• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • ایران نے پھر کہا کہ تمام پابندیاں ہٹا دی جائیں، یورپ نے کہا کہ مذاکرات میں تکنیکی پہلوؤں پر پیش رفت ہو رہی ہے

ایران نے پھر کہا کہ تمام پابندیاں ہٹا دی جائیں، یورپ نے کہا کہ مذاکرات میں تکنیکی پہلوؤں پر پیش رفت ہو رہی ہے

اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ جوہری معاہدے کے دوبارہ شروع ہونے کا امکان بڑھتا جا رہا ہے جب کہ دوسری جانب یورپی ممالک کی جانب سے یہ بیان سامنے آیا ہے کہ ویانا مذاکرات میں ایران کی جانب سے رکھے گئے مطالبات کے حوالے سے تکنیکی پیش رفت ہو رہی ہے۔

ایران کے چیف مذاکرات کار علی بکری کنی نے کہا کہ ویانا میں جاری مذاکرات بامعنی انداز میں آگے بڑھ رہے ہیں اور ایران جوہری معاہدے کے وعدوں کی طرف اسی وقت واپس آئے گا جب اس پر سے پابندیاں عملی طور پر اٹھا لی جائیں گی۔

FaceLore Pakistan Social Media Site
پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

علی بکری کنی نے کہا کہ جتنی جلد ایران کی جانب سے پابندیاں ہٹانے اور اس تناظر میں ضمانت دینے کی تجویز کو قبول کر لیا جائے گا، اتنی ہی جلد معاہدہ طے پا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ معاہدہ بہت کم وقت میں ہو سکتا ہے، شرط یہ ہے کہ واشنگٹن پابندیاں ہٹانے کے معاملے میں سنجیدگی کا مظاہرہ کرے۔

علی بکری کنی نے کہا کہ ایران کا جوہری پروگرام صرف سویلین اہداف کے لیے ہے اور ایران 60 فیصد گریڈ سے زیادہ یورینیم افزودہ نہیں کرے گا۔

ایران نے بارہا یورپی ممالک کو واضح الفاظ میں یہ کہا اور کہا ہے کہ اگر امریکہ واقعی ایران پر سے پابندیاں ہٹاتا ہے تو ایران جوہری معاہدے کے تحت اپنے وعدوں پر عمل درآمد شروع کر دے گا۔

دوسری جانب جوہری معاہدے میں شامل ممالک نے امریکا کے نمائندوں کے ساتھ ویانا میں اجلاس منعقد کیا تاہم ایران نے اس اجلاس میں شرکت نہیں کی۔ ایران جوہری معاہدے سے باہر نہ نکلنے والے ممالک کے ساتھ ویانا میں مذاکرات کر رہا ہے۔

اس ملاقات کے بعد روس کے نمائندے میخائل اولیانوف نے کہا کہ اس بات چیت میں جو نتیجہ خیز ماحول دیکھنے میں آیا اس سے سبھی مطمئن ہیں۔

یورپی یونین کے نمائندے اینریک مورا نے کہا کہ مذاکرات کو کامیاب بنانے کے لیے تمام فریقوں کا مخلصانہ ارادہ ہے اور ایران کے مطالبات کے تناظر میں تکنیکی نکات پر پیش رفت دکھائی دے رہی ہے۔

دوسری جانب جرمنی کی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ جرمنی، فرانس، برطانیہ اور امریکا کے وزرائے خارجہ نے ویانا مذاکرات کے تازہ دور پر تبادلہ خیال کیا۔

Advertisements
julia rana solicitors

دریں اثناء روس کے نمائندے اولیانوف نے کہا کہ ایران کے حوالے سے اعلیٰ روسی اور امریکی حکام کی ملاقات ہوئی جس میں جوہری معاہدے کو بچانے کے لیے دونوں فریقوں کے درمیان ہم آہنگی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • merkit.pk
  • julia rana solicitors london
  • julia rana solicitors

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply