ڈارک ویب،مزید حقائق۔۔وقار عظیم

نوٹ”مُکالمہ یہ مضامین فقط آگہی کے لیے لگا رہا ہے اور اپنے قارئین کو آگاہ کرنا چاہتا ہے کہ ڈارک ویب یا ڈیپ ویب انتہائی خطرناک اور غیر قانونی  سائٹس ہیں  اور اس میں گھسنے کی کوشش آسانی سے آپ کو قانون نافذ کرنے والے اداروں کا ہدف بنا سکتی ہے۔ تجسس کے ہاتھوں مجبور ہو کر کسی بھی ایسی حرکت کا ارتکاب نہ  کریں جو  آپ اور آپ کے پیاروں کو مشکل میں ڈال دے”
ڈارک ویب پر لکھی گئی پوسٹس کو جس طرح لوگ اپنی پسندیدگی سے نوازتے ہیں اس کے بعد فرض بنتا ہے کہ ڈارک ویب کے چشم کشا حقائق پر مزید لکھا جائے۔
  ڈارک ویب پر سلیئرز نام کا ایک گروپ ہے جو پوری دنیا میں اپنے ہٹ مین رکھتا ہے۔آپ انہیں پیمنٹ کر کے پوری دنیا میں کہیں بھی کسی کو مروا سکتے ہیں۔لوگوں کو مارنے کے علاوہ سلیئرز زندگی تباہ کرنے کا کام بھی کرتے ہیں،مثلاً  کسی کے چہرے پر تیزاب پھینک دینا،چاقو یا خنجر سے کسی کا چہرہ بگاڑ دینا، کسی کی انگلیاں کاٹ دینا وغیرہ وغیرہ۔
آپ ڈارک ویب پر دنیا جہان کی بین کردہ کتب آسانی سے ڈاون لوڈ کر کے پڑھ سکتے ہیں۔
ڈارک ویب پر آپ کو نیدر لینڈ کی اچھی قسم کی خالص چرس مل جائے گی۔
ڈارک ویب پر مس کیرج ہوئے یا ابارشن کا شکار ہوئے بچوں کی روحوں کا بزنس بھی کیا جاتا ہے۔
ڈارک ویب پر آپ اعلیٰ سے اعلیٰ نسل کی بندوق جیسا کہ اے کے فورٹی سیون یا جی تھری تک آرام سے خرید سکتے ہیں۔
عام انٹرنیٹ کی نسبت ڈارک ویب پر ہیکرز کی بھرمار ہے۔آپ کو بیسوں ہیکرز مل جائیں گے جن کو پیسے دے کر آپ کسی بھی سوشل میڈیا سائٹ کا کوئی بھی اکاونٹ ہیک کروا سکتے ہیں۔
بے گھر افراد کو اغواء کر کے ڈارک ویب کی بہت سی سائٹس ان پر گھناؤنے  تجربات کرتی ہیں جن کو پیسوں کے عوض لائیو دکھایا جاتا ہے۔جیسا کہ بازو کو کاٹ دینا، پیچ کس سے آنکھ نکال دینا وغیرہ وغیرہ۔ایسی سائٹس کو ریڈ رومز کہا جاتا ہے۔
ویب کی چار اسٹیجز ہوتی ہیں،ڈیپ ویب، سرفس ویب، ڈارک ویب اور مارینا ویب۔
ڈیپ ویب پر موجود انفارمیشن کا سائز پچھتر ہزار ٹیرابائٹ کے قریب ہے۔
ڈیپ ویب پر ایسے فورمز بھی ہیں جو آپ کو باقاعدہ تعلیم دیتے ہیں کہ مردہ افراد کی روحوں سے بات کیسے کرنی ہے۔
ایک ایسی سائٹ بھی ہے جس کا نام تھیم “ڈیڈ گرلز” ہے۔۔پانچ سال سے پچیس سال تک کی مردہ لڑکیوں کی روزانہ کی بنیاد پر تصاویر پوسٹ کی جاتی ہیں۔پھر چاہے وہ حادثے کا شکار ہو کر مری ہوں یا قدرتی موت۔

Save

Save

وقار عظیم
وقار عظیم
میری عمر اکتیس سال ہے، میں ویلا انجینئیر اور مردم بیزار شوقیہ لکھاری ہوں۔۔ویسے انجینیئر جب لکھ ہی دیا تھا تو ویلا لکھنا شاید ضروری نہ تھا۔۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *