استحصال۔۔۔اے وسیم خٹک

رات دوست کو کسی کام سے فون کیا۔۔ کام کی بات کے بعد ملکی سیاست  حالات کے بعد بولے موسم بہت خوشگوار تھا ـ ۔۔

آج خواتین کے دن کی مناسبت سے پروگرامات منعقد ہوئے موسم بہت رنگین ہوگیا تھا ـ ہر جگہ  بس خواتین ہی خواتین اور سب کچھ گلابی گلابی رہا ـ۔۔۔

میں نے کہا ہاں یار میڈیا پر بھی خواتین ہی چھائی رہیں۔اچھا ہے ایک دن تو ان کے لئے بھی مختص ہے حالانکہ ایک دن ان کے لئے بہت کم ہے ـ۔

میں نے کہا  بالکل صحیح فرمایا۔۔ میں تو خواتین کادن بہت زیادہ شوق سے مناتا ہوں ـ آج موسم بہت پیارا تھا اور خواتین کا دن بھی تھا تو ہم نے کال ملائی اور پھر پورا دن ایک خوبصورت خاتون کے ساتھ پوش علاقے کے ہوٹل میں دن گزار لیا۔ ـ میں نے پیسے دے کر اسکی ضرورت پوری کی اور بدلے میں اُس نے میری ضرورت کا بھرم رکھا ـ۔۔

پھر ایک ٹھنڈی سانس لے کر گویا ہوئے ـ یار واقعی میں خواتین کا دن منانا بہت ضروری ہے ـ ان کا بہت زیادہ استحصال ہوتا ہے ۔۔

اے ۔وسیم خٹک
اے ۔وسیم خٹک
پشاور کا صحافی، میڈیا ٹیچر

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *