کورونا وائرس ایک آزمائش۔۔چوہدری محمد عاطف آرائیں

کورونا وائرس نے دنیا کو خوف میں مبتلا کیا ہوا ہے ہم مسلمانوں کا ایمان ہے زندگی موت اللہ کے ہاتھ میں ہے کیا ہم کورونا وائرس سے بچ بھی گئے تو ہمیں موت نہیں آئے گی؟ ہم نے اک دن مرنا ہے موت یقیناً آکے رہے گی
اللہ تعالیٰ قرآن مجید میں ارشاد فرماتا ہے :
سورة الجمعہ(62.8)
ترجمہ :” کہہ دیجیے! کہ جس موت سے تم بھاگتے پھرتے ہو وہ تو تمہیں پہنچ کر رہے گی پھر تم سب چھپے کھلے کے جاننے والے (اللہ) کی طرف لوٹائے جاؤ گے اور وہ تمہیں تمہارے کیے  ہوئے تمام کام بتلا دے گا۔“

کورونا وائرس کو بنیاد بنا کر لبرلز ہمارے مذہب اسلام کو چیلنج کر رہے ہیں، وہ اللہ کے رازوں سے واقف نہیں، ہم سائنس کی ترقی سے انکاری نہیں، سائنس کو ترقی اللہ کی طرف سے ہی ملی ،اللہ نے سب  مخلوقات، زمین، آسمانوں، سیاروں کو بنایا ،سائنسدانوں کو بھی اللہ نے بنایا سائنس دان بھی اک عام انسان ہے ، کیا سائنسدانوں کو موت نہیں آتی؟ سائنسدان بھی اک دن مر جاتے ہیں سائنس کو خدا کا درجہ دینے والے گمراہی میں مبتلا ہیں، اگر اللہ ہم انسانوں کو نہ بناتا تو آج سائنس کا نام و نشان بھی نہ ہوتا ،ہمیں دنیا کی سب آسائشیں اللہ کی طرف سے ملی ہیں، اللہ امتحان لیتا ہے آزمائشوں میں مبتلا کرتا ہے۔
مسلمانوں صرف اللہ سے ڈرو
صبر کا دامن تھام لو
نماز و قرآن پڑھو
دل میں اللہ کا خوف رکھو
اللہ صابرین کو اجر سے نوازتا ہے صبر کریں اللہ سے مغفرت طلب کریں اس کی نعمتوں کی ناشکری نہ کریں ہمیں سب کچھ اللہ نے عطا کیا ہے ہمارا اپنا کچھ بھی نہیں ہماری روح اللہ کے پاس جائے گی جسم خاک میں مل جائے گا سب کچھ خاک ہوگا اللہ نے ہمیں پیدا کیا موت بھی وہ دے گا۔
ڈرنے والی بات یہ ہے کہ  ہم نے مرنے کے بعد اللہ کو حساب دینا ہے کیا ہم تیار ہیں؟ آج ہم اپنا محاسبہ کرتے ہیں ہم نے آج تک کیا اچھا ، برا کیا قبر میں کیا لے کر جانا ہے اللہ کو حساب دینے کے لیے ہم نے کیا تیاری کی جو مسلمان اللہ کے قریب ہیں وہ کامیاب ہیں اللہ نے سچے مومنین کو جنت کی بشارت دے دی ہے
اللہ تعالیٰ قرآن مجید میں ارشاد فرماتا ہے :
سورة حم السجدہ  (41.30)
ترجمہ : ”بےشک جن لوگوں نے کہا ہمارا رب اللہ ہے پھر اس پر قائم رہے اُن پر فرشتے اُترتے ہیں کہ نہ ڈرو اور نہ غم کرو اور خوش ہو اس جنت پر جس کا تمہیں وعدہ دیا جاتا تھا۔“
جو لوگ دنیا کی محبت میں مبتلا ہیں وہ حقیقت پسند بنیں یہ دنیا تو اک دن ختم ہو جائے گی محبت کرنی بھی ہے تو اللہ سے کریں قرآن مجید پڑھیں اللہ کی عبادت کریں کسی کا حق نہ ماریں اچھے اخلاق اپنائیں اس فانی دنیا کی محبت ہمارے کسی کام نہیں آئے گی کام آئیں گے تو ہمارے اچھے اعمال ہماری دنیاوی زندگی اک امتحان ہے اللہ کی آزمائشوں میں صبر کریں اللہ اجر دے گا اللہ بہت کرم کرنے والا ہے  اللہ کے سب سے قریب انبیاء ؑ ہیں مصیبتیں مشکلیں نبیوںؑ نے بھی برداشت کیں ہم تو اک عام انسان ہیں ہمیں چاہیے کہ ہم اپنے نبی پاک حضرت محمد ؐ کی سنت پہ عمل کریں مشکلات میں صبر سے کام لیں دنیا کے غم زندگی بھر رہیں گے جو اس زندگی کے ستم جھیل گیا وہ کامیاب ہوگا  جب ہم اللہ کی راہ پہ چلیں گے سب مشکلیں خود آسان ہو جائیں گی لہذا دنیا کی محبت دل سے نکال کر اللہ اور رسول محمدؐ کی محبت دل میں ڈال لیں زندگی میں سکون مل جائے گا یہ برا وقت گزر جائے گا اس فانی دنیا میں کوئی چیز ہمیشہ رہنے والی نہیں ہر اک نے مرنا ہے
اللہ تعالیٰ قرآن مجید میں ارشاد فرماتا ہے :
سورة الرحمن (55.26)
ترجمہ : ”زمین پر جو ہیں سب فنا ہونے والے ہیں۔“
سورة الرحمن (55.27)
ترجمہ : ”صرف تیرے رب کی ذات جو عظمت اور عزت والی ہے باقی رہ جائے گی۔“
ان قرآنی آیتوں سے زندگی کی حقیقت کا اندازہ لگا لیں ہم سب اک دن فنا ہو جائیں گے اللہ ہمیشہ رہے گا۔

چوہدری محمد عاطف آرائیں
چوہدری محمد عاطف آرائیں
I am Poet & Writer from Rawalpindi Pakistan

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *