• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • چین عالمی صاف توانائی کی تحقیق میں سرفہرست ہے: رپورٹ

چین عالمی صاف توانائی کی تحقیق میں سرفہرست ہے: رپورٹ

(نامہ نگار/مترجم:طلحہ نصیر)چین عالمی صاف توانائی کی تحقیق میں سرفہرست ہے ۔سائنس اور ٹیکنالوجی ڈیلی نے رپورٹ کیا ہے کہ صاف توانائی سے متعلق تحقیق اس وقت عالمی توجہ کا مرکز بن گئی ہے اور حالیہ برسوں میں شائع شدہ کاغذات اور مجاز پیٹنٹ کی تعداد میں چین سرفہرست ہے۔
نیدرلینڈ میں قائم ریسرچ، پبلشنگ اور انفارمیشن اینالیٹکس کمپنی نے بدھ کو عالمی کلین انرجی ریسرچ کی صورتحال پر ایک رپورٹ جاری کی۔
رپورٹ کے مطابق چین نے 2001 سے اب تک صاف توانائی کے بارے میں 400,000 تحقیقی مقالے شائع کیے ہیں جو دنیا میں سب سے زیادہ ہیں۔ چین نے پچھلی دہائی کے دوران لیتھیم بیٹری یا سیکنڈری بیٹری سے متعلق تحقیق پر توجہ مرکوز کی ہوئی ہے۔
پیٹنٹس کی تعداد کے لحاظ سے، چین 2012 میں امریکہ اور 2014 میں جاپان کو ہرا کر سب سے زیادہ کلین انرجی پیٹنٹ رکھنے والا ملک بن گیا۔ 2020 کے آخر تک، اس شعبے میں عالمی پیٹنٹ میں سے تقریباً نصف چین کے تھے۔

  • julia rana solicitors
  • julia rana solicitors london
  • merkit.pk
  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply