹو کا دوسرا ناول ‘رن ایوئےز’ دنیا کے تین دور دراز گوشوں سے تین زندگیوں کو اکٹھا کردیتا ہے جن میں سے ہر ایک مختلف طریقوں سے تشدد اور دکھ کا متاثرہ  ہے۔ انھوں نے ایک←  مزید پڑھیے

شعیب میر : ایک جیالا خلاق فطرت نہ رہا۔۔۔عامر حسینی

میں تحصیل کبیروالا ،ضلع خانیوال کے نواحی چک 20 وہنوئی میں ایک دوست کے ہاں افطار کی دعوت پہ آیا ہوا تھا۔ہم کھتیوں کے سامنے بنے دوست کے گھر کے سامنے چارپائیوں پہ بیٹھے تھے۔میرے ساتھ محمد امین وارثی اور←  مزید پڑھیے