سعودی عرب میں کتوں کے لیے کیفے بنا دیا گیا

سعودی عرب میں روایتی طور پر گھروں میں کتوں کو نہیں رکھا جاتا یا تو انہیں فارم ہاوس میں دیکھا جا سکتا ہے یا پھر حفاظتی مقاصد کے لیے استعمال ہوتے ہیں۔
عرب نیوز کے مطابق مملکت کے ایسٹرن ریجن میں تقریبا آٹھ ماہ قبل ایک ایسا بارکنگ لاٹ کھولا گیا ہے جس میں گھروں میں رکھے جانے والے منفرد ہئیت اور جسامت کے پالتو کتوں کی دیکھ بھال کے علاوہ اب ان کے لیے کیفے کا ماحول رکھا گیا ہے۔

یہاں موجود انٹیکا نے کتوں سے خوف اور ڈر پر قابو پالیا ہے جب انہوں نے اس ڈاگ کیفے بارکنگ لاٹ کے لیے کام کرنا شروع کیا۔
وہ آج یہاں کتوں کے لیے مخصوص عمارت کے داخلی دروازے پر شیشے کے ساتھ کھڑے ہو کر یہاں آنے والوں کو خوش آمدید کہتے ہیں۔
جدہ میں پلے بڑھے انٹیکا نے بتایا ہے کہ میں نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ ہر وقت کتوں میں گھرا رہوں گا لیکن اس کے برعکس میرے اندر ہمیشہ کوئی مہم سر کرنے کا جذبہ رہا اور جب مجھے الخبر میں موجود ایک ڈاگ کیفے میں کام کرنے کی پیشکش ہوئی تو میں تجسس میں پڑ گیا۔
انہوں نے بتایا کہ مجھے ہمیشہ کتوں سے انجانا سا خوف رہتا تھا اور اب جب بھی میں ان کے آس پاس نہیں ہوتا تو مجھے ان کی یاد آتی ہے۔

Advertisements
julia rana solicitors

منفرد کیفے میں 14 کتے ایسے ہیں جو ہر وقت یہاں موجود رہتے ہیں جب کہ اس کے علاوہ دیگر کا باقاعدگی سے آنا جانا لگا رہتا ہے۔
کیفے میں ایک سنٹر بھی ہے پہلے سے موجود ہے جہاں کتوں کی دیکھ بھال، بالوں کی تراش خراش کے علاوہ ان کی صفائی ستھرائی، نہلانے اور پنجوں کے ناخن چھوٹے کرنے کے لیے بھی ورکر موجود ہیں۔
اس بارکنگ لاٹ کا آغاز کویت میں ہوا تھا جب کہ اس کے بعد مملکت کے شہر الخبر میں اس کی برانچ کھولی گئی اب ریاض میں دوسری برانچ کھولی گئی ہے۔

  • julia rana solicitors
  • julia rana solicitors london
  • merkit.pk

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply