کائنات منفی توانائی سے تصادم میں تباہ ہو جائیگی

کرہ ارض کے وجود میں آنے کی سب سے بڑی وجہ زور دار دھماکے کو کہا جاتا ہے جسے لوگ بگ بینگ کے نام سے جانتے ہیں۔ ماہرین طبقات الارض برسوں کے تجزیے کے بعد اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ یہ بگ بینگ کا زور دار دھماکہ ہی تھا جس کی وجہ سے دنیا گول ہونے کے باوجود اسکے مختلف حصے چاروں جانب بٹ گئے۔ اب کسی نئے بگ بینگ کے امکانات نہیں ہیں مگر سائنس دانوں نے خبردار کیا ہے کہ کائنات اچانک کسی دن منفی توانائی کے بلبلے سے ٹکرا کر تباہ ہوجائیگی او ریہ سب کچھ اچانک ہوگا حالانکہ اگر غور کیا جائے تو تباہی کا یہ عمل شاید شروع بھی ہوچکا ہے۔

اگر ایسا ہوگیا تو ہکس بوسن کا نظریہ کسی دن تبدیل کرنا پڑیگا ۔ اس نے اپنے نظریہ میں تخلیق کائنات کے طبعی عوامل کا ذکر کیا تھا۔ اب ماہرین یہ کہتے ہیں کہ جو تباہی مچے گی وہ بظاہر ایک بلبلے کے نتیجے میں عمل میں آئیگی اور یہ بلبلہ بلیک ہول کے اطراف نمودار ہوگا اور تباہی کا عمل شروع کر دیگا۔ سائنسی اعتبار سے دنیا کی تمام چیزیں بنیاد فراہم کرتی ہیں وہی ایک دن دنیا کی تباہی کا باعث بن جائیں گی۔ ہوسکتا ہے کہ یہ عمل آہستہ آہستہ دنیا کے کسی کونے میں شروع بھی ہوچکا ہو مگر یقینی طور پر اسکا قطعی وقت نہیں بتایا جاسکتا۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *