• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • سونامی لہروں سے لڑ کر زندہ بچ جانے والا ۔۔ ایکوا مین ۔۔

سونامی لہروں سے لڑ کر زندہ بچ جانے والا ۔۔ ایکوا مین ۔۔

حقیقی زندگی کا “ایکوا مین“،  سونامی لہروں میں بہہ جانے والا معذور شخص 27 گھنٹے تیرنے کے بعد بھی زندہ بچ گیا۔

گزشتہ دنوں ٹونگا میں زیرسمندر آتش فشاں پھٹنے کے بعد سونامی لہریں مختلف جزائر سے ٹکرائیں تھیں، لزالا فولاؤ کے مطابق وہ پانی میں بہتے رہے اور 27 گھنٹے بعد ٹونگا کے مزکری جزیرے تک پہنچ گئے۔ 57 سالہ شخص کو حقیقی زندگی کا ایکوا مین قرار دیا جارہا ہے۔

FaceLore Pakistan Social Media Site
پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

شہری کا کہنا ہے کہ انہیں چلنے پھرنے میں پہلے ہی مشکلات ہوتی تھیں، وہ گھر پر پینٹنگ میں مصروف تھے جب ان کے بھائی نے سونامی کے بارے میں بتایا، ان کا گھر پانی میں ڈوب گیا اور وہ ایک درخت پر چڑھ گئے، لیکن وہ زیادہ دیر پانی سے بچ نہ سکے اور سونامی کی تیز لہریں انہیں ساتھ لے گئیں۔

انہوں نے بتایا کہ انہوں نے ان لہروں کے سامنے نہ جھکنے کا فیصلہ کیا اور تیراکی سے ساڑھے سات کلومیٹر کا فاصلہ طے کیا۔

Advertisements
julia rana solicitors london

یاد رہے ہونگا ٹونگا آتش فشاں سے لاوا نکلنے سے ایک لاکھ سے زائد افراد کی آبادی متاثراور تین افراد ہلاک ہوئےتھے، جبکہ اس شہری کا علاقہ مکمل تباہ ہو چکا ہے۔

  • julia rana solicitors
  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • julia rana solicitors london
  • merkit.pk

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply