احمد سہیل کی تحاریر

مشرف عالم ذوقی :کہا نی اختتام پذیر ہوئی۔۔احمد سہیل

تم جیسے گئے ،ایسے بھی جاتا نہیں کوئی۔۔ مشرف عالم ذوقی بھی ہمیں چھوڑ کر چلے گئے۔ یا اللہ ایسا لگتا ہے، اردو ادب کے گاؤں میں موت کا بھیڑیا گھس آیا ہے۔ اور ادباء  اور شعراء  دینا سے رخصت←  مزید پڑھیے

سشمیتا بھٹہ چاریہ :بھارتی ناول نگار،ہم جنس نسواں کی پُرجوش حامی اور فکری مزاحمت کار سے گفتگو۔۔احمد سہیل

سشمیتا بھٹاچاریہ {Susmita Bhattacharya} کا تعلق ممبئی ، بھارت سے ہے۔ ان کا پہلا ناول ، نارمل اسٹیٹ آف مائنڈ (پارٹھیئن) /Normal State of Mind (Parthian) مارچ 2015 میں شائع ہوا تھا۔ وہ ونچسٹر رائٹرز کے میلے میمورئیر مقابلہ 2016←  مزید پڑھیے

شاعر و ادیب عامر سہیل کا قراۃ العین حیدر کی ناول نگاری پر جدید لسانیاتی اور اسلوبیاتی بیان۔۔احمد سہیل

اردوکے جدیدترحسیّت کے نقاد محقق،دانشور اور شاعرعامر سہیل کا طویل مقالہ” جدید لسانیاتی اور اسلوبیاتی تصورات”( قراۃ العین حیدر کی ناول نگاری پر صوتی،صرفی، نحوی،معنیاتی اطلاق) کتابی صورت میں منّصہ شہود پر آگیا ہے۔ یہ ایک مشکل موضوع ہے اردو←  مزید پڑھیے

2020 کی ادبی نوبل انعام یافتہ : لوئس گلک( Louise Glück)۔۔احمد سہیل

امریکی شاعرہ لوئس گلوک نے اپنی بے نقاب شاعرانہ آواز کے لئے ادب میں نوبل انعام حاصل کیا ہے جو کہ خوبصورتی کے ساتھ کشش کے ساتھ انفرادی وجود کو آفاقی بناتی ہے۔ 2020 کے لئے ادب کا نوبل انعام←  مزید پڑھیے

حسینہ معین دنیا سے چلی گئیں ۔۔احمد سہیل

ڈرامہ نگار حسینہ معین نے کورونا وائرس سے تحفظ فراہم کرنے والی ویکسین کا ٹیکہ کچھ دن پہلےہی لگوایا تھا۔ مگر یہ افسوسناک خبر اچانک ملی کہ حسینہ معین کا انتقال ہوگیا۔ حسینہ معین سے میری پہلی ملاقات 1967 میں←  مزید پڑھیے

ماریو بینیڈیٹی : یوراگوئے کے صحافی، شاعر، ناول نگار اور سیاسی مزاحمت کار۔۔۔احمد سہیل

ماریو بینیڈیٹی کا ایک ذاتی قول “یوروگائے کی آمریت کی واحد مثبت چیز جو دنیا میں مونٹی ویڈیو کے باشندوں کا پھیلاؤ تھی اور میں جلاوطنی کے مختلف مقامات سے ان کے بارے میں لکھتا رہا۔” ان کے متعلق کہا←  مزید پڑھیے

‘فے کی بولی’ پاک و ہند کی ایک خفیہ زبان۔۔احمد سہیل

” فے کو بولی کو ایک پرسرار زبان سمجھا جاتا ہے۔ یہ بھی کہا جاتا تھا کہ جس گھر میں ” فے” کی بولی بولی جاتی ہو وہاں  ” فرشتے” نہیں آتے اورگھر بھوتوں چڑیلوں کا مسکن بن جاتا ہے۔←  مزید پڑھیے

فرانز کافکا : وجودی، لایعنی کیفیتوں اور خوابوں کی تھکاوٹ کا فکشن نگار(حصّہ اوّل)۔۔احمد سہیل

“میرا ‘خوف’ میرا جوہر ہےاور شاید میرا بہترین حصہ ” ( فرانز کافکا) فرانز کافکا (Franz Kafka) عالمی فکش کا ایک ایسا فنکار ہے جو اپنے افسانوی متن میں فرد کو تلاش کرتا رہا جو اس کو نہ مل سکا۔←  مزید پڑھیے

راولپنڈی سازش کیس اور سید سجاد ظہیر کی گرفتاری کا قصہ(دوسرا،آخری حصّہ )۔۔احمد سہیل

مخبر سے یہ خفیہ اطلاع چوہدری اصغر کو ملی کہ سجاد ظہیر ایک مکان میں چھپے ہوئے ہیں۔ تو انھوں نے اس مکان کے سامنے ایک خالی پلاٹ پر راتوں راتوں لکڑی کی ٹال کھلوادی سادہ کپڑوں میں ملبوس پویس←  مزید پڑھیے

راولپنڈی سازش کیس اور سید سجاد ظہیر کی گرفتاری کا قصہ(حصّہ اوّل)۔۔احمد سہیل

“ادبی اور نظریاتی کمالات اور کچھ دلچسپ واقعات اور حقائق “ مرقع ذات : سید سجاد ظہیر (1904- 1973) پاکستان کے نامور اردو ادیب، انقلابی اور مارکسی دانشور تھے۔ نومبر 5، 1905 کو ریاست اودھ کے چیف جسٹس سر وزیر←  مزید پڑھیے

جوزف بروڈسکی: روسی نژاد نوبیل انعام یافتہ امریکی شاعر اور مضمون نگار۔۔۔احمد سہیل

ان کا اصل نام آؤسیف ایلیکزینڈرووچ بروڈسکی تھا (آمد۔24 مئی 1940 – رخصت ۔28 جنوری 1996)ایک روسی نژاد امریکی شاعر اور مضمون نگار تھے۔ جوزف بروڈسکی{Joseph Brodsky} لینین گراڈ کے ایک روسی یہودی گھرانے میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کا←  مزید پڑھیے

فرینکفرٹ دبستان کا فکری مزاج اور اس کی اصل کہانی کا پس منظر۔۔۔احمد سہیل

فرینکفرٹ اسکول ، جرمنی کے فرینکفرٹ ایم مین میں انسٹی ٹیوٹ برائے سوشل ریسرچ سے وابستہ محققین کا گروپ ہے ، جس نے مارکسزم کو ایک بنیادی بین السطعیاتی معاشریاتی نظریہ پیش کیا۔ انسٹی ٹیوٹ برائے سوشل ریسرچ (انسٹی ٹیوٹ←  مزید پڑھیے

اردو کی فکشن نگار ،خدیجہ مستور۔۔احمد سہیل

خدیجہ مستور اردو فکشن کا ایک ایسا نام ہے۔جو اردو فکشن کو ایک ایسا مزاج دے گیا جس میں متانت، فکری گہرائی، اور معاشرت کا ایسا افقی اور عمودی ثقافت کا اس حرکیاتی اور سکونیاتی ماجرات پوشیدہ ہیں۔ جس میں←  مزید پڑھیے

نئی نو آبادیات کا تازہ ترین فکری تناظراور متوقع مباحث۔۔(دوسرا ،آخری حصّہ )احمد سہیل

اردو غزل میں ‘سیاست اور غزل کے مابین اشارے کی صفتِ مشترک (۱۴) مزاحمتی بیانیے کے اظہار میں بہت ممدو  ثابت ہوئی ہے ۔ لہذا نو آبادیاتی دور میں عتاب شاہی سے بچتے ہوئے شعرا نے بالخصوص غزلیہ کرداروں کی←  مزید پڑھیے

نئی نو آبادیات کا تازہ ترین فکری تناظراور متوقع مباحث۔۔(حصہ اوّل)احمد سہیل

(کلیدی لفظیات اوراصطلاحات۔ سامراج،پس نو آبادیات، ثقافتی تسلط، ثقافتی سامراج، عالمگیریت اور اردو ادب) اب نو آبادیات، پس نوآبادیات، رد نوآبادت، نئی نو آبادیات کے بعد اپنی نئی فکری مباحث کے نئے آفاق میں داخل ہو رہی ہے اور بہت←  مزید پڑھیے

ناسٹلجیا، نقل مکانی اور نوآبادیت کا تکونی افسانوی ماجریت کے جبر کا المیہ۔۔احمد سہیل

صفدر زیدی کا ناول ” چینی جو میٹھی نہ تھی“ نو آبادیاتی جبر کے تاریخی تناظر میں لکھا گیا ہے۔ یہ ناول پس کربیہ یا ناسٹلجیائی کیفیت اورنقل مکانی کے المیات کو فنکارانہ سیاق و انداز میں پیش کرتا ہے←  مزید پڑھیے

تذکرہ”خوش معرکہ زیبا” از نواب سعادت علی خاں ناصر اور مشفق خواجہ۔۔احمد سہیل

اردو کے کلاسیکی ادب کا تذکرہ”خوش معرکہ زیبا” جس کو نواب سعادت علی خاں ناصر نے لکھا ہے۔ناصر کی پیدائش کی تاریخ اور سال کا علم نہیں۔البتہ کہا جاتا ہے ان کا انتقال 1857 اور 1871 کے درمیان ہوا۔ناصر نے←  مزید پڑھیے

میلان کنڈیرا ،چیکوسلواکیہ کے فکشن نگار ۔۔۔۔احمد سہیل

مجھے میلان کنڈیرا کے یہ دو اقوال بہت اچھے لگتے ہیں: 1۔ “خاموشی محبت کی جان نکال دیتی ہے” 2۔ “ہماری زندگی کی سب سے بڑی مہم جوئی، ہماری زندگی کی مہم جوئی سے تہی ہونا ہے” “ابدی بازگشت کا←  مزید پڑھیے

سفاک تھیٹر!ایک خون آلود انقلابی اور تجرباتی تھیٹر ( نظریہ، متن، تحریک اور اشارے)۔۔۔احمد سہیل

“سفاک تھیٹر” (وحشیانہ تھیٹر/ ظالمانہ تھیٹر/ تھیٹر آف کرولٹی (THEATER OF CRUELTY) فرانس کی تھیٹریکل روایت کی ایک منفرد تحریک اور تجرباتی رجحان ہے۔ فرانسیسی ڈرامہ نگار، ڈرامائی نظریہ دان، ادیب اور شاعر انتونن آخطو ( 1896۔1948۔۔۔ ان کا انتقال←  مزید پڑھیے

مولوی محمد امین زبیری مارہروی : اردو کے اہم نقاد، محقق،سوانح نگار اور تبصرہ نگار۔۔۔۔ احمد سہیل

میں ایک عرصے سے محمد امین زبیری کو پڑھتا آرہا ہوں ان پر مختلف ادبا اور دانشوروں کے مضامین اور ان پر انتقادات بھی پڑھی۔ ان کی  تحریروں کو پڑھ کرمیرا ذہن تشکیک کا شکار بھی رہا۔ اور ان کی←  مزید پڑھیے