(سو لفظوں کی کہانی) نرم و نازک جمہوریت

وزیراعظم نے قوم سے خطاب کرتے ہوئے فرمایا کہ
دھرنا دینے اور شہر بند کرنے سے جمہوریت کو خطرہ ہے ،
طالبعلموں کا تعلیمی حرج ہوتا ،
شہریوں کی نظام زندگی مفلوج ہوتی ہے ،
ملکی ترقی کی راہ میں رکاوٹ ہے ۔
اگلے روز ٹیلی وژن پر خبر سنی کہ
ایک سیاسی جماعت کے جلسے کو روکنے کےلیے
وزیراعظم کے حکم پر عدالتی حکم کی خلاف ورزی کرتے ہوئے
شہر میں دفعہ 144 نافذ کردیا ،
نہتے شہریوں کو گرفتار کیا گیا اور
اُن پر شیلنگ کی گئی ،
شہر کو سیل کردیا ،
تمام تعلیمی ادارے ہفتے کے لیے بند کر دیے گئے۔

Shopping Revolution

ثقلین مشتاق کونٹا
ثقلین مشتاق کونٹا
آپ نیشنل یونیورسٹی آف سائنسز اینڈ ٹیکنالوجی (نسٹ) اسلام آباد میں کیمیکل انجنیئرنگ کے طالبعلم ہیں۔صحافت سے جنون کی حد تک لگاؤ رکھتے ہیں ۔ پاکستان کو ایسی ریاست بنانے کے خوہاں ہیں جہاں اللہ کے بعد عوام کی حکمرانی ہو نہ کہ جمہوری آمروں کی آمریت قائم ہو ۔ ان کا ماننا ہے کہ اگر صحافی برداری عوام میں شعور بیدار کرنا کا بیڑہ اُٹھا لیں تو یہ مشکل کام جلد ممکن ہوسکے گا۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *