• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • جڑانوالہ سانحہ میں بھارتی خفیہ ایجنسی کی سازش بے نقاب، ناقابل تردید شواہد مل گئے

جڑانوالہ سانحہ میں بھارتی خفیہ ایجنسی کی سازش بے نقاب، ناقابل تردید شواہد مل گئے

جڑانوالہ میں مسیحی آبادی، گرجا گھروں، سرکاری املاک پر حملے، نذر آتش کرنے کے گھناؤنے واقعہ کی تحقیقات میں اہم ترین پیشرفت ہوئی، ہولناک انکشافات سامنے آ گئے۔

ذرائع کے مطابق جڑانوالہ واقعہ میں ہندوستان کی بدنام زمانہ خفیہ ایجنسی کا کردار کھل کر سامنے آ گیا، ٹھوس شواہد مل گئے، پوری منصوبہ بندی کے ساتھ یہ واقعہ مسلم، مسیحی فسادات پھیلانے کی گہری مذموم سازش تھی۔

پاکستان میں پُرامن بسنے والی اقلیتوں، مسلمان آبادی میں اختلافات اور نفرت کا بیج بونے کی گھناؤنی سازش کی گئی، بھارتی ایجنسی کے لے پالکوں نے چند لوگوں کو ورغلا کر مسیحی برادری کے خلاف منظم انداز میں استعمال کیا۔

ذرائع کے مطابق دشمن کے ہاتھوں کھیلنے والوں نے کاغذ کے ُپرزوں پر توہین آمیز کلمات لکھے، مذہبی مقامات کے قریب پھینکے، کاغذ کے پُرزوں پر توہین آمیز تحریر کے ساتھ مسیحی افراد کے نام اور فون نمبر بھی تحریر تھے۔

مقامی مسلم آبادی کو واقعے میں ملوث کر کے مسیحی چرچ، آبادی، املاک کو نقصان پہنچایا گیا، بھارتی خفیہ ہاتھ نے اپنے ملک، مقبوضہ کشمیر میں اقلیتوں، کشمیریوں پر انسانیت سوز مظالم سے توجہ ہٹانے کے لیے سازش کی۔

Advertisements
julia rana solicitors

ذرائع کے مطابق کئی گرفتار ملوث عناصر سے مزید تفتیش اور واقعے کی تحقیقات جاری ہے، تمام کڑیاں بھارت سے مل رہی ہیں۔

Facebook Comments

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply