ایکس رے سے چند منٹوں میں کورونا کا پتہ لگانا ممکن

طویل انتظار ختم، اب ایکس رے کے زریعے کورونا ٹیسٹ کا پتہ لگانا ممکن ہو گیا، ماہرین نے پی سی آر ٹیسٹ کے بجائے ایکس رے سے چند منٹوں میں 98 فیصد درست رزلٹ دینے کا دعوی کردیا ہے۔

نئی ٹیکنالوجی میں وائرس کا پتا لگانے کے لیے مصنوعی ذہانت کا استعمال کیا گیا ہے، ماہرین نے امید ظاہر کی ہے کہ یہ ٹیکنالوجی فرنٹ لائن پر طبی عملے کے لیے مددگار ثابت ہو گی۔

FaceLore Pakistan Social Media Site
پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

انفیکشن کے ابتدائی مراحل کے دوران ایکس رے میں کورونا کی علامات نظر نہیں ہوتی ہیں، اس لیے یہ ٹیکنالوجی پی سی آر ٹیسٹوں کی مکمل طور پر جگہ نہیں لے سکتی۔

تاہم، یہ پھر بھی وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے خاص طور پر جب پی سی آر ٹیسٹ آسانی سے دستیاب نہ ہوں۔

ماہرین کا ماننا ہے کہ وائرس کے سنگین معاملات کی تشخیص کرتے وقت یہ اہم اور ممکنہ طور پر جان بچانے والا ثابت ہو سکتا ہے، اس بات کا تعین کرنے میں مدد کر سکتا ہے کہ مریض کو کس علاج کی ضرورت ہو سکتی ہے۔

Advertisements
julia rana solicitors

ریسرچ، انوویشن اور انگیجمنٹ کے وائس پرنسپل پروفیسر میلان کا کہنا تھا کہ ممکنہ طور پر گیم بدلنے والی تحقیق ہو سکتی ہے۔

  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • julia rana solicitors
  • julia rana solicitors london
  • merkit.pk

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply