ریمبو 23سال کے بعد وزیراعظم بن گئے

فجی میں دوبارہ بغاوت کرنے والے سیٹاوینی رابوکا جو ’ریمبو‘ رابوکا کے نام سے جانے جاتے ہیں دوبارہ فجی کے وزیر اعظم منتخب ہوئے۔

فجی براڈ کاسٹنگ کارپوریشن کے مطابق سیٹوینی رابوکا (74) کو 28 ووٹ ملے۔جبکہ فجی فرسٹ پارٹی (ایف ایف پی) کے رہنما وورکے بینی ماراما کو 27 ووٹ ملے۔ توئی کاکاؤ راتو نیکاما لالا بالاو کو پارلیمنٹ کا نیا اسپیکر منتخب کر لیا گیا ہے۔ عام انتخابات میں ایف ایف پی نے 26 نشستیں حاصل کیں۔پی اے نے 21 سیٹوں پر کامیابی حاصل کی۔ اس کی اتحادی نیشنل فیڈریشن پارٹی (این ایف پی) نے پانچ سیٹیں اور سوشل ڈیموکریٹک لبرل پارٹی (ایس او ڈی ای ایل پی اے) نے تین نشستیں حاصل کیں۔

فجی کی 55 رکنی پارلیمنٹ میں اکثریت کے لیے 28 نشستیں جیتنے والی جماعت حکومت بنا سکتی ہے۔

Advertisements
julia rana solicitors london

پی اے اور این ایف پی نے پہلے ہی الائنس بنایا ہے۔ ایس او ڈی ای ایل پی اے نے مخلوط حکومت میں شراکت داری کا فیصلہ جمعہ کو لیا۔ اتحادی حکومت کے پاس اب پارلیمنٹ میں 29 نشستیں ہیں۔سیٹوینی رابوکا 1992-1999 تک فجی کے وزیر اعظم رہے تھے۔

  • merkit.pk
  • julia rana solicitors london
  • julia rana solicitors

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply