پختونخوا کے درخت اور ایڈز۔۔عامر کاکازئی

کچھ ہفتے پہلے تحریک عدل گستری کو اپنے آقا نمبر ون “انگلی” کےذریعے ایک سازش کا پتہ چلا۔ یہ سازش اقامہ شریف، مسٹر ٹین پرسنٹ، مولانہ ڈیزل اور بابا ایزی لوڈ نے تیار کی۔ را، موساد اور سی ای اے کے ذریعے ایک ایسا سپرے ایجاد کیا گیا ہے جس کو سونگنے سے جانوروں کو پولیو ہو جاتی ہے۔ جب پرش پور کا رہائشی ان پولیو زدہ جانوروں کا دودھ پیے گا یا گوشت کھاۓ گا تو اسے ریورس ایکشن کے تحت ایڈز ہو جائے گا۔ ان کا ارادہ یہ تھا کہ یہ سپرے پرش پور کے تمام درختوں پر کیا جاۓ۔ جس کو سونگھ کر تمام جانور انسانوں میں ایڈز منتقل کرنے میں کامیاب ہو جا ئیں گے۔ اس طریقے سے اگلا چناؤ جتنے میں آسانی ہو جائے گی۔

جیسے ہی ہمارے عظیم قائد جناب ٹیوب راڈ خان کو پتہ چلا تو وہ تڑپ گۓ۔ کیونکہ وہ واحد گل سبح  ہیں جو قوم کا درد اپنے جگر اور پھیپڑوں میں رکھتے ہیں۔ قوم کے ہمدرد جناب ٹیوب راڈ خان صاحب فوراً سے بھی بیشتر اپنے غریب خانہ جو ہر وقت غریبوں کے لیے کھلا ہوتا ہے، پہنچے اور ڈاکٹر ایٹمی کی قیادت میں، تحریک عدل گستری کے سارے سائنس دان اکٹھے ہوۓ۔ ان کی ریسرچ کے مطابق اس نقصانِ عظیم سے بچنے کا صرف ایک ہی طریقہ ہے کہ تمام درختوں کو سپرے ہونے سے پہلے پہلے تلف کر دیا جاۓ۔ اس طرح دل پر پتھر رکھ کے خان نے قوم کے عظیم مفاد میں پہلے میک اپ کیا پھر شادی کر لی۔ ودیارتھی بھابی نے پہلے چلہ کاٹا پھر سیمیا گری کے  ذریعے بتایا کہ جلد سے جلد درختوں سے بریک اپ کر لیا جاۓ۔ قوم کو اس سازش کے بارے میں بتانے کا فریضہ ڈاکٹر قیامتی کے سپرد کیا گیا۔ ڈاکٹر قیامتی نے جب خبر لیک کی تو پورے ملک میں کھلبلی مچ گئی۔

ملک کے سرپنچِ اعلئ جناب رحمتی بابا نے از خود نوٹس لے کر فوراً ڈاکٹر قیامتی کو بلا لیا۔ جب ڈاکٹر قیامتی نے رحمتی بابا کو سازش کے بارے میں بتایا تو وہ قوم کے غم میں تڑپ گۓ۔ پہلا حکم یہ دیا کہ ان چاروں سازشیوں کو جیل میں بند کیا جاۓ. الزام یہ لگا کہ چونکہ انہوں نے رحمتی بابا کے بغیر رات کے کھانے میں کڑاہی کھائی  تھی۔ اس لیے ان چاروں کو پوری عمر کے لیے نااہل قرار دیا جاتا ہے. دوسرا حکم چرس خان کو دیا کہ فوراً پرش پور کے عوام کو ایڈز میں مبتلا ہونے سے بچایا جائے۔ ہنگامی طور پر چرس خان کی قیادت میں تمام لدھر پرش پور پہنچ گۓ۔ صرف ایک دن، جی ہاں صرف ایک دن میں تمام لدھروں نے پورے پُرش پور کو درختوں سے نجات دلا دی۔

اس طرح لدھروں کے بروقت اقدام سے پُرش پور کے عوام ایڈز سے بچ گۓ۔

ہم پرش پور کے عوام شکر گزار ہیں، انگلی بابا، ٹیوب لائٹ خان صاحب، بابا رحمتی، ڈاکٹر ایٹمی، چرس خان، ڈاکٹر قیامتی اور خاص طور پر تمام لدھروں کے۔

ہم مذمت کرتے ہیں اقامہ شریف، مسٹر ٹین پرسنٹ، مولانہ ڈیزل اور ایزی لوڈ بابا کا کہ انہوں نے ہمارے سرپنچ اعلئ رحمتی بابا کے بغیر رات کے کھانے میں کڑاہی کیوں کھائی ۔

ہم دریا پنج پور کی عوام سے اپیل کرتے ہیں کہ اگلے چناؤ میں ٹیوب راڈ خان صاحب کی پارٹی تحریک عدل گستری کو ووٹ دے کر کامیاب بنائیں اور ایک عظیم اگوا سے فائدہ اُٹھائیں۔

Save

عامر کاکازئی
عامر کاکازئی
پشاور پختونخواہ سے تعلق ۔ پڑھنے کا جنون کی حد تک شوق اور تحقیق کی بنیاد پر متنازعہ موضوعات پر تحاریر لکھنی پسند ہیں۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *