کابل: سابق خاتون رکن پارلیمنٹ قتل

افغانستان کی سابق خاتون رکن پارلیمنٹ مرسل نبی زادہ اور ان کے باڈی گارڈ کو گھر میں گھس کر قتل کیاگیا۔بھائی بھی شدید زخمی ہوا۔

طالبان کے ترجمان خالد زردان نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ فائرنگ سے گھر میں موجود مرسل کا بھائی بھی زخمی ہوا ہے، جسے طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔

2021 میں طالبان کے برسراقتدار آنے کے بعد بڑی تعداد میں سیاسی رہنما اور اہم شخصیات بیرون ملک چلی گئی تھیں لیکن کچھ سیاسی رہنما اب ابھی افغانستان میں موجود ہیں ،ان میں سے ایک مرسل نبی زادہ بھی تھیں۔

یاد رہے کہ مرسل نبی زادہ اپنے اہل خانہ کے ہمراہ دارالحکومت کابل کے علاقے احمد شاہ بابا میں مقیم تھیں۔

خاتون مرسل نبی زادہ امریکی حمایت یافتہ حکومت میں افغانستان میں رکن پارلیمنٹ رہ چکی ہیں۔ 32 سالہ نبی زادہ کا تعلق مشرقی صوبے ننگرہار سے تھا اور وہ 2018 میں کابل سے رکن پارلیمنٹ منتخب ہوئی تھیں۔

Advertisements
julia rana solicitors london

کابل پولیس کے ترجمان خالد زدران نے کہا کہ نبی زادہ کو اس کے ایک محافظ کے ساتھ ان کے گھر پر گولی مار کر ہلاک کیا گیا۔سیکیورٹی فورسز نے واقعے کی سنجیدگی سے تحقیقات شروع کر دی ہیں، اس حملے میں سابق رکن اسمبلی کا ایک بھائی بھی زخمی ہوا۔ یہ حملہ ہفتے اور اتوار کی درمیانی رات کو ہوا تھا۔

  • merkit.pk
  • julia rana solicitors london
  • julia rana solicitors

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply