اصلی خلیفہ کو کیسے پہچانیں؟

پنڈی میں ایک آفیسرز میس کے لاؤنج میں محفل خوب زوروں پر تھی ……رانی مکھرجی سکرین پر رقص کناں تھی….یہ زمانہ تھا جب ملا عمر تخت خلافت پر متمکن تھے …ایک جذباتی کپتان صاحب گویا ہوئے کہ اگر پاکستان بھی ان کے ہاتھ پر بیعت کر لے تو ہمارے تمام مسائل حل ہو جائینگے….میں نے عرض کی کہ جی یہ تو ہے وہ تو ابھی سے ہمارے اہم مسائل ریاض بسرا و دیگر فرقہ پرست دہشت گردوں کو مضبوطی سے اپنی شرن میں دابے ہوئے ہیں اور ہم انہیں مانگتے ہیں تو جذبہ اخوت اس قدر ہے کہ امیر المومنین کہتے ہیں کہ ایسے ہی آپ کو کشٹ ہو گا اس کو ہمارے ہی پاس پڑا رہنے دیں…ہاں اگر آپ کو زیادہ ہی شوق ہے تو یہ ہر دو تین مہینے بعد پاکستان کا چکر لگاتاتو ہے اور صرف چند جلالی دھماکوں سے آپ کے کافی مسائل حل تو کر آتا ہے ..ہم نے کبھی پابندی تو نہیں لگائی…کپتان صاحب کچھ جھینپے پھر سنبھل کر بولے اگر ہم نے امیر المومنین کی اطاعت نہ کی تو جہنم کا ایندھن بنیں گے …اس بات پر تمام دیگر دوست افسران کھلکھلا دئیے …عرض کیا کہ پہلے ثابت تو ہو کہ وہی وہ والے وہ ہیں..بولے اور کیا ثبوت درکار ہے ….نماز اور پردے کے ترک کرنے والوں کو درے مارتے ہیں، زنا کرنے والوں کو سنگسار …اس سے بڑی نشانی ان کے اسلام کی کیا ہو گی…عرض کیا کہ یہیں تو آپ پکڑے گئے….وہ واقعی سچے خلیفہ ہونگے اگر آپ ان سے یہ ثابت کر کے دکھلا دیں کہ زانی ان کے سامنے آئے اور وہ اس کے اعتراف جرم کے بعد بھی اسے سزا دینے سے انکار کردیں…سرکار (ص) کی اصل اور باریکی سے سمجھنے والی سنت یہ موخر الذکر ہے …درے یا پتھر مارنے کے لئے خلیفہ لازم نہیں، کوئی بھی sadist یہ بخوشی کر دے گا…..چور لیا جائے ، پتہ چلے مجبور ہے ، تو عمر (رض) اسے کوئی سزا نہ دیں…یہ ہوتا ہے اصل خلیفہ ….نہ کہ وہ جو اپنی جبلی تشدد کی حس میں کسی بھی بہانے لوگوں کو ان کے اعضا سے محروم کرتا پھرے…لب لباب یہ ہے ملا عمر اچھے آدمی تھے ، لیکن ابھی مال بہت خام تھا…

Avatar
ثاقب چوہدری
ثاقب چوہدری سعودی جامعہ میں عشرہ بھر تدریس کے بعد اب کینیڈا میں ایک لیموزین فلیٹ ، تدریس ، اور متعدد موضوعات پر خامہ فرسائی میں خود کو مصروف رکھتے ہیں......

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *