فائنل میں 100 فیصد کارکردگی دکھائیں گے، بابر اعظم

کپتان قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے کہا ہے کہ قدرت کا نظام تو ہے لیکن ہم نے اپنی محنت جاری رکھی، ہمیں جو موقع ملا اس پر اچھا پرفارم کیا۔

میلبورن میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے بابر اعظم نے کہا کہ اس ورلڈ کپ کو 1992 کے ورلڈ کپ سے مماثلت دی جا رہی ہے ہم نروس نہیں ہیں، پریشر ہوتا ہے لیکن کوشش کریں گے دباو نہ لیں۔، فائنل میں 100 فیصد دیں گے۔

کپتان نے کہا کہ ہمارا کام محنت کرنا ہے، نتیجہ اللہ کے ہاتھ میں ہے، فائنل میچ میں ٹاس کی اہمیت زیادہ نہیں ہے، موسم کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ موسم ہمارے ہاتھ میں نہیں، دعا ہے میچ مکمل ہو اور بارش سے متاثر نہ ہو، بس جو پلان بنایا ہے اس پر عمل کرنا ہے۔ ابتدائی چھ اوور بہت اہم ہیں، ہمارا یقین اللّٰہ پر ہے اور پورا بھروسہ بھی ہے، ہمارا کام محنت کرنا ہے نتیجہ اللّٰہ کے ہاتھ میں ہے۔

رمیز راجہ سے ملاقات کے بارے میں کہا کہ ملاقات خوشگوار رہی، انہوں نے یہ ہی کہا کہ کھل کر کھیلیں، اپنے گیم پر قائم رہیں۔ بابر اعظم نے محمد حارث کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ محمد حارث نے اچھا پرفارم کیا ہے اس کا ہمیشہ اعتماد بڑھایا ہے۔

دوسری جانب کپتان انگلش کرکٹ ٹیم جوز بٹلرنے کہا ہے کہ پاکستان کی ایک مضبوط ٹیم ہے، ورلڈکپ فائنل جیتنا کبھی بھی آسان نہیں ہوتا، ہم نے پچھلےکچھ عرصے میں ایک دوسرے کے خلاف کافی میچز کھیلے ہیں، ہمیں پاکستان کی ٹیم کا اندازہ ہے، موسم کا اختیار ہمارے ہاتھ میں نہیں، بطور ٹیم کسی بھی صورتحال میں کھیلنے کو تیار ہیں، انہوں نے کہا کہ پاکستان کی بالنگ لائن اپ مضبوط ہے۔

Advertisements
julia rana solicitors

واضح رہے کل اتوار یعنی 13 نومبر کو پاکستان اور انگلینڈ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے فائنل میں ایک دوسرے کے مدمقابل آئیں گے۔

  • julia rana solicitors london
  • julia rana solicitors
  • merkit.pk

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply