• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • پاکستان میں دہشت گردوں کی کوئی محفوظ پناگاہ موجود نہیں، آرمی چیف

پاکستان میں دہشت گردوں کی کوئی محفوظ پناگاہ موجود نہیں، آرمی چیف

اسلام آباد(اپنے رپورٹر سے)  چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ اب پاکستان کے اندر دہشت گردوں کی کوئی بھی محفوظ پناگاہ موجود نہیں ہے جبکہ افغانستان ہمارا برادر ہمسایہ ملک ہے اور ایک دوسرے پر الزامات کے بجائے مشترکہ دشمن دہشت گردوں کے خلاف اعتماد کی بنیاد پر مربوط تعاون ضرور ی ہے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر) کے مطابق افغان میڈیا کے 9 رکنی وفد نےجنرل ہیڈکوارٹرز (جی ایچ کیو) راولپنڈی کا دورہ کیا جہاں آرمی چیف جنرل قمرجاوید باوجوہ سے ان کی تعارفی نشست کا اہتمام کیا گیا تھا۔افغان میڈیا کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے آرمی چیف نے کہا کہ پاکستان نے تمام رنگ اور نسل کے دہشت گردوں کے خلاف بلا امیتاز کارروائیاں کی ہیں۔جنرل قمر باجوہ نے پاکستان کی سرزمین کو افغانستان کے خلاف استعمال نہ ہونے دینے کا عزم دہراتے ہوئے کہا کہ اب پاکستان کے اندر دہشت گردوں کی کوئی بھی محفوظ پناگاہیں موجود نہیں ہیں۔آرمی چیف نے کہا کہ ایک دوسرے پر الزامات کے بجائے مشترکہ دشمن اور دہشت گردوں کے خلاف اعتماد کی بنیاد پر مربوط تعاون ضروری ہے جبکہ بیرونی قوتوں کی جانب سے تخلیق کردہ منفی ذہینت کو دور کرنے کے لئے میڈیا کلیدی کردار ادا کرسکتا ہے۔انھوں نے کہا کہ پاک افغان سرحد پر موثر سرحدی انتظام کے لئے پاکستان کی طرف باڑ لگانے اور نئی سرحدی پوسٹیں قائم کی جارہی ہیں۔افغان صحافیوں کے وفد نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا قیمتی وقت دینے اور سیر حاصل گفتگو پر شکریہ ادا کرتے ہوئے اعتراف کیا کہ ایک دوسرے کو سمجھنے کے لئے اس نوعیت کے دورے بہت مفید ثابت ہوں گے کیونکہ حقائق پر مبنی مثبت ذہنیت کے ساتھ واپس وطن جائیں گے۔خیال رہے کہ افغان صحافیوں کا یہ وفد آئی ایس پی آر کے تعاون سے پاکستان کے چھ روزہ دورے پر ہے۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *