• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • امریکی ریاست فلوریڈا کے سکول میں فائرنگ،17 افراد ہلاک

امریکی ریاست فلوریڈا کے سکول میں فائرنگ،17 افراد ہلاک

برووارڈ شیرف اسکاٹ اسرائیل نے واقعے میں 17 افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ 14 افراد اسکول میں فائرنگ سے مارے گئے، ایک راہگیر بھی اپنی جان سے گیا جبکہ 2 افراد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے۔

پولیس نے 19 سالہ حملہ آور کو گرفتار کر لیا، جو مارجوری اسٹون مین ڈوگلاس ہائی اسکول کا سابق طالب علم ہے اور جسے نظم و ضبط کی خلاف ورزی پر اسکول سے نکال دیا گیا تھا۔

واقعے کے وقت مذکورہ اسکول میں گریڈ 9 سے 12 تک کے تین ہزار سے زائد طلبا موجود تھے۔

رپورٹس کے مطابق پہلی گولی چلنے سے ملزم کی گرفتاری تک 2 گھنٹے کا وقت لگا۔

کچھ زخمی طلبا کو وہیں طبی امداد دے دی گئی، جبکہ باقی زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا۔

خطرناک صورتحال سے نمٹنے کے لیے پولیس، انسداد دہشت گردی اسکواڈ اور امدادی کارکنوں کی بڑی تعداد موقع پر پہنچ گئی اور قطار بناکر طلبا اور اساتذہ کو کلاس رومز سے محفوظ مقام پر لایا گیا۔

دوسری جانب واقعے کے بعد اسکول کو 2 دن کے لیے بند کردیا گیا۔

‘حملے سے قبل ملزم نے ریسرچ کی’

امریکی میڈیا کے مطابق حملہ آور رائفل اور درجنوں میگزین سے لیس تھا۔

رپورٹس کے مطابق ملزم نے حملے سے قبل کمپیوٹر پر بم بنانے سے متعلق ریسرچ بھی کی تھی۔

نکولس کے سوشل میڈیا اکاؤنٹ سے منسوب کرکے کچھ تصویریں بھی انٹرنیٹ پر گردش کررہی ہیں جس میں وہ ایک خطرناک شخص کے طور پر نظر آرہا ہے۔

صدر ٹرمپ کی مذمت

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بھی واقعے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امریکا میں طلبا کو ان حالات کا سامنا نہیں ہونا چاہیے۔

واضح رہے کہ رواں برس امریکا میں کسی تعلیمی ادارے میں فائرنگ کا یہ چوتھا واقعہ ہے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *