اچھا مستقبل (100 لفظوں کی کہانی)

مجھے بچپن سےاپنےمستقبل کی فکر تھی۔
پتانہیں کیا ہو گا میرے ساتھ زندگی میں۔
افراتفری کا عالم میرے خوف میں اضافہ کرتا رہتا تھا۔
اپنے مستقبل کو دیکھنا چاہتا تھا۔ اس کے حسین احساس کومحسوس کرنا چاہتا تھا۔
ہر کسی سے پوچھتا تھا میرا مستقبل کیسا ہو گا۔
کچھ نے کہا انٹر کے بعد اچھا مستقبل ہے، تو جلدی سے انٹر کیا۔
کسی نے کہا اچھی یونیورسٹی جاؤ، اچھا مستقبل مل جائے گا۔
یونیورسٹی کے بعد کہا نوکری میں مستقبل پوشیدہ ہے۔
ایک دن سب مل کر اچھے مستقبل کے لیے مجھے قبر میں چھوڑ آئے۔۔

عبدالحنان ارشد
عبدالحنان ارشد
عبدالحنان نے فاسٹ یونیورسٹی سے کمپیوٹر سائنس کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ ملک کے چند نامور ادیبوں و صحافیوں کے انٹرویوز کر چکے ہیں۔اس کے ساتھ ساتھ آپ سو لفظوں کی 100 سے زیادہ کہانیاں لکھ چکے ہیں۔

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

براہ راست تبصرہ تحریر کریں۔

Your email address will not be published. Required fields are marked *